مزاحیہ غزل

سید شہزاد ناصر نے 'مزاحیہ شاعری' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 17, 2019

  1. سید شہزاد ناصر

    سید شہزاد ناصر محفلین

    مراسلے:
    9,429
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    [​IMG]

    بات جیسی بھی ہو بیگم کی اثر رکھتی ہے
    کیونکہ منوانے کا وہ خوب ہنر رکھتی ہے

    کس سے ملتا ہوں، کہاں آتا کہاں جاتا ہوں
    صبح کی شام کی پل پل کی خبر رکھتی ہے

    میرے کپڑوں سے بتاتی ہے کہ میں کس سے ملا
    سونگھنے کا بھی وہ کچھ خاص ہنر رکھتی ہے

    نوٹ کتنے ہیں مری جیب میں، سکے کتنے
    ایکسرے جیسی وہ باریک نظر رکھتی ہے

    میری کولیگ نے لنچ آج مرے ساتھ کیا
    ایسی باتوں کی بھلا کیسے خبر رکھتی ہے

    شک بھی ہوتا ہے کہ بیگم ہے کہ جاسوس ہے وہ
    میری ہر بات پہ کچھ ایسے نظر رکھتی ہے

    گھر سے وہ مجھ کو نکالے گی، فقط دھمکی نہیں
    ہر گھڑی باندھ کے وہ رختِ سفر رکھتی ہے

    وہ چلاتی ہے چھری روز کچن میں لیکن
    پیٹ میں میرے گھسانے کا جگر رکھتی ہے
     
    • پر مزاح پر مزاح × 6
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  2. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    13,853
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    خوب!:D
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
    • متفق متفق × 1
  3. امجد علی راجا

    امجد علی راجا محفلین

    مراسلے:
    2,035
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    السلام علیکم شہزاد ناصر بھیا۔ کیسے ہیں آپ۔
    ناچیز کی یہ غزل کہاں سے ڈھونڈ نکالی آپ نے۔
     
    • زبردست زبردست × 1
  4. حبیب صادق

    حبیب صادق محفلین

    مراسلے:
    26
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    بہت عمدہ
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  5. ظہیراحمدظہیر

    ظہیراحمدظہیر محفلین

    مراسلے:
    3,111
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    کیا بات ہے امجد بھائی !
    بہت خوب! ہمیشہ یونہی مسکراہٹیں بکھیرتے رہئے ! اللہ آپ کو خوش رکھے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  6. امجد علی راجا

    امجد علی راجا محفلین

    مراسلے:
    2,035
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    شکریہ ظہیر بھیا۔
    ان مسکراہٹوں کا سہرہ تو سید شہزاد ناصر بھیا کے سر جاتا ہے، مجھے تو پڑھنے کے بعد یاد آیا کہ یہ تو میرا کلام ہے۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 2

اس صفحے کی تشہیر