'جمہوریت پسند خواتین صحافیوں کو زیادہ نشانہ بنایا جا رہا ہے'

جاسم محمد نے 'صحافت' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اگست 12, 2020

  1. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    'جمہوریت پسند خواتین صحافیوں کو زیادہ نشانہ بنایا جا رہا ہے'

    پاکستانی میڈیا میں کام کرنے والی خواتین صحافیوں نے کہا ہے کہ سوشل میڈیا پر ان کی کردار کشی کی جاتی ہے، ٹرول کیا جاتا ہے، ڈرایا دھمکایا جاتا ہے اور ان کے خلاف منظم مہم چلائی جاتی ہے، جس کی وجہ سے ان کا آزاد رائے کا اظہار مشکل ہو گیا ہے۔

    مونا خان نامہ نگار @mona_qau
    بدھ 12 اگست 2020 21:30

    [​IMG]


    عاصمہ شیرازی نے کہا ہے کہ صرف حکومت پر تنقیدی آوازوں کو نشانہ بنایا جا رہا ہے لہٰذا اب آواز اٹھانی ہو گی (سوشل میڈیا)

    پاکستانی میڈیا میں کام کرنے والی سرکردہ خواتین صحافیوں نے کہا ہے کہ سوشل میڈیا پر ان کی کردار کشی کی جاتی ہے، ٹرول کیا جاتا ہے، ڈرایا دھمکایا جاتا ہے اور ان کے خلاف منظم مہم چلائی جاتی ہے، جس کی وجہ سے ان کا آزاد رائے کا اظہار مشکل ہو گیا ہے۔

    'ویمن اِن میڈیا' نے بدھ کو سوشل میڈیا پر ایک خط میں تفصیلاً بتایا کہ انہیں کن مشکلات کا سامنا ہے۔ خط میں حکومت سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ ایسے عناصر کو روکا جائے جو خواتین صحافیوں کو کسی بھی طریقے سے ہراساں کرنے کے مرتکب ہوں۔

    خط میں یہ بھی کہا گیا کہ تمام سیاسی جماعتیں اپنے فالوورز اور سپورٹرز کو پیغام دیں کہ وہ 'غیر اخلاقی' حرکات کرنے سے گریز کریں۔ خط میں قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی برائے انسانی حقوق کو نوٹس لینے کی بھی استدعا کی گئی ہے۔

    [​IMG]
    [​IMG]

    یہ خط اور اس حوالے سے ایک ہیش ٹیگ آج صبح سے ٹوئٹر پر ٹرینڈ میں ہے اور لوگ اس حوالے سے مختلف تبصرے کر رہے ہیں۔ پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے خواتین صحافیوں کے خط پر ردعمل دیتے ہوئے کہا کہ 'بطور چیئرمین قائمہ کمیٹی برائے انسانی حقوق، میں نے اس معاملے کا نوٹس لیتے ہوئے خواتین صحافیوں کی نمائندوں کو کمیٹی کے آئندہ اجلاس میں طلب کیا ہے تاکہ وہ اپنے تحفظات سے آگاہ کر سکیں۔'

    دوسری جانب وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق شیریں مزاری نے اپنی ٹویٹ میں خواتین صحافیوں کو درپیش اس مسئلے کو 'افسوس ناک' قرار دیتے ہوئے کہا کہ 'اس ضمن میں وزیر اطلاعات سے بات کی ہے کہ صحافیوں کے تحفظ سے متعلق بل کو ترجیحی بنیادوں پر فعال کیا جائے۔'

    انہوں نے مزید کہا کہ 'جنس کی بنیاد پر خواتین صحافیوں کی کردار کشی اور حملے ناقابل قبول ہیں اور آئین و قانون بھی اس بات کی اجازت نہیں دیتا۔'

    سینیٹر شیری رحمٰن نے بھی اپنے پیغام میں کہا کہ 'سوشل میڈیا پر خواتین صحافیوں پر حملوں کے محرکات دیکھنے کی ضرورت ہے اور اس ضمن میں سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے انسانی حقوق معاملے کا نوٹس لے گی۔'

    اس حوالے سے سینیئر صحافی عاصمہ شیرازی نے انڈپینڈنٹ اردو سے بات کرتے ہوئے کہا کہ 'جمہوریت پسند خواتین صحافیوں کو زیادہ نشانہ بنایا جاتا ہے جس کی وجہ سے وہ محسوس کرتی ہیں کہ اس معاملے کو سامنے لایا جائے تاکہ وہ بات کرتے ہوئے خوف میں مبتلا نہ ہوں۔'

    انہوں نے سوال اٹھایا کہ 'کب تک منظم مہم کو برداشت کیا جا سکتا ہے؟ صرف حکومت پر تنقیدی آوازوں کو نشانہ بنایا جا رہا ہے اس لیے اب آواز اٹھانی ہو گی۔'

    عاصمہ شیرازی نے مزید کہا کہ 'آئے دن سوشل میڈیا پر خواتین صحافیوں کے خلاف کردار کشی، ہراسانی اور گالم گلوچ کی مہم نہ تو خواتین کو ڈرا سکتی ہیں اور نہ ہی انہیں سچ کہنے سے روک سکتی ہیں۔'

    دیگر خواتین صحافیوں نے بھی ٹوئٹر پر اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ جیو نیوز کی اینکر علینہ فاروق شائق کہتی ہیں کہ 'سوال کا جواب بد زبانی، گالی، ذاتی حملے اور ٹرولز کے ذریعے ہراساں کرنا نہیں ہوتا لیکن بدقسمتی سے ہمارے ہاں خواتین میڈیا ورکرز کو بہادری سے یہ برداشت کرنا پڑتا ہے۔ روز بروز یہ رجحان بڑھتا چلا جا رہا ہے اور اب ہمارے کام میں رکاوٹ بن رہا ہے، لیکن ہم ڈٹے رہیں گے۔'
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  2. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    تحریک انصاف کے حامیوں کا جواب
    [​IMG]
    [​IMG]
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827

     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    11,626
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    شاید اسٹیل مل کے سامنے کھڑے ہوکر اس کے ملازمین سے قسمیں وعدے بھی فیک ویڈیو تھی؟
     
    • دوستانہ دوستانہ × 2
  6. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    11,626
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    شاید یہ خبر بھی فیک ہے کہ خان صاحب کے تمام بلند بانگ دعووں کے جواب ان ہی کی پرانی ویڈیوز میں موجود ہے۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  7. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    11,626
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    شاید "یو ٹرن خان" کی بھپتی بھی فیک نیوز ہے؟
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  8. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    11,626
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    شاید یہ نیوز بھی فیک ہے کہ گل بخآری کو بھی عورت ہونے کے باوجود دیگر ملک دشمن عناصر کی طرح اٹھایا گیا۔ سوشل میڈیا پر گندی گندی گالیاں دی گئیں؟
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  9. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    آپ کی بیان کردہ کچھ خبریں درست یا غلط ہو سکتی ہیں۔ آئیں اب ثبوتوں کے ساتھ چند ان خبروں کو دیکھتے ہیں جو ان لبرل خاتون صحافیوں / اینکروں نے شیئر کی۔ اور جو بعد میں جھوٹی ثابت ہوئیں۔








    اس کے علاوہ یہ دھاگہ بھی مفید رہے گا جو میں فی الحال اپڈیٹ نہیں کر رہا
    سال کی جھوٹی خبریں
     
    آخری تدوین: ‏اگست 12, 2020
  10. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    جمہوریت پسندی کا سہارا لے کر حکومت ، فوج، عدلیہ کے خلاف مسلسل 24 گھنٹے جھوٹی خبریں چلنے نہیں دی جائیں گی۔ بالکل ویسے جیسے جمہوریت پسندی کا کارڈ کھیل کر آپ نیب اور عدالتوں میں جاری قانونی کاروائیوں سے بچ نہیں سکتے۔ ریاست اور حکومت کو بہت بار بلیک میل کرکے این آر او لے لئے۔ یہ سلسلہ اب ختم
     
  11. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    یہ کونسی جمہوریت پسندی ہے کہ جس منصوبہ کا افتتاح حکومت آج کرنے جا رہی ہے، اس کے بارہ میں محض ایک ماہ قبل پورے اعتماد کے ساتھ ڈان کے سینئر صحافی جھوٹ بولے کہ یہ منصوبہ 2050 میں جا کر مکمل ہوگا؟ حکومت سے متعلق مسلسل جھوٹی خبریں اور تجزیے چلانے کی کوئی تو وجہ ہوگی؟ یہ وجہ آپ کو اپوزیشن جماعتوں سے موصول شدہ لفافوں میں مل جائے گی۔
     
