افتخار عارف غزل۔ حامی بھی نہ تھے منکرِ غالب بھی نہیں تھے ۔ افتخار عارف

محمداحمد نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مارچ 22, 2010

  1. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    18,769
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    غزل

    حامی بھی نہ تھے منکرِ غالب بھی نہیں تھے
    ہم اہلِ تذبذب کسی جانب بھی نہیں تھے

    اس بار بھی دنیا نے ہدف ہم کو بنایا
    اس بار تو ہم شہ کے مصاحب بھی نہیں تھے

    بیچ آئے سرِ قریۂ زر جوہرِ پندار
    جو دام ملے ایسے مناسب بھی نہیں تھے

    مٹی کی محبت میں ہم آشفتہ سروں نے
    وہ قرض اُتارے ہیں جو واجب بھی نہیں تھے

    لو دیتی ہوئی رات سخن کرتا ہو ا دن
    سب اس کےلئے جس سے مخاطب بھی نہیں تھے

    افتخار عارف
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 10
    • زبردست زبردست × 3
  2. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,040
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    بہت خوب انتخاب ہے احمد صاحب! بہت شکریہ جناب!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,187
    خوبصورت غزل شریکِ محفل کرنے کے لیئے بیحد شکریہ محمد احمد بھائی۔۔
     
  4. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    29,797
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    sunshine
    ماشاء اللہ، افتخار عارف کی ای بک کی تیاری ہو رہی ہے کیا؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  5. یونس عارف

    یونس عارف محفلین

    مراسلے:
    472
    جھنڈا:
    Iran
    موڈ:
    Breezy
    واہ واہ واہ، سبحان اللہ سبحان اللہ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    18,769
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    شکریہ کاشفی بھائی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  7. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    18,769
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    اعجاز عبید صاحب،

    ای بک میں تو شاید حقوق وغیرہ کے مسائل ہوں۔ فی الحال تو زیادہ سے زیادہ انتخاب پیش کرنے کی کوشش کر رہا ہوں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  8. نایاب

    نایاب لائبریرین

    مراسلے:
    13,222
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Goofy
    بہت خوب انتخاب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,147
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    مٹی کی محبت میں ہم آشفتہ سروں نے ​

    وہ قرض اُتارے ہیں جو واجب بھی نہیں تھے​


    بہت خوب، بہت ہی پیاری غزل ہے خاص طور پہ یہ شعر تو۔ واہ​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  10. مہ جبین

    مہ جبین محفلین

    مراسلے:
    6,246
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    جو شعر بلال نے لکھا ہے وہی میرا بھی پسندیدہ ہے
    واقعی بہت خوب غزل ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  11. سید ذیشان

    سید ذیشان محفلین

    مراسلے:
    5,883
    موڈ:
    Asleep
    بہت اعلیٰ!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    19,808
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    واہ بہت خوب۔ شکریہ احمد صاحب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  13. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    18,769
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    :aadab:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  14. مدیحہ گیلانی

    مدیحہ گیلانی محفلین

    مراسلے:
    2,283
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bored
    مٹی کی محبت میں ہم آشفتہ سروں نے
    وہ قرض اُتارے ہیں جو واجب بھی نہیں تھے
    بہت خوب !
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  15. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    18,769
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cool
    آداب عرض ہے۔ :)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر