لندن:’دہشت گرد‘ حملے میں ایک شخص ہلاک

سید اسد محمود نے 'آج کی خبر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 23, 2013

  1. سید اسد محمود

    سید اسد محمود محفلین

    مراسلے:
    981
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Tolerant
    برطانیہ کے دارالحکومت لندن کے جنوبی مشرقی علاقے وول وچ میں دو حملہ آوروں نے خنجر سے ایک شخص کو ہلاک کر دیا ہے۔ پولیس کی فائرنگ سے دونوں حملہ آور زخمی ہو گئے ہیں۔
    اطلاعات کے مطابق برطانوی حکومت اس واقعے کو مشتبہ’ دہشت گرد حملہ‘ کے طور پر دیکھ رہی ہے تاہم ابھی تک پولیس کی جانب سے اس ضمن میں کوئی بیان نہیں آیا ہے۔ وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون نے اس کو’ حقیقتاً ہلا دینے والا‘ واقعہ قرار دیا ہے۔
    برطانوی وزیر داخلہ ٹیریسا مے نے ہنگامی حالات سے نمٹنے کی کمیٹی’کوبرا‘ کا اجلاس طلب کر لیا ہے۔
    مقامی ممبر پارلیمان نِک رینسفوڈ کا کہنا ہے کہ ہلاک ہونے والا شخص فوجی تھا تاہم ابھی تک اس کی تصدیق نہیں ہو سکی ہے۔
    ٹین ڈاؤننگ سٹریٹ کے مطابق وزیراعظم ڈیوڈ کیمرون فرانس کا دورہ مختصر کر کے واپس پہنچ رہے ہیں۔
    وائٹ ہال کے ذرائع نے بی بی سی کو بتایا ہے کہ گمان ہے کہ یہ دہشت گردی کا واقعہ ہے تاہم ابھی پولیس کی جانب سے کوئی بیان یا رائے سامنے نہیں آئی ہے۔
    وائٹ ہال کے اعلیٰ ذرائع کے مطابق عینی شاہدین کا کہنا ہے کہ انہوں نے حملہ آوروں کو’ اللہ اکبر‘ کہتے ہوئے سنا ہے‘۔
    وزیر داخلہ ٹیریسا مے کے مطابق’ مجھے تصدیق کی گئی ہے کہ اس شخص کو بے رحمی سے ہلاک کیا گیا، دونوں حملہ آور پولیس کی فائرنگ سے زخمی ہو گئے اور اس وقت ہسپتال میں زیرعلاج ہیں‘۔
    [​IMG]
    اس واقعے کے ایک عینی شاہد جیمز کے مطابق’دونوں افراد پاگل تھے، وہ جانور تھے، انہوں نے اس شخص کی لاش کو فرش سے گھسیٹ کر سڑک پر رکھا دیا اور اسے وہیں چھوڑ دیا۔‘
    [​IMG]
    عینی شاہد جیمز نے ایل بی سی ریڈیو سے بات کرتے ہوئے مزید بتایا’ہولناک قتل کے بعد تقریباً بیس سال کی عمر کے دونوں افراد اس کے گرد کھڑے ہو گئے، چاقو اور ایک بندوق لہراتے ہوئے لوگوں سے کہا کہ ان کی تصویریں لیں کیونکہ’وہ خود کو ٹیلی وی پر دیکھنا یا کچھ اور چاہتے تھے۔‘
    [​IMG]
    ’وہ کسی اور چیز سے بلکل غافل تھے اور انہیں صرف یہ پریشانی تھی کہ ان کی تصویریں لی جائیں، وہ ایک سڑک پر کبھی ایک جانب اور کبھی دوسری جانب دوڑ رہے تھے‘۔
    [​IMG]
    ہاتھ میں بغدا لئے یہ شخص (جنوبی لندن والے لہجے میں)کہہ رہا تھا کہ "تم لوگ بلکل محفوظ نہیں رہ سکتے" اور " آنکھ کے بدلے آنکھ، اور دانت کے بدلے دانت" اور "ہم معافی چاہتے ہیں کہ یہ سب کچھ خواتین کو دیکھنا پڑ رہا ہے مگر ہماری خواتین کو بھی ہماری زمین پر یہ سب کچھ دیکھنا پڑتا ہے"
    [​IMG]
     
    • معلوماتی معلوماتی × 6
  2. ملائکہ

    ملائکہ محفلین

    مراسلے:
    10,592
    موڈ:
    Daring
    بس مسلمان تو ہونا لازمی ہے ۔۔۔۔۔ ایسا تو ہو نہیں سکتا ہے یہ بندہ مسلمان نہ ہو:cautious:
     
  3. امجد میانداد

    امجد میانداد محفلین

    مراسلے:
    5,054
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Dead
    :(
     
  4. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    212,256
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    مندرجہ بالا خبروں سے پاگل ہی لگتے ہیں۔
     
    • متفق متفق × 1
  5. مقدس

    مقدس لائبریرین

    مراسلے:
    29,062
    جھنڈا:
    England
    موڈ:
    Tired
    اٹس سو اپ سیٹنگ
    اتنے برے لوگ
    ان کو بھی ایسے ہی مارنا چاہیے جیسے انہوں نے مارا۔۔
    آنکھ کے بدلے آنکھ اور دانت کے بدلے دانت کا کہہ رہے ہیں ناں تو اب ان کے ساتھ بھی یہی ہونا چاہیے
    درندے
     
    • متفق متفق × 2
  6. محسن وقار علی

    محسن وقار علی محفلین

    مراسلے:
    12,013
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    بالکل۔ان درندوں کے ساتھ اس سے بھی بدتر سلوک ہونا چاہیے
     
  7. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    سوری ٹو سے پر آپکے ملک میں درجنوں بار مسلمانیت کے علم برداروں نے یہی کیا ہے
     
    • متفق متفق × 1
  8. ملائکہ

    ملائکہ محفلین

    مراسلے:
    10,592
    موڈ:
    Daring
    ہوسکتا ہے مسلمان لیکن ہر دفعہ ہی انکے ملک میں مسلمان تو نہیں ہوسکتے نا لوگ جو قتل کرتے ہیں اور بم بلاسٹ کرتے ہیں :(
     
  9. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    موسٹ آٍف دی ٹائم دہشت گرد مسلمان ہی ہوتے ہیں جیسے یہ والے
     
  10. ملائکہ

    ملائکہ محفلین

    مراسلے:
    10,592
    موڈ:
    Daring
    نہیں :unsure:
     
  11. نیلم

    نیلم محفلین

    مراسلے:
    11,419
    جھنڈا:
    England
    موڈ:
    Lurking
    ویری سیڈ
     
  12. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    کیا نہیں ؟ کل سے پاکستان مین 4 دھماکے ہو چکے ہین ۔ بوسٹن دھماکوں کی گونج عراق میں اسی ہفتے درجنوں تو ترکی میں 2 بلاسٹ میں مزید درجنوں مارے جا چکے سب کے سب مسلمان دہشت گردوں کے ہاتھوں ہوا ۔
     
  13. ملائکہ

    ملائکہ محفلین

    مراسلے:
    10,592
    موڈ:
    Daring
    جو بےگناہ لوگوں کو مارتے ہیں وہ مسلمان کہاں ہونگے۔۔۔ وہ تو انسان ہی نہیں۔۔۔(n)
     
    • متفق متفق × 2
  14. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    ایسے کہہ کر آپ پلا نہیں جھاڑ سکتے اس مسئلے سے کہ وہ تو مسلمان ہی نہیں انسان ہی نہیں سسٹر ۔ جب تک ایسا ہوتا رہے گا یہ مسئلہ ایسا ہی رہے گا ۔ وہ مسلمان ہی ہیں اور وہ کٹر اسلامک آئیڈیالوجی کے مسلمان ہیں اس کو نا ماننے سے حقیقت بدل نہین جاتی ۔
     
