سائیکل دو پہیوں پر کھڑی نہیں ہو سکتی تو چلتی کیسے ہے؟

ابو ہاشم نے 'سائنس اور ٹیکنالوجی' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 14, 2018

  1. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    663
    اس کا اصول مجھے آج تک سمجھ نہیں آیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  2. فرقان احمد

    فرقان احمد محفلین

    مراسلے:
    5,335
    بہت اچھا سوال ہے۔ صاحبانِ علم اس کا جواب دیں گے۔ ہمارے نقص فہم میں ایک غیر سائنسی بات ہی آئی ہے؛ وہ یہ ہے کہ سائیکل خود سے کب چلتی ہے؟ :)
     
  3. شاہد شاہ

    شاہد شاہ محفلین

    مراسلے:
    2,568
    طبیعات کی رو سے سمجھنا کافی آسانی ہے۔ سائیکل پر جب تک تمام قوتوں کا حاصل کل صفر ہوگا یہ بیلنس میں رہے گی۔ نہیں تو یہ جا وہ جا
    [​IMG]
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • معلوماتی معلوماتی × 1
    • غیر متفق غیر متفق × 1
  4. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    663
    ذرا تفصیل سے بتائیے
    کھڑی سائیکل پر بھی تو تمام قوتوں کا حاصل قوت صفر ہو گا
     
  5. جان

    جان محفلین

    مراسلے:
    643
    کھڑی سائیکل اگر اس طرح کھڑی کی جائے کہ تمام قوتوں کا حاصل صفر ہو جائے تو سائیکل سٹیٹکلی بیلنسڈ ہو گی۔
    چلتی سائیکل میں اگر اس پر لگنی والی تمام قوتوں کا حاصل صفر ہو جائے تو سائیکل ڈائنیمیکلی بیلنسڈ ہو گی۔
    یہ نیوٹن کا دوسرا قانون حرکت ہے اور اس میں کوئی نئی بات نہیں۔
     
  6. یاز

    یاز مدیر

    مراسلے:
    18,114
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    میرے محدود علم کے مطابق سائیکل میں gyroscope والے inertia کے اصول کا اطلاق ہوتا ہے۔ اس اصول کی رو سے ایک گھومتی ہوئی چیز اپنے محور کے ایکسس کو برقرار رکھنے کی کوشش کرتی ہے۔ یہ اینرشیا کتنا زیادہ ہوتا ہے، اس کا دورومدار گھومنے کی سپیڈ یعنی آر پی ایم، گھومنے والے وزن کا نصف قطر اور مومنٹ آف اینرشیا پہ ہوتا ہے۔
    اس اصول کی ایک عام مثال گھومتے ہوئے لٹو کی ہے۔ فرض کریں کہ ایک بورڈ یا کتاب کے اوپر لٹو کو گھمایا جائے اور اسی دوران اس کتاب یا بورڈ کو کچھ خمیدہ کیا جائے تو بھی لٹو کا گھومنے کا ایکسس وہی رہے گا اگر اس کی آر پی ایم ایک خاص حد سے زیادہ ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • متفق متفق × 2
    • زبردست زبردست × 1
  7. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    663
    لیکن گھومنے اور ایک ہی لائن میں سیدھا چلنے میں فرق ہے
     
  8. آصف اثر

    آصف اثر محفلین

    مراسلے:
    1,678
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    حرکت کی حالت میں متوازن ہونے کا تعلق توازن کی دوسری شرط اور مرکزِ ثقل سے ہے۔
    ہر شے کا ایک مرکزِ ثقل ہوتا ہے۔ یہ وہ مقام ہے جہاں اس جسم کا پورا وزن عمل کررہاہے۔ اس کو ایک آسان مثال سے سمجھا جاسکتاہے۔ ایک گتہ لیں اور اسے ہوا میں اپنی انگلی پر رکھیں۔ جہاں پر وہ توازن کی حالت میں رہا، (انگلی کا) وہ مقام اس گتے کا مرکزِ ثقل ہوگا۔ یعنی اس کا سارا وزن چاروں جانب سے اسی ایک مقام پر عمل کررہاہے۔ چوں کہ کسی بھی جانب وزن زیادہ نہیں ہورہا لہذا گتہ توازن میں رہے گا۔
    توازن کی دوسری شرط یہ کہتی ہے کہ اگر کسی جسم میں کسی ایک جانب جتنا گماؤ پیدا ہوجائے (کسی ایک طرف گِرنا) تو دوسری جانب بھی اتنا ہی گماؤ پیدا کرکے اسے توازن میں لایا جاسکتاہے۔
    پٹڑی پر چلتا شخص جب ایک جانب گرنے لگتاہے تو وہ مخالف سمت کا ہاتھ اُٹھا کر بیک وقت مرکزِ ثقل کو دوسری جانب کرنے کی کوشش سمیت گماؤ پیدا کرکے خود کو حالت توازن میں رکھتا ہے۔
    چلتی سائیکل میں یہ سب کچھ سائیکل آگے لے جانے کے ساتھ ساتھ ہورہاہوتاہے۔
     
