اردو کمپیوٹنگ اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے زمرے کی نئی مدیر: حمیرا عدنان صاحبہ

چلیے کوئی بات نہیں! محفل میں رہ کر سب کی رائے کا خیال رکھنا ہوتا ہے۔

ویسے ممنوعہ موضوعات کے علاوہ بھی امکانات کی سرحدیں بہت وسیع ہیں سو ہم بطورِ شاگرد حاضر ہیں۔ کچھ نہ کچھ سیکھ کر ہی دم لیں گے۔ :)
اگر کسی ایسے ممنوعہ موضوع کو ٹیکنالوجی کی اویئرننس کے لیے استعمال کیا جائے تو کیا تب بھی غلط ہے؟
کسی کے سیکورٹی سسٹمز کو مونیٹر کرنا تو تجسس کے زمرے میں ہی آتا ہے
قرآن پاک میں اللہ تعالیٰ نے تجسّس کرنے سے منع فرمایا ہے.
اللہ تعالیٰ قرآن پاک میں فرماتے ہیں کہ
يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا اجْتَنِبُوا كَثِيرًا مِنَ الظَّنِّ إِنَّ بَعْضَ الظَّنِّ إِثْمٌ وَلَا تَجَسَّسُوا وَلَا يَغْتَبْ بَعْضُكُمْ بَعْضًا أَيُحِبُّ أَحَدُكُمْ أَنْ يَأْكُلَ لَحْمَ أَخِيهِ مَيْتًا فَكَرِهْتُمُوهُ وَاتَّقُوا اللَّهَ إِنَّ اللَّهَ تَوَّابٌ رَحِيمٌ [الحجرات: 12].

ترجمہ: اے اہل ایمان ! بہت گمان کرنے سے احتراز کرو کہ بعض گمان گناہ ہیں اور ایک دوسرے کے حال کا تجسس نہ کیا کرو اور نہ کوئی کسی کی غیبت کرے کیا تم میں سے کوئی اس بات کو پسند کرے گا کہ اپنے مرے ہوئے بھائی کا گوشت کھائے اس سے تو تم ضرور نفرت کرو گے (تو غیبت نہ کرو) اور اللہ کا ڈر رکھو بیشک اللہ توبہ قبول کرنے والا مہربان ہے.
 

محمداحمد

لائبریرین
اگر کسی ایسے ممنوعہ موضوع کو ٹیکنالوجی کی اویئرننس کے لیے استعمال کیا جائے تو کیا تب بھی غلط ہے؟

میرا خیال ہے کہ سیکھنے کی غرض سے تو ہرگز کوئی حرج نہیں ہے تاہم پبلک فورم پر ایسی چیزوں کی اشاعت سے اس بات کا امکان ہوتا ہے کہ تخریبی عناصر اسے سیکھ کر اپنے مذموم مقاصد کے لئے استعمال نہ کرلیں۔

بہرکیف یہ ایک بحث طلب امر ہے نیز یہ کہ اس سلسلے میں انتظامیہ کا موقف بھی اہم ہے۔
 

زیک

تکنیکی معاون
کل ہی لوگوں کو کچھ سیکھنے کی کوشش کی تھی لیکن لوگوں نے تو ہمیں ہی سکھا دیا کہ یہاں ایسی باتیں سیکھانا منع ہے ،
انشاءاللہ اب یہی پر ہوں اور کوشش کر رہی ہوں پہلے کی طرح فعال رہنے کی اور لگتا ہے کہ مدیر بھی اسی لیے بنائی گئی ہوں کہ بس یہی کی ہوکر رہ جاؤں
یعنی سر منڈاتے ہی اولے پڑے
 

سین خے

محفلین
بہت بہت شکریہ احمد بھائی
کل ہی لوگوں کو کچھ سیکھنے کی کوشش کی تھی لیکن لوگوں نے تو ہمیں ہی سکھا دیا کہ یہاں ایسی باتیں سیکھانا منع ہے ،
انشاءاللہ اب یہی پر ہوں اور کوشش کر رہی ہوں پہلے کی طرح فعال رہنے کی اور لگتا ہے کہ مدیر بھی اسی لیے بنائی گئی ہوں کہ بس یہی کی ہوکر رہ جاؤں

اگر کسی ایسے ممنوعہ موضوع کو ٹیکنالوجی کی اویئرننس کے لیے استعمال کیا جائے تو کیا تب بھی غلط ہے؟
کسی کے سیکورٹی سسٹمز کو مونیٹر کرنا تو تجسس کے زمرے میں ہی آتا ہے
قرآن پاک میں اللہ تعالیٰ نے تجسّس کرنے سے منع فرمایا ہے.
اللہ تعالیٰ قرآن پاک میں فرماتے ہیں کہ
يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا اجْتَنِبُوا كَثِيرًا مِنَ الظَّنِّ إِنَّ بَعْضَ الظَّنِّ إِثْمٌ وَلَا تَجَسَّسُوا وَلَا يَغْتَبْ بَعْضُكُمْ بَعْضًا أَيُحِبُّ أَحَدُكُمْ أَنْ يَأْكُلَ لَحْمَ أَخِيهِ مَيْتًا فَكَرِهْتُمُوهُ وَاتَّقُوا اللَّهَ إِنَّ اللَّهَ تَوَّابٌ رَحِيمٌ [الحجرات: 12].

ترجمہ: اے اہل ایمان ! بہت گمان کرنے سے احتراز کرو کہ بعض گمان گناہ ہیں اور ایک دوسرے کے حال کا تجسس نہ کیا کرو اور نہ کوئی کسی کی غیبت کرے کیا تم میں سے کوئی اس بات کو پسند کرے گا کہ اپنے مرے ہوئے بھائی کا گوشت کھائے اس سے تو تم ضرور نفرت کرو گے (تو غیبت نہ کرو) اور اللہ کا ڈر رکھو بیشک اللہ توبہ قبول کرنے والا مہربان ہے.

جناب آپ کا انتہائی افسوسناک رویہ ہے!
آپ ایسے ظاہر کر رہی ہیں جیسے آپ کے ساتھ زیادتی ہوئی ہو۔ اگر ہمیں آپ سے اختلاف پیدا ہوگا تو آپ اس طرح کا رد عمل دیں گی؟ کیا اس طرح کا طرزِ عمل بطور مدیر آپ کو زیب دیتا ہے؟
اور سب سے زیادہ افسوسناک عمل قرآن کو بیچ میں لانا ہے۔
بات ختم ہو چکی تھی۔ لڑی کو حذف کر دیا گیا۔ یہاں پر اس بات کا تذکرہ کرنے کا کیا مقصد ہے؟
آپ نے نور سعدیہ شیخ کی ماڈریٹرشپ پر دھاگہ دیکھا ہے؟ ان پر کتنی تنقید ہوئی پر انھوں نے خندہ پیشانی سے سب کی تنقید سنی اور رد عمل ظاہر نہیں کیا۔ ہر کسی سے غلطی ہو سکتی ہے۔ ہر کوئی انسان ہے۔ اگر کسی کو آپ سے اختلاف پیدا ہو یا کوئی تنقید کرے تو دل بڑا کر کے اپنے عمل پر غور و فکر کرنا چاہئے نہ کہ ایسا بتایا جائے کہ آپ کے ساتھ ناجانے کیا ہو گیا ہے۔
سب نے آپ سے تمیز کے دائرے میں رہ کر بات کی تھی۔
میری آئی ٹی فیلڈ نہیں ہے لیکن میرا تھوڑا بہت واسطہ ضرور رہا ہے۔ آپ سے کسی ذاتی دشمنی کی بنیاد پر اختلاف نہیں کیا گیا تھا۔ جو بات اصولی تھی وہ کی گئی تھی۔
 
آخری تدوین:
جناب آپ کا انتہائی افسوسناک رویہ ہے!
آپ ایسے ظاہر کر رہی ہیں جیسے آپ کے ساتھ زیادتی ہوئی ہو۔ اگر ہمیں آپ سے اختلاف پیدا ہوگا تو آپ اس طرح کا رد عمل دیں گی؟ کیا اس طرح کا طرزِ عمل بطور مدیر آپ کو زیب دیتا ہے؟
اور سب سے زیادہ افسوسناک عمل قرآن کو بیچ میں لانا ہے۔
بات ختم ہو چکی تھی۔ لڑی کو حذف کر دیا گیا۔ یہاں پر اس بات کا تذکرہ کرنے کا کیا مقصد ہے؟
آپ نے نور سعدیہ شیخ کی ماڈریٹرشپ پر دھاگہ دیکھا ہے؟ ان پر کتنی تنقید ہوئی پر انھوں نے خندہ پیشانی سے سب کی تنقید سنی اور رد عمل ظاہر نہیں کیا۔ ہر کسی سے غلطی ہو سکتی ہے۔ ہر کوئی انسان ہے۔ اگر کسی کو آپ سے اختلاف پیدا ہو یا کوئی تنقید کرے تو دل بڑا کر کے اپنے عمل پر غور و فکر کرنا چاہئے نہ کہ ایسا بتایا جائے کہ آپ کے ساتھ ناجانے کیا ہو گیا ہے۔
سب نے آپ سے تمیز کے دائرے میں رہ کر بات کی تھی۔
میری آئی ٹی فیلڈ نہیں ہے لیکن میرا تھوڑا بہت واسطہ ضرور رہا ہے۔ آپ سے کسی ذاتی دشمنی کی بنیاد پر اختلاف نہیں کیا گیا تھا۔ جو بات اصولی تھی وہ کی گئی تھی۔
ارے سائرہ بہن یقین مانیں میں بالکل ناراض نہیں ہوں قرآن مجید کا حوالہ صرف اس لیے دیا کہ اگر کوئی کسی سیکورٹی سسٹم کو ہیک کرتا ہے اور ان کو مونیٹر کرتا ہے تو یہ جرم بھی ہے اور یہ تجسس کے زمرے میں آتا ہے اور قرآن میں اللہ تعالیٰ نے تجسس کرنے سے منع فرمایا ہے،
باقی یقین مانیں نہ تو میں نے کسی کی بات کا برا مانا ہے اور نہ ہی اس بات کو منفی انداز میں لیا ہے دراصل غلطی میری ہی تھی جب لڑی حذف کر دی گئی تھی تو مجھے اس پر بات نہیں کرنی چاہیے تھی.
ویسے احمد بھائی سے مذاقاً بات کی تھی کسی کے کمنٹس پر طنز یا تنقید نہیں کی تھی
 

سین خے

محفلین
ارے سائرہ بہن یقین مانیں میں بالکل ناراض نہیں ہوں قرآن مجید کا حوالہ صرف اس لیے دیا کہ اگر کوئی کسی سیکورٹی سسٹم کو ہیک کرتا ہے اور ان کو مونیٹر کرتا ہے تو یہ جرم بھی ہے اور یہ تجسس کے زمرے میں آتا ہے اور قرآن میں اللہ تعالیٰ نے تجسس کرنے سے منع فرمایا ہے،
باقی یقین مانیں نہ تو میں نے کسی کی بات کا برا مانا ہے اور نہ ہی اس بات کو منفی انداز میں لیا ہے دراصل غلطی میری ہی تھی جب لڑی حذف کر دی گئی تھی تو مجھے اس پر بات نہیں کرنی چاہیے تھی.
ویسے احمد بھائی سے مذاقاً بات کی تھی کسی کے کمنٹس پر طنز یا تنقید نہیں کی تھی

آپ نے خود ہی یہ کہا ہے

اگر کسی ایسے ممنوعہ موضوع کو ٹیکنالوجی کی اویئرننس کے لیے استعمال کیا جائے تو کیا تب بھی غلط ہے؟

آپ کی اس بات سے میں کیا سمجھوں جناب؟ مجھے تو یہی سمجھ آیا کہ آپ اب تک بحث کرنا چاہتی ہیں کہ کیوں غلط ہے اور یہ کہیں سے بھی مذاق محسوس نہیں ہو رہا ہے۔
اس کے بعد آپ تجسس رکھنے کے حوالے سے قرآن کی آیت پیش کرتی ہیں تو بتائیے کیا سمجھا جائے؟ یعنی تجسس رکھنا غلط ہے لیکن لوگوں کی جاسوسی کو روکنے کے لئے ہم بھی وہی کام سیکھ لیں۔

اس کے علاوہ اس سے پہلے والا جو مراسلہ ہے اس میں آپ نے لکھا کہ کچھ سکھانے کی کوشش کی تھی۔ اب یہاں پر جن لوگوں نے اس لڑی کا مطالعہ نہیں کیا وہ اس بات کا کیا مطلب لیں گے؟ لگ تو یہ رہا ہے کہ آپ کی کوشش اچھی تھی پر آپ کو منع کیا گیا۔

آخری بات حمیرا سس اگر شرمندہ کرنے کا ارادہ ہوتا تو میں عالمی قوانین میں private property کے unauthorized access کے متعلق penalties کا مواد یہاں کاپی کر دیتی۔ یہ ethical hacking نہیں ہے جو آپ سکھا رہی تھیں اور ethical hacking سے متعلق بھی بہت زیادہ بحث و مباحثہ پایا جاتا ہے اور اس کے سیکھنے والوں کے لئے یقینی بنانے کی کوشش کی جاتی ہے کہ وہ الٹے سیدھے کاموں میں ملوث نہ ہوں۔
 
آخری تدوین:
اگر کسی ایسے ممنوعہ موضوع کو ٹیکنالوجی کی اویئرننس کے لیے استعمال کیا جائے تو کیا تب بھی غلط ہے؟
آپ کی اس بات سے میں کیا سمجھوں جناب؟ مجھے تو یہی سمجھ آیا کہ آپ اب تک بحث کرنا چاہتی ہیں کہ کیوں غلط ہے
یقین کریں سائرہ بہن اس مراسلے کا مقصد صرف اور صرف احمد بھائی کی رائے جاننا تھا کچھ اور نہیں باقی واقعتاً میں اپنی غلطی کو تسلیم کرتی ہوں کہ مجھے اوپن فورم پر ایسا نہیں لکھنا چاہیے تھا

خیر میں خود اس ہیکنگ کا شکار ہوئی اور کمپنی سے رجوع کرنے پر پتا چلا کہ یہ معاملہ ہوا تھا تو تب میں نے انٹرنیٹ پر اس کے بارے میں تحقیق ورنہ پہلے تو میں بھی اس چیز کو مکمل محفوظ سمجھتی تھی.

میں آپ کی زیک بھائی اور غدیر بہنا کی ممنون ہوں جنہوں نے مجھے پہلے ہی انتباہ کر دیا کہ میں غلط کرنے جا رہی ہوں
 

م حمزہ

محفلین
یقین کریں سائرہ بہن اس مراسلے کا مقصد صرف اور صرف احمد بھائی کی رائے جاننا تھا کچھ اور نہیں باقی واقعتاً میں اپنی غلطی کو تسلیم کرتی ہوں کہ مجھے اوپن فورم پر ایسا نہیں لکھنا چاہیے تھا

خیر میں خود اس ہیکنگ کا شکار ہوئی اور کمپنی سے رجوع کرنے پر پتا چلا کہ یہ معاملہ ہوا تھا تو تب میں نے انٹرنیٹ پر اس کے بارے میں تحقیق ورنہ پہلے تو میں بھی اس چیز کو مکمل محفوظ سمجھتی تھی.

میں آپ کی زیک بھائی اور غدیر بہنا کی ممنون ہوں جنہوں نے مجھے پہلے ہی انتباہ کر دیا کہ میں غلط کرنے جا رہی ہوں
بہت بڑا دل اور بڑی ہمت کی ضرورت ہوتی اس طرح غلطی تسلیم کرنے کیلئے۔ اور وہ بھی سرِ بازار۔ لوگ ایسے موقعوں پر اکثر اپنی انا کیلئے دوسروں کو مات دینے کی ہر جائز و ناجائز کوشش کرتے ہیں۔ آپ کا رویہ واقعی قابلِ داد ہے۔ یو آر گریٹ۔ جزاک اللہ یا اختی!
 
Top