خادم رضوی کے بھائی، بھتیجے سمیت 86 افراد کو 4 ہزار 738 سال قید کی سزا

جاسم محمد نے 'آج کی خبر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 17, 2020

  1. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    23,217
    خادم رضوی کے بھائی، بھتیجے سمیت 86 افراد کو 4 ہزار 738 سال قید کی سزا

    جنگ نیوز
    17 جنوری ، 2020



    [​IMG]
    فائل فوٹو

    راولپنڈی: انسداد دہشتگردی کی خصوصی عدالت نے دہشتگردی کا الزام ثابت ہونے پر علامہ خادم رضوی کے بھائی اور بھتیجے سمیت تحریک لبیک پاکستان کے 86کارکنوں کو مجموعی طور پر 4738 سال قید کی سزا سنادی۔

    راولپنڈی کی انسداد دہشت گردی کی عدالت کے جج شوکت کمال ڈار نے رات 10 بجے فیصلہ سنایا جس پر پولیس نے تمام مجرموں کو حراست میں لے لیا اور تین بسوں میں ڈال کر پولیس اور ایلیٹ فورس کے کڑے پہرے میں اٹک جیل لے گئے۔

    عدالت نے ملزمان پر ایک کروڑ 30 لاکھ روپے سے زائد جرمانہ اور ان کی تمام منقولہ وغیرمنقولہ جائیداد ضبط کرنے کا بھی حکم دیا ہے۔

    پنڈی گھیب پولیس نے 24 نومبر 2018 کو تحریک لبیک پاکستان کے سربراہ علامہ خادم رضوی کی گرفتاری کے بعد ہنگامہ آرائی، توڑ پھوڑ، پولیس ملازمین کو زخمی، سرکاری ونجی املاک کو نقصان پہنچانے اور دہشتگردی سمیت مختلف الزامات کے تحت خادم رضوی کے بھائی امیر حسین اور ان کے بیٹے محمد علی سمیت 87 افراد کو گرفتار کیا تھا۔

    بعدازاں مجرموں کی ضمانت ہوئی تو ایک ملزم اعزاز الحق بیرون ملک فرار ہوگیا تھا جس پر عدالت نے مفرور ملزم کے ضمانتی سے ایک لاکھ روپے جرمانہ وصول کر کے ملزم کو اشتہاری قرار دے کر دائمی وارنٹ گرفتاری جاری کر دیئے تھے۔

    عدالت نے 13 ماہ زیرسماعت رہنے والے مقدمے میں جرم ثابت ہونے پر مختلف الزامات میں ملوث ہر مجرم کو مجموعی طور پر 55،55 سال قید سخت اور 2 لاکھ 35 ہزار روپے جرمانہ و عدم ادائیگی جرمانہ 32 ماہ مزید قید دینے کا حکم دے کر مجرموں کی تمام منقولہ وغیرمنقولہ جائیداد بھی بحق سرکار ضبط کرنیکا حکم دیا۔

    عدالت نے امیر حسین رضوی، ان کے صاحبزادے محمد علی اور دیگر 2 مجرموں قاری مشتاق اور گلزار احمد کو اسلحہ برآمد ہونے کے جرم میں علیٰحدہ سے 2،2 سال قید اور پچاس پچاس ہزار روپے جرمانہ کی سزا سنائی۔

    جرمانہ ادا نہ کرنے پر مجرموں کو مجموعی طور پر 146 سال سے زائد مزید سزا کاٹنا ہوگی۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  2. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    23,217
    ان قیدیوں پر اتنا طویل عرصہ پہرہ دینے کیلئے سائیں قائم علی شاہ کو مامور کیا جائے؛ عوامی مطالبہ
     
    • پر مزاح پر مزاح × 2
  3. انیس الرحمن

    انیس الرحمن محفلین

    مراسلے:
    8,273
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    خادم رضوی کو بٹھایا جائے۔ ہوسکتا ہے وہ دوبارہ زندہ ہو کر مزید سو سال پہرہ دے دے۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 2
  4. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    23,217
    سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کو بھی کہا جا سکتا ہے کہ جب وہ ڈیم کے پہرے سے اکتا جائیں تو کچھ عرصہ ان قیدیوں پر پہرہ دے دیں :)
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  5. محمد تابش صدیقی

    محمد تابش صدیقی منتظم

    مراسلے:
    25,275
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    یہ مجموعی سزا ہے، 55، 55 سال ہے۔
     
    • معلوماتی معلوماتی × 1
  6. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    23,217
    پاکستانیوں کی اوسط عمر ۶۷ سال ہے۔ معمولی توڑ پھوڑ پر اتنی سخت سزا واقعی غیر معمولی ہے۔
     
    • متفق متفق × 1
  7. سروش

    سروش محفلین

    مراسلے:
    2,203
    موڈ:
    Relaxed
    ذرا تابش بھائی سے معلوم کریں کتنی معمولی تھی یہ توڑ پھوڑ؟
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
  8. عبداللہ محمد

    عبداللہ محمد مدیر

    مراسلے:
    10,577
    جھنڈا:
    Pakistan
    وہ پوچھنا تھا 55,55 سال کی سزا سے کسی کا وقار مجروع ہوا یا نہیں؟ نیز اس سزا کو انسانی یا غیر انسانی قرار دیا جائے گا؟ (20 نمبر)
     
  9. محمد تابش صدیقی

    محمد تابش صدیقی منتظم

    مراسلے:
    25,275
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    پھر 126 دن دھرنے والوں پر بھی کیس بننا چاہیے۔ :)
    توڑ پھوڑ، سرکاری املاک کو نقصان اور پولیس ملازمین کو زخمی تو انھوں نے بھی کیا تھا۔
     
    • پر مزاح پر مزاح × 1
    • متفق متفق × 1
  10. جاسم محمد

    جاسم محمد محفلین

    مراسلے:
    23,217
    ۱۲۶ دن کے دھرنے والے بہترین بوٹ چمکانے کے عوض ابھی تک گوڈ بکس میں ہیں۔
    جبکہ یہ پین کی نِب والے آرمی چیف اور چیف جسٹس پاکستان کو سر عام دھمکانے کے بعد ساری گوڈ اور بیڈ بکس سے نکل گئے تھے :)
     
  11. محمد تابش صدیقی

    محمد تابش صدیقی منتظم

    مراسلے:
    25,275
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    تو پھر اصل جرم لکھا جائے۔
    ورنہ تو بلدیہ ٹاؤن فیکٹری جلانے کا حکم دینے والے بھی حکومت میں بیٹھے ہیں۔
     
    • متفق متفق × 1

اس صفحے کی تشہیر