  12. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    اور یہی حکومتی پالیسی ہے۔ جانبدار صحافیوں کو لفافہ کہیں گے۔ نیب اور عدالتوں سے بھاگنے والوں کو چور کہیں گے۔ اس میں abuse یا hate speech کیا ہے؟

     
  13. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    جیسا کہ آپ اوپر دیکھ سکتے ہیں حکومت کے خلاف روزانہ کی بنیاد پر جھوٹی خبریں، جھوٹے تجزیے چلائے جاتے ہیں جس میں ملک کے سینئر صحافی پیش پیش ہیں۔ ان کے خلاف اگر حکومت قانونی کاروائی کرے جیسا کہ 24 نیوز کا لائسنس معطل کر دیا تھا تو وہاں یہ لوگ آزادی صحافت کا رونا روکر عدلیہ سے ریلیف حاصل کر لیتے ہیں۔ اور جب حکومتی جماعت کے نمائندے یا حامی ان جانبدار صحافیوں کا سوشل میڈیا پر پول کھولیں تو وہ ان کو abuser قرار دے کر ان کے خلاف کاروائی کا مطالبہ کر دیتے ہیں۔ یہ کیا مذاق ہے؟
     
  14. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    اسد عمر نے واضح اور دو ٹوک الفاظ میں کہا ہے کہ کسی کے بھی خلاف نازیبا الفاظ استعمال کرنا، جھوٹی خبریں پھیلانا اور ان جھوٹی خبروں کو ایکسپوز کرنے والوں کو abuser کہنا تینوں چیزں غلط ہیں مگر اس ملک میں ہو رہی ہیں۔ اور وہ ان تینوں کی مذمت کرتے ہیں۔ اب اس بالکل واضح بات کو یہ لبرل سینئر صحافی کیسے سپن دے رہے ہیں یہاں دیکھ لیں۔

     
  15. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    سینئر لبرل صحافیوں کے اس سخت رد عمل سے یہی واضح ہو رہا ہے کہ ان کے نزدیک جھوٹی خبریں پھیلانا اور ان کا پردہ چاک کرنے والوں کو abuser کہنا کوئی بڑی بات نہیں ہے۔ ہاں اگر ان کو جھوٹی خبروں اور تجزیوں کے جواب میں لفافہ صحافی کہا جائے گا تو یہ خواتین کے خلاف نازیبا الفاظ کا استعمال ہوگا۔ جس سے صحافت اور آزادی رائے مبینہ طور پر خطرہ میں آجائے گی۔
     
  16. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    اب ان خاتون صحافی کو کیسے پتا چلا کہ یہ ٹویٹس کرنے والے ایم آئی کے لوگ ہیں؟

    ٹویٹر پر کوئی بھی جعلی پروفائل بنا کر کسی کے پروفائل پر جا کر کچھ بھی لکھ سکتا ہے۔ اس سے کیا یہ ایم آئی کے لوگ بن جائیں گے؟
    بہتر ہے ان ٹرولز کو بنیاد بنا کر عورت کارڈ کھیلنے کی بجائے ٹویٹر کا نیا فنکشن استعمال کر لیا جائے جس میں آپ کے ٹویٹ کے نیچے جواب دینے والوں کو محدود کیا جا سکتا ہے:

    [​IMG]
     
  17. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    11,626
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    یونہی ہمیشہ الجھتی رہی ہے ظلم سے خلق
    نہ ان کی رسم نئی ہے، نہ اپنی ریت نئی
    یونہی ہمیشہ کھلائے ہیں ہم نے آگ میں پھول
    نہ ان کی ہار نئی ہے، نہ اپنی جیت نئی
     
    • زبردست زبردست × 1
  18. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
     
  19. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    آج پھر ان صحافی کم میراثی زیادہ لوگوں نے جعلی خبریں چلا کر اپنی ٹویٹیں ڈیلیٹ کی ہیں
    [​IMG]
    [​IMG]
     
  20. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    30,827
    آج سب کے سامنے پریس کانفرنس میں بلاول زرداری نے ایک صحافی کو دھمکیاں دی ہیں۔ اس پر لبرل انکل اور آنٹیاں خاموش ہیں
     

اس صفحے کی تشہیر