برائے اصلاح

falsafi نے 'اِصلاحِ سخن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اگست 11, 2018

ٹیگ:
  1. falsafi

    falsafi محفلین

    مراسلے:
    115
    سر الف عین

    ہر جگہ تو مسافر ٹھہرتا نہیں
    منزلیں خاص ہوتی ہیں رستا نہیں

    چاند جب تک فلک پر چمکتا نہیں
    رات کا حسن بھی تو نکھرتا نہیں

    میرے اشعار سب کے لیے ہیں مگر
    ہر کوئی ذوق مجھ سا تو رکھتا نہیں

    خشک سالی مرے شہر کی دیکھنے
    روز آتا ہے بادل برستا نہیں

    دن اکیلے گزارا ہے مشکل مگر
    رات آسان گزرے کی لگتا نہیں

    وقت کی تیز رفتار کو کیا ہوا
    ہجر کا ایک لمحہ گزرتا نہیں

    بے ثباتی ہے دنیا مگر آدمی
    اعتبار آدمی پر بھی کرتا نہیں​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  2. وجاہت حسین

    وجاہت حسین محفلین

    مراسلے:
    144
    جھنڈا:
    Oman
    موڈ:
    Cheerful
    ماشاءاللہ. بہت خوب.
     
  3. عندلیب راجہ

    عندلیب راجہ محفلین

    مراسلے:
    325
  4. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    31,662
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    باقی سب درست پے بس قوافی درست نہیں میرے خیال میں اگرچہ کچھ لوگ جائز قرار دیتے ہیں
     
  5. falsafi

    falsafi محفلین

    مراسلے:
    115
    نوازش

    شکریہ سر، فنی اعتبار سے 'رستا' کے اصلی 'ت' کی وجہ سے حرف روی 'ت' شمار کیا تھا۔ جس سے قافیہ میں گنجائش بن جاتی ہے شاید۔ آپ بہتر وضاحت کر سکتے ہیں۔
     
    آخری تدوین: ‏اگست 13, 2018

اس صفحے کی تشہیر