پاکستان اور سعودی عرب کے مابین حج معاہدہ 2020 طے پا گیا

جاسم محمد نے 'آج کی خبر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 4, 2019

  1. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    14,360
    پاکستان اور سعودی عرب کے مابین حج معاہدہ 2020 طے پا گیا
    ویب ڈیسک بدھ 4 دسمبر 2019
    [​IMG]
    معاہدے کے تحت آئندہ حج کے موقع پر 2 لاکھ پاکستانی فریضہ حج ادا کریں گے۔ فوٹو: فائل


    اسلام آباد / ریاض: پاکستان اور سعودی عرب کے مابین طے ہونے والے معاہدے کے مطابق آئندہ سال 2 لاکھ پاکستانی حج کا فریضہ ادا کریں گے۔

    وزارت مذہبی امور کی جانب سے جاری ہونے والے بیان میں بتایا گیا ہے کہ پاکستان اور سعودی عرب کے مابین حج معاہدہ 2020ء طے پا گیا ہے، معاہدے پر پاکستان کی جانب سے وفاقی وزیرمذہبی امور نور الحق قادری نے اور سعودی عرب کے ڈاکٹر صالح بن بنتن نے دستخط کئے، معاہدے کے تحت آئندہ حج کے موقع پر 2 لاکھ پاکستانی فریضہ حج ادا کریں گے۔

    ترجمان مذہبی امور عمران صدیقی نے بتایا ہے کہ حج معاہدے سے قبل وفاقی وزیر نور الحق قادری کی سربراہی میں پاکستانی وفد نے سعودی وزیر حج و عمرہ ڈاکٹر صالح بن بنتن اور ان کی ٹیم سے حج انتظامات پر مذاکرات کیے، جس میں پاکستانی وفد نے آئندہ سال حج کے لئے عازمین کو مزید بہتر سہولیات کی فراہمی کے مطالبات پیش کئے۔

    وفاقی وزیر نور الحق قادری نے مطالبہ کیا کہ روڈ ٹو مکہ پراجیکٹ میں دیگر شہروں کی شمولیت ، مشاعر میں اضافی سہولیات ، ملکی کوٹہ میں مزید اضافہ کیا جائے۔ جس پر سعودی وزیر حج صالح بنتن نے جواب دیا کہ منیٰ میں گنجائش کم ہے تاہم حج کوٹہ میں اضافہ کی درخواست پراعلیٰ حکام سے بات کی جائے گی، پچھلے سال روڈ ٹو مکہ پراجیکٹ میں پاکستان کی شمولیت نہایت کامیاب رہی، دیگر شہروں تک روڈ ٹو مکہ پراجیکٹ کی توسیع کیلئے سعودی وزارتِ داخلہ سے بات کی جائے گی۔

    ترجمان وزارت مذہبی امور کے مطابق مذاکرات میں منیٰ، مزدلفہ، عرفات میں شکایات کے ازالے کے لئے سعودی پاک جوائنٹ ورکنگ کمیٹی کے قیام کا فیصلہ کیا گیا، پاکستان اور سعودی اراکین پر مشتمل 10 رکنی کمیٹی مسائل کے ازالے کیلئے موقع پر احکامات جاری کرے گی۔ کمیٹی مشاعر میں پاکستان کی مرضی کے مطابق کھانا اور سفری سہولیات کی فراہمی کو یقینی بنائے گی۔
     

اس صفحے کی تشہیر