حمد باری تعالیٰ

ناصر عزیز نے 'بزم سخن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اپریل 28, 2020

  1. ناصر عزیز

    ناصر عزیز محفلین

    مراسلے:
    7
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Cheerful
    میرا مالک مرا رازق مرا داتا ہے تو
    جس طرف دیکھیے بس تو نظر آتا ہےتو
    نا امیدی میں بھی امید جگاتا ہے تو
    اک سیاہ رات میں چینٹی کو کِھلاتا ہے تو
    ایک جرثومے سے دنیا میں تباہی لاکر
    اپنے ہونے کی علامات دکھاتا ہے تو
    ہم میں احساسِ سپاسی بھی عطا ہے تیری
    شکر کرنے کی بھی ترغیب دلاتا ہے تو
    لاکھ پردوں میں بھی دیدار ہے ممکن تیرا
    بس ذرا سی ہو بصیرت نظر آتا ہے تو
    بارِ احسان سے سر اٹھتا نہیں ہے مولا
    مجھ گنہگار سے سجدے بھی کراتا ہے تو
    کوییٔ تفریق نہیں سب پہ عطا ہے یکساں
    سب پہ بے پایاں عنایات لٹاتا ہے تو
    جھولیاں بھر کے اچانک انہیں خالی کر کے
    اپنے بندوں کو سبق یوں بھی سکھاتا ہے تو

    ناصر عزیز
     

اس صفحے کی تشہیر