  9. آصف اثر

    آصف اثر محفلین

    مراسلے:
    1,678
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    پہلی دو باتیں درست ہیں لیکن اس سوال کا حرکت کے دوسرے قانون سےتعلق نہیں۔ کیوں کہ سائیکل کو بغیر اسراع دئیے بھی چلایا (حرکت میں لایا) جاسکتاہے۔
     
  10. جان

    جان محفلین

    مراسلے:
    643
    سٹیٹیکلی بیلنسڈ کی مساوات اور ڈائینیمیکلی بیلنسڈ کی مساوات دونوں نیوٹن کے قانون حرکت سے اخذ شدہ ہیں۔ فرق صرف اسراع کے صفر ہونے یا نہ ہونے کا ہے۔
     
    آخری تدوین: ‏مئی 16, 2018
  11. جان

    جان محفلین

    مراسلے:
    643
    لٹو کے گھومنے کی مثال تو روٹیشن اباؤٹ اٹس اون ایکسز سے منسلک ہے جس میں توازن کا دارومدار اینگولر ولاسٹی کے تبدیلی کی شرح پہ ہے جس ہم اینگولر اسراع کہہ سکتے ہیں لیکن سائیکل کے کیس میں سائیکل کے دونوں پہیے تو اینے ایکسز پہ گھوم رہے ہوتے ہیں لیکن ان سے پیدا ہونے والے حرکت لینیئر یا نان لینیئر ہوتی ہے جس میں اینگلولر اسراع کی بجائے لینئر یا نان لینئر اسراع ہو گا۔ لیکن دونوں پہ قانون یہی لگے گا جسے ہم نیوٹن کے قانون حرکت سے تعبیر کرتے ہیں۔
     
  12. جان

    جان محفلین

    مراسلے:
    643
    توازن کے لیے ہر حال میں تمام فورسز کا بیلنس ہونا لازمی ہے وہ چاہے روٹیشنل ہوں، لینئر ہوں یا نان لینئر۔
     
    آخری تدوین: ‏مئی 17, 2018
  13. جان

    جان محفلین

    مراسلے:
    643
  14. سید ذیشان

    سید ذیشان محفلین

    مراسلے:
    6,316
    موڈ:
    Asleep
    اس کا جواب یہی ہے جو کہ اس سوال ہے: لٹّو اگر رکا ہوا ہو تو گر کیوں جاتا ہے اور گھوم رہا ہو تو گرتا کیوں نہیں؟

    ان دونوں پر gyroscopic principle کا اطلاق ہوتا ہے۔ یعنی جو چیز گھومتی رہتی ہے تو وہ اپنے گھومنے کی سمت برقرار رکھتی ہے۔ چونکہ سائکل کے پہیوں کے گھومنے کی سمت آگے کی جانب ہے تو وہ اس کو برقرار رکھے گیں جب تک گھومنا بند نہیں ہو جاتا۔ جب سائکل رک جائے تو جائروسکوپک پرنسپل برقرار نہیں رہتا کیونکہ گھومنا بھی بند ہو جاتا ہے۔
     
    • متفق متفق × 1
  15. زیک

    زیک محفلین

    مراسلے:
    34,705
    جھنڈا:
    UnitedStates
    موڈ:
    Cheeky
    gyroscopic effect کے ساتھ ساتھ trail effect بھی سائیکل کو بیلنس رکھنے میں مدد دیتا ہے
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  16. جان

    جان محفلین

    مراسلے:
    643
    جی آپ درست فرما رہے ہیں۔
    [​IMG]
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر