1. اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں فراخدلانہ تعاون پر احباب کا بے حد شکریہ نیز ہدف کی تکمیل پر مبارکباد۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    $500.00
    اعلان ختم کریں

لیاقت علی عاصم غزل ۔ عشق بھی اک بے بسی تھی بے بسی میں کیا کیا ۔ لیاقت علی عاصم

محمداحمد نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 1, 2012

  1. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,783
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    غزل
    عشق بھی اک بے بسی تھی بے بسی میں کیا کیا
    ہم نے مرنے کے علاوہ زندگی میں کیا کیا
    بس یوں ہی جوشِ سفر میں چلتے چلتے ایک دن
    گھر بنا کے رہ گئے آوارگی میں کیا کیا
    مصحفی کی طرح ہم بھی شام کرنے آئے تھے
    اِس سے اُس سے بات کی تیری گلی میں کیا کیا
    میر و غالب، ناسخ و آتش، فراز و فیض سے
    نسبتِ شعری نبھائی، شاعری میں کیا کیا
    لیاقت علی عاصم
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 7
    • زبردست زبردست × 2
  2. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,306
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    لاجواب۔ شکریہ احمد صاحب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,783
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    بہت شکریہ وارث بھائی۔۔۔۔!

    باقی احباب کی پسندیدگی کا بھی بے حد شکریہ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,783
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. الف نظامی

    الف نظامی لائبریرین

    مراسلے:
    13,974
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    عشق بھی اک بے بسی تھی بے بسی میں کیا کیا
    ہم نے مرنے کے علاوہ زندگی میں کیا کیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    21,783
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شکریہ محترم۔۔۔۔!
     

اس صفحے کی تشہیر