تاسف 8 شوال تاریخ جہان اسلام کا غم انگیز دن - یوم انہدام جنت البقیع

اکمل زیدی نے 'تہنیتی پیغامات و دعائیہ کلمات' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 13, 2016

لڑی کی کیفیت:
مزید جوابات کے لیے دستیاب نہیں
  1. اکمل زیدی

    اکمل زیدی محفلین

    مراسلے:
    4,470
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    یوم انہدام جنت البقیع، عالم اسلام کے لئے لمحہ فکر


    جنت البقیع مدینہ منورہ میں واقع وہ قبرستان ہے کہ جس میں رسول اکرم صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم کے اجداد، اہل بیت علیھم السلام، اُمّہات المومنین، جلیل القدر اصحاب، تابعین اور دوسرے اہم افراد کی قبور ہیں کہ جنہیں آٹھ شوال 1344ہجری قمری کو آل سعود نے منہدم کر دیا اور افسوس کا مقام تو یہ ہے کہ یہ سب کچھ اسلامی تعلیمات کے نام پر کیا گيا۔ یہ عالم اسلام کے علماء، دانشوروں اوراہل قلم کی ذمہ داری ہے کہ اِن قبور کی تعمیرنو کیلئے ایک بین الاقوامی تحریک کی داغ بیل ڈالیں تا کہ یہ روحانی اور معنوی سرمایہ اور آثار قدیمہ سے تعلق رکھنے والے اِس عظیم نوعیت کے قبرستان کی کہ جس کی فضیلت میں روایات موجود ہیں، حفاظت اورتعمیر نو کے ساتھ یہاں مدفون ہستیوں کی خدمات کا ادنیٰ سا حق ادا کیا جا سکے۔

    بقیع میں مدفون شخصیات
    اِس قبرستان میں اسلام کی اہم شخصیات میں ائمہ اربعہ تشیع(حضرت امام حسن مجتبیٰ (ع) ،حضرت امام زین العابدین (ع) ، حضرت امام محمدباقر (ع) اورحضرت امام جعفر صادق (ع) )کے علاوہ

    ۔ رسول اللہ (ص) کے چچا حضرت عباس بن المطّلب (ع)
    ۔ والد امجد حضرت عبداللہ (ع)
    ، اُمّہات ُ المومنین،
    عثمان بن عفان،
    اسماعیل بن جعفر الصادق (ع)
    اورمذہب مالکی کے پیشوا، امام ابو عبداللہ مالک بن انس الاصبحی

    (متوفی ١٧٩ ہجری ) کی قبور کو بھی ویران کیا گیا ہے۔۔
    اُمّہات المومنین میں
    حضرت زینب بنت خزیمہ، حضرت ریحانہ بنت زبیر، حضرت ماریہ قبطیہ، حضرت زینب بنت جحش، اُم ّ حبیبہ بنت ابی سفیان، حضرت سودہ اورعائشہ بنت ابی ابی بکر مدفون ہیں۔
    اِس کے علاوہ حضرت ختمی مرتبت (ص) کے فرزندابراہیم (ع) ، حضرت علی (ع) کی والدہ ماجدہ حضر ت فاطمہ بنت اسد(س)، زوجہ حضرت اُمّ البنین (س)،حلیمہ سعدیہ (س) ، حضرت عاتکہ، عبداللہ بن جعفر، محمد بن حنفیہ اورعقیل بن ابی طالب (ع)، نافع مولائے عبد اللہ بن عمر شیخ القراء السبعہ (متوفی ١٦٩ ہجری) کی قبور بھی وہاں موجود ہیں۔

    (البقیع؛یوسف الہاجری،صفحہ ٣٧۔مرآۃ الحرمین؛ابراہیم رفعت پاشا،صفحہ ٤٢٧۔آثار اسلامی مکہ ومدینہ؛صفحہ ٩٩۔تاریخ المعالم المدنیۃ المنوّرۃ ؛ سید احمد آل یاسین،صفحہ ٢٤٥۔طبقات القرای ؛جلد ٢،صفحہ ٣٣٠۔تہذیب التھذیب؛جلد ١٠ ،صفحہ ٤٠٧)
    اِس کے علا وہ یہاںمقداد بن الاسود، مالک بن حارث، مالک اشتر نخعی، خالد بن سعید، خزیمہ ذو الشہادتین، زید بن حارثہ، سعد بن عبادہ، جابر بن عبداللہ انصاری، حسّا ن بن ثابت، قیس بن سعد بن عبادہ، اسعد بن زارہ، عبد اللہ بن مسعود اورمعاذ بن جبل سمیت دوسر ے جلیل القدر صحابہ کرام بھی یہیں مدفون ہیں۔ (مستدرک حاکم؛جلد ٢،صفحہ ٣١٨۔سیرہ ابن ہشام ؛جلد ٣،صفحہ ٢٩٥۔)
     
    • غمناک غمناک × 4
    • معلوماتی معلوماتی × 3
  2. loneliness4ever

    loneliness4ever محفلین

    مراسلے:
    652
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    آداب محترم اور عزیز اکمل زیدی بھائی
    فقیر کو خوف ہے آپ کی لڑی کسی بڑی تفریقی گفتگو کا پیش خیمہ نہ بنا دی جائے
     
  3. اکمل زیدی

    اکمل زیدی محفلین

    مراسلے:
    4,470
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    نہیں بھائی صاحب آپ کاخوف بلا وجہ ہے ... اس میں ایسا کچھ نہیں بلکے تاریخ کے حساب سے ایک تاریخی سانحے کی یاد دہانی ہے۔ ..... جو سمجھتے ہیں ...وہ سمجھیںگے آئینگے کومنٹ کرینگے ...کوئی غلط بات کرے گا ...تو اس کی غلط فہمی دور کرنے کی کوشش کرینگے حوالہ جات کے ساتھ ... اتنا تو سیکھ ہی لیا یہاں ... کے علمی گفتگو کیا ہے اور کج بحثی کیا ہے ....آپ کا شکریہ ....
     
    • زبردست زبردست × 2
    • دوستانہ دوستانہ × 1
    • متفق متفق × 1
  4. حسن محمود جماعتی

    حسن محمود جماعتی محفلین

    مراسلے:
    2,523
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    اس کو ذہنی علاج کی ضرورت ہوگی جو ایسا کرے گا۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  5. اکمل زیدی

    اکمل زیدی محفلین

    مراسلے:
    4,470
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    بازگشت
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
    • متفق متفق × 1
  6. سید ذیشان

    سید ذیشان محفلین

    مراسلے:
    7,414
    موڈ:
    Asleep
    اسلام کی تاریخ کا ایک سیاہ دن۔
     
    • متفق متفق × 4
  7. سحرش سحر

    سحرش سحر محفلین

    مراسلے:
    243
    جھنڈا:
    Pakistan
    اس انہدام کی وجہ کیا بتائی گئی ہے؟؟؟؟
     
  8. فاخر رضا

    فاخر رضا محفلین

    مراسلے:
    3,425
    یہ سلسلہ اب بھی جاری ہے
    حجر بن عدی کی قبر کو شام میں منہدم کیا گیا
     
    • متفق متفق × 1
  9. سید ذیشان

    سید ذیشان محفلین

    مراسلے:
    7,414
    موڈ:
    Asleep
    سعودیہ کے سرکاری اسلام کے مطابق قبور پر مقبرے بنانا جائز نہیں ہے۔
     
  10. میر انیس

    میر انیس لائبریرین

    مراسلے:
    1,477
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    جہاں تک میری معلومات ہیں حضرت ابن تیمیہ جو سعودی حکمران کے اکابرین میں شامل ہیں کی قبر پر مقبرہ موجود ہے ۔ دوسرے چلیں اگر آپ کے عقیدے کے حساب سے قبر پر مقبرہ بنانا جائز نہیں تھا تو دوسروں نے اپنے عقیدے کے حساب سے اگر بنادئیے تھے تو احتراماََ انکو ڈھانا نہیں چاہیئے تھا۔ہم سب کو ایک دوسرے کے عقیدے کا احترام کرنا چاہیئے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
لڑی کی کیفیت:
مزید جوابات کے لیے دستیاب نہیں

اس صفحے کی تشہیر