فراز ہم خوابوں کے بیوپاری تھے - فراز

سارہ خان نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جون 3, 2009

  1. سارہ خان

    سارہ خان محفلین

    مراسلے:
    15,819
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    ہم خوابوں کے بیوپاری تھےپر اس میں ہوا نقصان بڑا
    کچھ بخت میں ڈھیروں کالک تھی کچھ غضب کا کال پڑا
    ہم راکھ لئے ہیں‌جھولی میں‌اور سر پہ ہے ساہوکار کھڑا
    جب دھرتی صحرا صحرا تھی ہم دریا دریا روئے تھے
    جب ہاتھ کی ریکھائیں چُپ تھیں اور سُرسنگیت میں کھوئے تھے
    تب ہم نے جیون کھیتی میں کچھ خواب انوکے بوئے تھے
    کچھ خواب سجل مسکانوں کےکچھ بول بہت دیوانوں کے
    کچھ نیر و وفا کی شمعوں کے کچھ پاگل پروانوں کے
    کچھ لفظ جنہیں معنی نہ ملیں کچھ گیت شکستہ جانوں کے
    پھر اپنی گھائل آنکھوں سے خوش ہوکے لہو چھڑکایا تھا
    ماٹی میں ماس کی کھاد بھری اور نس نس کو زخمایا تھا
    جب فصل کٹی تو کیا دیکھا،کچھ درد کے ٹوٹے گجرے تھے
    کچھ زخمی خواب تھے کانٹوں پرکچھ خاکستر سے گجرے تھے
    اور دور اُفق کے ساگر میں کچھ ڈولتے ڈولتے بجرے تھے
    اب پاوں کھڑاوں دھول بھری اور تن پہ جوگ کا چولا ہے
    سب سنگی ساتھی بھید بھرے کوئی ماشہ ہے کوئی تولہ ہے
    اب گھاٹ ہے نہ گھر دہلیز ہے نہ در اب پاس رہا کیا ہے بابا
    بس اک تن کی گٹھڑی باقی ہے جا یہ بھی تو لے جا بابا
    ہم بستی کو چھوڑے جاتے ہیں تو اپنا قرض چکا بابا

    فراز
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 11
    • زبردست زبردست × 2
  2. نایاب

    نایاب لائبریرین

    مراسلے:
    13,421
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Goofy
    السلام علیکم
    سارہ بٹیا
    ہنستی مسکراتی رہیں آمین
    بہت شکریہ شامل محفل کرنے کا
    بہت خوب کلام ہے
    جناب ابن انشاء ( اللہ غریق رحمت کرے ) کا
    نایاب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,564
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    واہ واہ واہ، کیا خوبصورت کلام ہے کیا لاجواب نظم ہے!

    بہت شکریہ سارہ خان شیئر کرنے کیلیے!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. شاہ حسین

    شاہ حسین محفلین

    مراسلے:
    2,900
    بہت زبردست شراکت ہے ۔
    لاجواب ۔ شامل کرنے کا بہت شکریہ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,288
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    یہ نظم احمد فراز کی ہے۔

    ان کی زبان سے بھی سنیے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  6. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,564
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شکریہ اعظم صاحب تصحیح کیلیے۔ عنوان اور متن میں شاعر کا نام درست کر دیا گیا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  7. سارہ خان

    سارہ خان محفلین

    مراسلے:
    15,819
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    شکریہ محمد بلال اعظم۔۔۔ یہ انداز تو ابن انشاء کا ہی لگتا ہے شاعری کا۔۔ اور ابھی گوگل کیا تو کئی لنکس پر ابن انشاء کے نام سے ہی ہے ۔۔:idontknow:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  8. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,288
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    میں نے اسی لئے احمد فراز کی ویڈیو بھی ساتھ دی ہے، کتاب کا نام مجھے یاد نہیں آ رہا،"شہر سخن آراستہ ہے" میں موجود ہے اور کتاب شاید "خواب گل پریشاں ہے"۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  9. امیداورمحبت

    امیداورمحبت محفلین

    مراسلے:
    3,074
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    خوب ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
     
