مذاہب کیسے بدلتے ہیں

محسن وقار علی نے 'تاریخ کا مطالعہ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 21, 2013

لڑی کی کیفیت:
مزید جوابات کے لیے دستیاب نہیں
  1. سید ذیشان

    سید ذیشان محفلین

    مراسلے:
    7,178
    موڈ:
    Asleep
    جس کو اسلام میں ماضی میں آنے والے یا پھر مستقبل میں متوقع تغیر و تبدل کے موضوع میں دلچسپی ہو تو وہ Reza Aslan کی کتاب No god but God کا مطالعہ کر سکتا ہے۔ کافی دلچسپ کتاب ہے۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • متفق متفق × 1
  2. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    تاریخی یا منحرف اور گمراہ مثالیں ؟​
    عطار کی منطق الطیر اسلام کی نمائندگی نہیں کرتی جس میں معراج کے وقت حضرت محمد صلی اللہ علیہ وسلم کی سواری براق کو ایک مونث کے طور پر دکھایا گیا ہے ، جس کا سر عورت کا ہے اور دھڑ جانور کا ۔ مستد اسلامی روایات ان خرافات سے پاک ہیں ۔​
    اگر ایسی شاذ اور منحرف چیزیں "تاریخی " ہونے لگیں تو نبی صلی اللہ علیہ وسلم کی وفات کے بعد نبوت کا دعوی کرنے والے کذاب بھی "تاریخی " مثالیں ہو جائیں گے ۔ میری سمجھ سے بالاتر ہے آپ کی منطق ۔​
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  3. ایچ اے خان

    ایچ اے خان معطل

    مراسلے:
    14,183
    موڈ:
    Cool
    دعا کریں ہوجاے
    اسلام ہی واحد مذہب جو اللہ کا منتخب کردہ ہے انسانوں کے لیے
     
  4. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    کوئی شبہ نہیں ایران میں رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی شبیہ بنائی جاتی ہے اور صحابہ کرام رضی اللہ عنہم اجمعین کی بھی ، مختار مسعود نے لوحِ ایام میں اس پر لکھا ہے ۔ اس کے علاوہ مذاہب کے طالب علم اس بات سے بخوبی واقف ہیں ۔ اہل السنت والجماعت کے ہاں مقدس ہستیوں کو کسی بھی صورت ڈپکٹ کرنا ان کی توہین ہے ۔ اس میں تصویر سازی ، سکیچنگ ، مجسمہ سازی ، اور ایکٹنگ سب شامل ہیں ۔ اب تک ایسی جو فلمیں بنی ہیں ان میں بھی اہل تشیع ہی کا ہاتھ رہا ہے ۔
    مستند کتب روایات میں ذکر کردہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم کے حلیے کے حوالے سے اہل تشیع کی ان تصاویر کو جانچا جائے تو یہ لوگ نبی صلی اللہ علیہ وسلم کو مکمل سفید بالوں والے شبیہ بناتے ہیں جب کہ حضرت علی رضی اللہ عنہ کو ایک نوجوان کی صورت ، حالاں کہ آپ صلی اللہ علیہ وسلم وفات تک کبھی بھی آپ کے بال مکمل سفید نہیں تھے ۔ اور آپ صلی اللہ علیہ وسلم کا ایک مستند ترین حلیہ حضرت علی رضی اللہ عنہ کی روایت سے ہی ہم تک پہنچا ہے ، یہ شیعہ تصاویر اس پر بالکل پوری نہیں اترتیں۔
     
    • معلوماتی × 2
    • پسندیدہ × 1
    • زبردست × 1
    • پر مزاح × 1
    • متفق × 1
  5. سید ذیشان

    سید ذیشان محفلین

    مراسلے:
    7,178
    موڈ:
    Asleep
    جو زیادہ مشہور تصاویر ہیں ان میں تو یہ مقدس ہستیاں عرب سے زیادہ ایرانی لگتی ہیں جو کہ خلاف واقعی ہیں۔ لیکن تصاویر بنانے والے اس بات کا بھی اظہار کرتے ہیں ہیں کہ یہ تصاویر mental images سے زیادہ کچھ نہیں ہیں۔
     
