نعتیہ اشعار

جاسمن نے 'حمد، نعت، مدحت و منقبت' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اکتوبر 11, 2018

  1. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,465
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    میں جو اِک برباد ہوں، آباد رکھتا ہے مجھے
    دیر تک اسمِ محمدؐ شاد رکھتا ہے مجھے
    (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  2. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,465
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    درودِ رحمتِ کونین کا ہے کیا کہنا
    دیارِ مرگ میں آئے ہیں زندگی کی طرح
    کھُلی ہیں روح پر خُلدِ نجات کی راہیں
    جب ایک سانس لیا میں نے اُمتی کی طرح
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,465
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    لب پہ جب بھی محمد کا نام آگیا
    ہر کسی کو میرا احترام آگیا
    آ بھی جائے گی اشرف مجھے زندگی
    جب درود آگیا، جب سلام آگیا
    (اشرف جاوید ملک)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. ام اویس

    ام اویس محفلین

    مراسلے:
    1,753
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    اک چاند جو کرتا نہ میری پشت پناہی
    مٹھی میں اندھیرا مجھے بھرنے ہی لگا تھا
    صلی الله علیہ وسلم

    مشتاق عاجز
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. ام اویس

    ام اویس محفلین

    مراسلے:
    1,753
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    خوبانِ جہاں کی ہے تیرے حُسن سے خُوبی،
    تُو خوب نہ ہوتا تو کوئی خوب نہ ہوتا۔!!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  6. ام اویس

    ام اویس محفلین

    مراسلے:
    1,753
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    وہ کمال حسن حضور ہے کہ گمان نقص جہاں نہیں
    یہی پھول خارسے دورہے یہی شمع ہے کہ دھواں نہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. نور ازل

    نور ازل محفلین

    مراسلے:
    23
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    رخ مصطفی ہے وہ آئینہ کہ اب ایسا دوسرا آئینہ
    نہ ہماری بزم خیال میں نہ دکان آئینہ ساز میں

    صلی اللہ علیہ و آلہ وسلم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  8. رباب واسطی

    رباب واسطی محفلین

    مراسلے:
    1,504
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Chatty
    سکونِ قلب ملا ،،،،،،،، لذتِ حیات ملی
    درِ حبیب ﷺ ملا تو ساری کائنات ملی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,465
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    زندگی کیوں نہ ہو نثار ان پر
    زندگی سے حسیں محمد ہیں

    روشنی سب انہی سے پاتے ہیں
    جن دلوں کے نگیں محمد ہیں

    اے خدا اب حیات کا مقصد
    اور کچھ بھی نہیں محمد ہیں
    (صلی اللہ علیہ وآلہ وسلّم)

    حیات عبداللہ
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  10. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    12,465
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    آؤ ذکر شہ بطحا کریں تنہائی میں
    نعت کی نعت، عبادت کی عبادت ہو گی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  11. بافقیہ

    بافقیہ محفلین

    مراسلے:
    377
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Volatile
    ام اویس ۔۔۔ مکمل نعت مل سکے تو عنایت۔ بندہ خود جھومے گا اور محفل کو بھی وجد میں لائے گا ۔ انشاءاللہ
     
  12. محمد رضوان نقشبندی

    محمد رضوان نقشبندی محفلین

    مراسلے:
    2
    جھنڈا:
    Pakistan

    وہ کمال حسن حضور ہے کہ گمان نقص جہاں نہیں
    یہی پھول خار سے دور ہے یہی شمع ہے کہ دھواں نہیں
    دو جہاں کی بہتریاں نہیں کہ امانی ٴ دل و جاں نہیں
    کہو کیا ہے وہ جو یہاں نہیں مگر اک نہیں کہ وہ ہاں نہیں
    میں نثار تیرے کلام پر ملی یوں تو کس کو زباں نہیں
    وہ سخن ہے جس میں سخن نہ ہو وہ بیاں ہے جس کا بیاں نہیں
    بخدا خدا کا یہی در ہے نہیں اور کوئی مفر مقر
    جو وہاں سے ہو یہی آ کے ہو جو یہاں نہیں تو وہاں نہیں
    کرے مصطفی کی اہانتیں کھلے بندوں اس پہ یہ جراتیں
    کہ میں کیا نہیں ہوں محمدی ارے ہاں نہیں ارے ہاں نہیں
    ترے آگے یوں ہیں دبے لچے فصحا عرب کے بڑے بڑے
    کوئی جانے منہ میں زباں نہیں نہیں بلکہ جسم میں جاں نہیں
    وہ شرف کہ قطع ہیں نسبتیں وہ کرم کہ سب سے قریب ہیں
    کوئی کہہ دو یاس و امید سے وہ کہیں نہیں وہ کہاں نہیں
    یہ نہیں کہ خلد نہ ہو وہ نکو وہ نکوئی کی بھی ہے آبرو
    مگر اے مدینہ کی آرزو جسے چاہے تو وہ سماں نہیں
    ہے انہیں کے نور سے سب عیاں ہے انہیں کے جلوہ میں سب نہاں
    بنے صبح تابش مہر سے رہے پیش مہر یہ جاں نہیں
    وہی نور حق وہی ظل رب ہے انہیں سے سب ہے انہیں کا سب
    نہیں ان کی ملک میں آسماں کہ زمیں نہیں کہ زماں نہیں
    وہی لامکاں کے مکیں ہوئے سر عرش تخت نشیں ہوئے
    وہ نبی ہے جس کے ہیں یہ مکاں وہ خدا ہے جس کا مکاں نہیں
    سر عرش پر ہے تری گزر دل فرش پر ہے تری نظر
    ملکوت و ملک میں کوئی شے نہیں وہ جو تجھ پہ عیاں نہیں
    کروں تیرے نام پہ جاں فدا نہ بس ایک جاں دو جہاں فدا
    دو جہاں سے بھی نہیں جی بھرا کروں کیا کروڑوں جہاں نہیں
    ترا قد تو نادر دہر ہے کوئی مثل ہوتو مثال دے
    نہیں گل کے پودوں میں ڈالیاں کہ چمن میں سرو چماں نہیں
    نہیں جس کے رنگ کا دوسرا نہ تو ہو کوئی نہ کبھی ہوا
    کہو اس کو گل کہے کیا کوئی کہ گلوں کا ڈھیر کہاں نہیں
    کروں مدح اہل دول رضا پڑے اس بلا میں میری بلا
    میں گدا ہوں اپنے کریم کا میرا دین پارہٴ ناں نہیں
    (اعلحٰضرت عظیم البرکت مولانا امام احمد رضا خان بریلوی رحمت الله علیہ)

     
  13. بافقیہ

    بافقیہ محفلین

    مراسلے:
    377
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Volatile
    استغفراللہ۔ :cry:
     
  14. ام اویس

    ام اویس محفلین

    مراسلے:
    1,753
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    وَالشُّعَرَاءُ يَتَّبِعُهُمُ الْغَاوُونَ
     

اس صفحے کی تشہیر