  10. سید شہزاد ناصر

    سید شہزاد ناصر محفلین

    مراسلے:
    9,495
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    • ہم خوابوں کے بیوپاری تھے
      پر اس میں ہوا نقصان بڑا
      کچھ بخت میں ڈھیروں کالک تھی
      کچھ اب کے غضب کا کال پڑا
      ہم راکھ لیے ہیں جھولی میں
      اور سر پے ہے ساہوکار کھڑا
      یہاں بوند نہیں ہے دیوے میں
      وہ بھاج بیاج کی بات کرے
      ہم بانجھ زمین کو تکتے ہیں
      وہ ڈھور اناج کی بات کرے
      ہم کچھ دن کی مہلت مانگیں
      وہ آج ہی آج کی بات کرے
      جب دھرتی صحرا صحرا تھی
      ہم دریا دریا روئے تھے
      جب ہاتھ کی ریکھائیں چپ تھیں
      اور سر سنگیت میں کھوءے تھے
      تب ہم نے جیون کھیتی میں
      کچھ خواب انوکھے بوءے تھے
      کچھ خواب سجل مسکانوں کے
      کچھ بول کبت دیوانوں کے
      کچھ لفظ جنہیں معنی نہ ملیں
      کچھ گیت شکستہ جانوں کے
      کچھ نیر وفا کی شمعوں کے
      کچھ پر پاگل پروانوں کے
      پھر اپنی گھائل آنکھوں سے
      خوش ہو کے لہو چھڑکایا تھا
      ماٹی میں ماس کی کھاد بھری
      اور نس نس کو زخمایا تھا
      اور بھول گئے پچھلی رت میں
      کیا کھویا تھا کیا پایا تھا
      ہر بار گگن نے وہم دیا
      اب کے برکھا جب آئے گی
      ہر بیج سے کونپل پھوٹے گی
      اور ہر کونپل پھل لائے گی
      سر پر چھایا چھتری ہو گی
      دھوپ گھٹا بن جاءے گی
      جب فصل کٹی تو کیا دیکھا
      کچھ درد کے ٹوٹے گجرے تھے
      کچھ زخمی خواب تھے کانٹوں پر
      کچھ خاتستر سے کجرے تھے
      اور دور افق کے ساگر میں
      کچھ دولتے ڈوبتے بجرےے تھے
      اب پاؤں کھڑاؤں دھول بھری
      اور تن پہ جوگ کا چولا ہے
      سب سنگی ساتھی بھید بھرے
      کوئی ماشہ ہے کوئی تولہ ہے
      اس تاک میں یہ اس گھات میں وہ
      ہر اور ٹھگوں کا ٹولہ ہے
      اب گھاٹ نہ گھر دہلیز نہ در
      اب پاس بچا ہے کیا بابا
      بس تن کی گٹھڑی باقی ہے
      جا یہ بھی تو لے جا بابا
      ہم بستی چھوڑے جاتے ہیں
      تو اپنا قرض چکا بابا
     
    • زبردست زبردست × 5
  11. محسن وقار علی

    محسن وقار علی محفلین

    مراسلے:
    12,013
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    واہ۔شہزاد انکل:love: اعلیٰ ترین(y)(y)
    مجھے الفاظ نہیں مل رہے تعریف کرنے کو:silent3:
    بہت شکریہ شریک محفل کرنے کا :bighug:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. محسن وقار علی

    محسن وقار علی محفلین

    مراسلے:
    12,013
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    ٹیگ نامہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  13. باباجی

    باباجی محفلین

    مراسلے:
    3,854
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Curmudgeon
    واہ بہت خوب کلام
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  14. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,288
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    بہت خوبصورت نظم ہے۔
    لیکن شاعر "ابنِ انشا" نہیں بلکہ "احمد فراز" کی ہے اور کتاب ہے "خوابِ گل پریشاں ہے"۔
    یہ لنک دیکھیے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  15. محسن وقار علی

    محسن وقار علی محفلین

    مراسلے:
    12,013
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    :zabardast1:
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  16. سید شہزاد ناصر

    سید شہزاد ناصر محفلین

    مراسلے:
    9,495
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    جناب عالی
    لہجہ اور انداز ابنِ انشا کا ہے اور جو لنک آپ نے دیا ہے اس نظم اور اس نظم کے متن میں فرق ہے
    اور اس سے پہلے بھی کئی دفعہ اسی بات پر بحث ہو چکی ہے کہ یہ کس کی نظم ہے
    اللہ بہتر جانتا ہے
    آپ نے فراز کے مجموعہ کلام میں یہ نظم دیکھی ہے؟
    اور کیا اس نظم اور فراز کی نظم کے متن میں فرق ہے؟
    اس بارے میں بہت ابہام پایا جاتا ہے
    رہنمائی فرمائیں تو مشکور ہوں گا
    شاد و آباد رہیں
     
  17. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,288
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    میرے خیال میں ابہام تو دور ہو جانا چاہیے تھا کیونکہ فراز نے اپنی نظم ہی پڑھی ہے۔ دونوں نظموں کے الفاظ بھی ایک ہی جیسے ہیں اور میرے پاس جو "خوابِ گل پریشاں ہے" ہے، اُس کے صفحہ 117 پہ یہی نظم بعینہٖ موجود ہے۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 2
  18. مہ جبین

    مہ جبین محفلین

    مراسلے:
    6,246
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • متفق متفق × 1
  19. سید شہزاد ناصر

    سید شہزاد ناصر محفلین

    مراسلے:
    9,495
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    رہنمائی کا بہت بہت شکریہ
    شاد و آباد رہیں
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  20. سید شہزاد ناصر

    سید شہزاد ناصر محفلین

    مراسلے:
    9,495
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    پسند کرنے کا شکریہ
    شاد و آباد رہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر