برائے اصلاح

Muhammad Ishfaq نے 'اِصلاحِ سخن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏فروری 11, 2020

  1. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    تجھ پہ ہم اعتبار کیوں کرتے
    اپنے دل کو فگار کیوں کرتے
    جن کو میری خوشی گوارا نہیں
    پھر دل و جاں نثار کیوں کرتے
    گر نہ چیزوں کی قیمتیں بڑھتیں
    لوگ چیخ و پکار کیوں کرتے
    جس نے خوں کے رلا دیے آنسو
    اس سے قول و قرار کیوں کرتے
    جس سے امید ہی نہ اچھےکی ہو
    ربط پھر استوار کیوں کرتے
    جو چمن کو اجاڑ کر رکھ دے
    اُس سے ذکرِ بہار کیوں کرتے
    جس کو احساسِ غم نہیں شاکی
    اُس پہ غم آشکار کیوں کرتے
     
  2. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    34,974
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    یہ درست تقطیع کی غزل ہے ماشاء اللہ، البتہ یہ احساس ہوا کہ اگر ردیف 'کیا کرتے' کر دی جائے تو بہتر تاثر دیتی یے۔

    تجھ پہ ہم اعتبار کیوں کرتے
    اپنے دل کو فگار کیوں کرتے
    ... درست

    جن کو میری خوشی گوارا نہیں
    پھر دل و جاں نثار کیوں کرتے
    ... 'کرتے' فعل سے اگر فاعل 'ہم' فرض کیا جائے تو پہلے مصرع میں 'میری' سے شتر گربہ پیدا ہو جاتا ہے۔ بہتر ہے مفہوم واضح کر کے کہیں

    گر نہ چیزوں کی قیمتیں بڑھتیں
    لوگ چیخ و پکار کیوں کرتے
    چیخ اور پکار کے درمیان واو عطف درست نہیں کہ پکار ہندی لفظ ہے
    لوگ اتنی پکار... بہتر ہو گا

    جس نے خوں کے رلا دیے آنسو
    اس سے قول و قرار کیوں کرتے
    .. درست

    جس سے امید ہی نہ اچھےکی ہو
    ربط پھر استوار کیوں کرتے
    ... اچھک ہو' تقطیع ہوتا ہے، ے کا اسقاط درست نہیں، دوسرے مصرعے میں بھی کس سے ربط؟ اس کا سوال اٹھتا ہے
    یوں کہا جا سکتا ہے
    جس سے امید ہو نہ اچھے کی
    اس سے رثط استوار کیوں کرتے

    جو چمن کو اجاڑ کر رکھ دے
    اُس سے ذکرِ بہار کیوں کرتے
    ... درست

    جس کو احساسِ غم نہیں شاکی
    اُس پہ غم آشکار کیوں کرتے
    ... شاکی تخلص ہے؟ درست ہے شعر، غم نہیں کی بہ نسبت 'غم نہ ہو' بہتر لگتا ہے مجھے
     
  3. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    بہت بہت شکریہ آپ نے بہت اچھے سے راہنمائی کی۔بندہ کی حوصلہ افزائی ہوئی۔ اللہ آپ کو خوش رکھے۔
     
  4. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    اصلاح کے بعد
    تجھ پہ ہم اعتبار کیوں کرتے
    اپنے دل کو فگار کیوں کرتے
    جن کو میری خوشی گوارا نہیں
    وہ دل و جاں نثار کیوں کرتے
    گر نہ چیزوں کی قیمتیں بڑھتیں
    لوگ اتنی پکار کیوں کرتے
    جس نے خوں کے رلا دیے آنسو
    اس سے قول و قرار کیوں کرتے
    جس سے امید ہو نہ اچھے کی
    اس سے ربط استوار کیوں کرتے
    جو چمن کو اجاڑ کر رکھ دے
    اُس سے ذکرِ بہار کیوں کرتے
    جس کو احساسِ غم نہ ہو شاکی
    اُس پہ غم آشکار کیوں کرتے
     
  5. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    پرورش کا جو مول ہی پا لے
    اس کو رب شمار کیوں کرتے
    جب ترے آنے کی امید نہ ہو
    ہم ترا انتظار کیوں کرتے

    ان اشعار کی بھی اصلاح کردیجئے گا۔
    شکریہ ۔
    دعا گو ۔
    محمداشفاق
     
    آخری تدوین: ‏فروری 12, 2020
  6. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    34,974
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    پرورش کا جو مول ہی پا لے
    اس کو رب شمار کیوں کرتے
    .. کیا کہنا چاہتے ہیں؟ سمجھ نہیں سکا 'مول' بمعنی قیمت؟ دوسرا مصرع بحر سے خارج ہے
    پھر اسے رب شمار کیوں کرتے
    ہو سکتا ہے، اس کا مطلب جو بھی ہو۔

    جب ترے آنے کی امید نہ ہو
    ہم ترا انتظار کیوں کرتے
    .. درست

    البتہ
    جن کو میری خوشی گوارا نہیں
    وہ دل و جاں نثار کیوں کرتے
    مفہوم سے عاری ہو گیا ہے
     
  7. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    وہ ‘‘ کی جگہ ‘‘ہم ’’ٹھیک رہے گا؟
    ہم دل و جان نثار کیوں گرتے
     
    آخری تدوین: ‏فروری 13, 2020
  8. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    912
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    ہم کہیں گے تو شتر گربہ در آئے گا۔
     
  9. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    ان کو میری خوشی گوارا نہیں
    وہ دل و جاں نثار کیوں کرتے
     
  10. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    سر ! کیا اس طرح ٹھیک ہے ؟
     
    آخری تدوین: ‏فروری 13, 2020
  11. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    34,974
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    مفہوم میری سمجھ میں تو نہیں آ سکا، محض 'جن' کو 'ان' سے بدلنے کے علاوہ تو کچھ تبدیلی نہیں ہے
     
  12. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    مجھ سے ملنا جسے گوارا نہ ہو
    وہ دل و جاں نثار کیوں کرتے
    اب دیکھیں
     
  13. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    34,974
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    وہ مراد محبوب؟ یہ تو زبردستی ہے کہ محبوب کو مجبور کیا جائے کہ وہ آپ کے عشق میں شہید ہو جائے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  14. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    برائے مہربانی درستی فرمادیں۔
     
    آخری تدوین: ‏فروری 15, 2020
  15. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    کیا باقی تمام اشعار ٹھیک ہیں؟
     
    آخری تدوین: ‏فروری 15, 2020
  16. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    34,974
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    باقی اشعار تو اصلاح کے ضمن میں جو مشورے دیے تھے، وہ تم قبول کر چکے، اس لیے درست ہی ہیں۔ بعد میں دو اشعار مزید پوسٹ کیے تھے، ان میں بھی ایک درست قرار دیا تھا۔ شمار اور نثار قوافی والے شعر درست نہیں ہوئے ہیں، باقی درست ہیں
     
  17. Muhammad Ishfaq

    Muhammad Ishfaq محفلین

    مراسلے:
    116
    غزل میں کم از کم کتنے اشعار ہونے چاہیئے۔
     
  18. محمّد احسن سمیع :راحل:

    محمّد احسن سمیع :راحل: محفلین

    مراسلے:
    912
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    کم از کم چار تو ہوں، پانچ سے سات کا عدد نہایت مناسب رہتا ہے۔
     
    • متفق متفق × 1

اس صفحے کی تشہیر