    • متفق متفق × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  6. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    بہت دلچسپ کتاب ہے۔ مجھے ایک ٹھیلے سے صرف پچاس روپے میں مل گئی تھی۔ :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  7. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    میں نے سوچنا چھوڑ دیا ہے ورنہ بہت مشکل ہوتی ہے :roll:
     
    • پر مزاح پر مزاح × 2
  8. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    محترمہ آپ کے نزدیک کیا چیز انحراف ہے یا کیا چیز درست، مجھے اس سے کوئی غرض نہیں ہے۔ مجھے بس یہ معلوم تھا کہ اسلامی دنیا میں حضرت محمد (ص) کی تصویر سازی کی بھی روایت رہی ہے، سو میں نے یہاں ایک مضمون کے حوالے کے ساتھ عرض کر دیا۔
     
    • متفق متفق × 2
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  9. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    آپ کی باتوں کو جب کسی اور عینک سے دیکھا جائے تو غلط لگتی ہیں :grin:
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  10. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    اوہ مجھے علم نہیں تحا کہ رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کی وفات کے بعد نبوت کا دعوی کرنے والوں کو کذاب کہنا آپ کو اتنا برا لگے گا۔ شاید یہ بھی آپ کے نزدیک گمراہی نہ ہو بلکہ" اسلام کی ڈایئورسٹی اور اس کا حسن " ہو ۔ لیکن مسئلہ یہ ہے کہ یہ صرف میرے نزدیک انحراف اور گمراہی نہیں بلکہ خلیفہء اول حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ و ارضاہ نے بھی ان کو گمراہ قرار دے کر ان سے جنگ کی تھی ۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  11. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    جزاک اللہ خیرا۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  12. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    اپنے اپنے میدان میں سوچا جائے تو اتنا مسئلہ نہیں ہوتا ، جب لوگ جہازوں کا تیل پانی چیک کرتے کرتے مذہبی بحث میں آ کودتے ہیں تو مشکل ہو جانی چاہیے ۔ میں نے آج تک ، میزائلوں ، جہازوں یا عروض و بدیع وبیان کے موضوعات میں چہلیں نہیں کیں ۔ کیوں کہ مجھے اپنے علم کی حدود معلوم ہیں ۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  13. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    :rollingonthefloor: تیل پانی :rollingonthefloor: :rollingonthefloor: :rollingonthefloor: ویسے مذہب سے ہر ایک کو واسطہ ہے جبکہ جہاز سے نہیں
     
    • متفق متفق × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  14. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    بے شک مینٹل امیجز ہوں لیکن بات حرمت و حلت کی ہے ۔ اللہ کی حدود سنجیدہ معاملہ ہیں ، آرٹ کی آڑ لے کر حدود کو پامال نہیں کیا جاسکتا ۔ بلاشک یہ خلاف وقعی ہیں اور غلط فہمیاں پھیلانے کا سبب بنتی ہیں ۔
    ایرانی حلیے والی بات درست ہے ۔ یہان ایک دل چسپ نکتہ ہے جس سے اسلام میں تصویر کی حرمت کی حکمتیں واضح ہوتی ہیں ۔ گوتما بدھ کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ جغرافیہ بدلتے ہی اس کے مجسموں کے خدوخال اور قامت بدل جاتی ہے : ) اسی طرح بت پرستوں کے گھڑے ہوئے خدائی مجسموں کا حلیہ بھی جغرافیے کے ساتھ ساتھ بدلتا جاتا ہے ۔ ہندو گوڈسز کے مجسمے یورپ میں بنائے جائیں گے تو وہاں کی عورت کے خدو خال اوروہاں کے معیار حسن کے مطابق بدل جائیں گے ۔ یہ انسانی کمزوری ہے جس سے باہر نکلنا ممکن نہیں ۔ ان باتوں کو دیکھ کر اسلامی احکام کی حکمتوں پر یقین پختہ ہوتا چلا جاتا ہے ۔
     
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  15. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    کھانا بھی ہر کوئی کھاتا ہے لیکن نیوٹریشنسٹ نہیں بن جاتا : ) دانت سب کے منہ میں ذاتی ہیں لیکن دانتوں کے مکینک کی بجاءے ڈینٹسٹ کے پاس جانا پڑتا ہے ۔
     
    • زبردست زبردست × 3
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  16. حسان خان

    حسان خان لائبریرین

    مراسلے:
    17,843
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    وہ عینک کون سی ہے بھائی؟ :)
     
  17. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    [​IMG]
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  18. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    تو کیا مذہب کو مزہبی پروہتوں پر چھوڑ دینا چاہیے ؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  19. امجد میانداد

    امجد میانداد محفلین

    مراسلے:
    4,970
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dead
    جی اس سلسلے میں احسان نے بھی بالکل ٹھیک کہا ہے کہ پاکستان میں اہلِ تشیع اس سے منع ہی رہتے ہیں اور وہ خود بھی پسند نہیں کرتے مقدس شخصیات کی اشکال کشی۔
    یوٹیوب پر تو اینیمیٹڈ اور نارمل فلموں کی بھرمار ہے جن میں حضرت یوسف، حضرت سلیمان، حضرت امام حسن حسین، حضرت علی، طارق بن زیاد، حضرت موسیٰ، حضرت عیسیٰ، اور کچھ اور اصحابہ اور انبیاء کی فلمیں بھی ہیں۔ اور کچھ حضورصلی اللہ علیہ وسلم کے زندگی کے واقعات بھی کور ہے۔
     
    • متفق متفق × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  20. امجد میانداد

    امجد میانداد محفلین

    مراسلے:
    4,970
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dead
    لیکن میں اب کچھ اور سوچتا ہوں اور وہ یہ کہ جس طرح کی ہم زندگی گزار رہے ہیں اور جتنا مذہب سے ہم قریب ہیں اور جس طرح ہم اپنی آنے والی نسلوں کو منتقل کر رہے ہیں اس میں بہتر یہی ہے کہ یہ میڈیم استعمال ہو تاکہ بچوں کو کچھ پتہ بھی چل سکے کتابی مضامین اور واقعات اور سوانحات کچھ کی آگے منتقلی کم سے کم ہوتی جا رہی ہے اور ضرورت اس امر کی ہے کہ علماء وقت اس سلسلے میں اجتہاد کا سہارا لیں اور ایک متفقہ لائحہ عمل طے کرتے ہوئے کچھ حدود اور راستہ وضع کرتے ہوئے باقاعدہ اس کی تعلیمی ضرورت کے تحت اجازت دے دیں تاکہ میرے بچوں کو اور ان کے آنے والے بچوں کو بھی غزوات، سیرت النبی، سیرت الصحابہ، اور باقی انبیاء، اہم واقعات اور مقامات اور ادوار کے بارے میں آگاہی ہو سکے۔ بڑے افسوس کی بات ہے کہ بچوں کو ہندومت کے کئی دیوی دیوتاؤں کے واقعات ازبر ہیں اور کچھ نہ کچھ صبح شام اب تذکرہ میں رہتا ہے لیکن ہم کچھ بندشوں کی وجہ سے قاصر ہیں ایسا کرنے سے اور ایسا ہم ہر نئی ایجاد اور فائدے کی چیز سے شروع کا کچھ عرصہ دور رہ کر کرتے ہیں اور باقی دنیا جب تجربے کہ مرحلے سے نکل کر مشتاقی یا مہارت کے دور میں قدم رکھتی ہے تو ہم اس وقت جائز ناجائز کی تکرار سے نکل رہے ہوتے ہیں اور مولویوں کی دیکھا دیکھی ہم بھی آخر کار تجربے کے مرحلے میں شامل ہونا شروع ہو جاتے ہیں پر دنیا سے بہت پیچھے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
لڑی کی کیفیت:
مزید جوابات کے لیے دستیاب نہیں

اس صفحے کی تشہیر