    • متفق متفق × 2
  15. ملائکہ

    ملائکہ محفلین

    مراسلے:
    10,592
    موڈ:
    Daring
    تو پھر کیا کریں
     
  16. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    ہر فرد اگر انفرادی طور پر بھی اپنے گھر مین کام کرے اور دہشت گردی کی نا صرف مذمت کرے بلکہ ہر مشکوک چیز کی خبر دے اپنی گلی محلے پر نظر رکھے ۔ مسجدوں پر نظر رکھے اور ایسی اٹھنے والی ہر لہر کو اٹھنے سے پہلے روکے تو ہی کام بن سکتا ہے ۔ یہ جہادی فنڈ لینے چندے اکٹھے کرنے ٹریننگ دلوانے کے لیے بندے ہر گلی محلے سے ہی لے جاتے ہیں ۔ اسی طرح بچوں میں جب کوئی ایسی چیز دیکھیں جیسے کھلونے ہتھیار اور گولی کا کھیل تو انہین سمجھائیں کہ یہ گندی چیز ہے ۔ مائیں اپنی اولادوں کو ایسے نا چھوڑیں جیسے چھوڑا جا رہا ہے ان کو تب پتہ چلتا ہے جب پولیس ان کے گھر آ کر بتاتی ہے کل پھٹنے والا آپکا بیٹا تھا ۔ بچوں کی پرورش میں ماں کو ہر روز ان کے عادات و اطوار پر نظر رکھنی چاہیے ۔ ایکسٹریم اسلامک آئیڈیالوجیز اور کٹر ملائیت سے اپنے بچوں کو حد درجہ دور رکھا جانا چاہیے ۔ نفرت بھری یا جہادی تقاریر کرنے والوں کو رپورٹ کرائیں اگر بس چلے تو ان کی تقاریر بند کرائیں ۔ جہاد کچھ بھی نہیں کہیں بھی نہیں ساری دہشت گردی پھیلی پڑی ہے ہر ملک میں یہ یاد رہے ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  17. ملائکہ

    ملائکہ محفلین

    مراسلے:
    10,592
    موڈ:
    Daring
    ہمممم آپ ٹھیک کہہ رہے ہیں۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
     
  18. طالوت

    طالوت محفلین

    مراسلے:
    8,353
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Bashful
    سفاکیت کا معاملہ محض مذہب کی آنکھ سے نہیں دیکھا جا سکتا ، مسلمانوں کی دنیا میں حالت زار نے انھیں "فرسٹریشن" کا شکار بنا دیا ہے اسلئے ایسے معاملات میں وہ زیادہ نظر آتے ہیں اس کے ساتھ ساتھ عالمی میڈیا کا غیر جانبدار رویہ بھی بہت اہم ہے مگر یہ سفاکیت ہر مذہب و ملت کےلوگوں میں پائی جاتی ہے اور اس کے مظاہرے اکثر دیکھنے کو ملتے ہیں ، کیا ہندو انتہا پسند تنظیمیں عیسائی انتہا پسند تنظمیں ، کوریائی و جاپانی انتہا پسند اور تو اور امن کے سب سے بڑے پرچارک بودھوں نے جو کچھ کیا ہے کیا وہ قابل قبول ہے ؟؟
    ایسی سفاکیت اور مجرمانہ ذہنیت کو کسی مخصوص گروہ مذہب یا ملت کا رنگ چڑھانا اس کے اصل اسباب سے چشم پوشی ہے۔ اور جو جو ایسا کر رہا ہے وہ اس کے بڑھاوے کے جرم میں برابر کا شریک ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  19. عسکری

    عسکری معطل

    مراسلے:
    18,520
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Daring
    حساب کتاب بھی کوئی چیز ہوتی ہے سرکار
     
  20. طالوت

    طالوت محفلین

    مراسلے:
    8,353
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Bashful
    اس حساب کتاب میں میں نے مسلمانوں کو باہر نہیں نکالا اور نہ ہی اسے "جسٹی فائے" کرنے کی کوشش کی ہے ۔ دنیا بھر میں عدم برداشت کا سب سے بڑا سبب ناانصافی کو خیال کیا جاتا ہے کیا کبھی ہم اس پر بھی بات کریں گے تاکہ شاخوں کی بجائے اس زہریلے پودے کو جڑ سے کاٹا جائے۔ مغربی دنیا نے صدیوں تک مشرق ، امریکہ و افریقہ کا بے رحمی سے خون چوسا پھر اگر کہیں سے گئے تو جاتے جاتے انھیں چرکے بھی لگا گئے جن پر نمک پاشی سے وہ اب بھی باز نہیں آتے۔ اس سارے فساد کی اصل جڑ عالمی نا انصافیاں ہیں ، اگر یہ دور نہیں کی جائیں گی تو یہ گھن چکر ختم نہیں ہو گا۔ شیطان سرمایہ دارانہ نظام اور اس کے چیلوں کی مشکیں جب تک کسی نہ گئیں دہشت گردی سے حقیقی نجات محض خواب ہی رہے گی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1

اس صفحے کی تشہیر