1. احباب کو اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں تعاون کی دعوت دی جاتی ہے۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    ہدف: $500
    $453.00
    اعلان ختم کریں

اک شب

فائضہ خان نے 'آپ کی نثری شاعری بحور سے آزاد' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏ستمبر 8, 2019

  1. فائضہ خان

    فائضہ خان محفلین

    مراسلے:
    10
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Persnickety
    بچھڑ رہے ہیں تو اک کام کرتے ہیں
    ایک شب ماضی کے نام کرتے ہیں
    تم بھی اٹھا لانا لمحے محبت کے
    میں بھی سمیٹ لاوں گی احساس
    پہلی چاہت کا
    تم وہی پہننا جو اس دن پہنا تھا
    میں بھی وہی سیاہ ساڑھی اور جوڑا
    باندھوں گی
    تم آنا ہاتھ میں سرخ گلاب لیے
    پھر وہی گلاب میرے جوڑے میں سجا دینا
    میں تحفہ وہی پرفیوم لاوں گی
    جس کی خوشبو تمہیں میری یاد دلاتی تھی
    پھر اپنے اپنے احساسات محبت کو ہم ماضی سے نکالیں گے
    تم ترتیب دینا سالوں کی رفاقت کو
    بنا کر میں چائے لاوں گی
    پھر مل کے دیکھیں گے قدم کہاں کہاں پر ڈگمگائے تھے
    کہاں لہجے بدلے تھے کہاں پر مان ٹوٹا تھا
    سب غلطیاں کاغذ پر لکھیں گے
    پھر دس بار تم پڑھنا
    دس بار میں پڑھوں گی
    وہ کاغذ پھاڑ دیں گے ہم
    کہیں پر پھینک دیں گے ہم
    تم اسی چاہت سے دیکھنا مجھ کو
    میں اسی انداز سے مسکراوں گی
    محبت کا نوحہ نہیں
    گیت لکھیں گے
    انوکھی تاریخ لکھیں گے
    جا تو رہے ہیں اک کام کرتے ہیں
    اک شب اک دوجے کے نام کرتے ہیں
    مکمل محبت کی ذات کرتے ہیں

    فائضہ خان
     
  2. یاسر شاہ

    یاسر شاہ محفلین

    مراسلے:
    811
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    یہ کہاں ڈھنگ جدائی کا ہے
    رنگ یہ صلح صفائی کا ہے
    :-(
     

اس صفحے کی تشہیر