ابن انشا ہم ہیں آوارہ سُو بسُو لوگو- ابنِ انشاء

فرحت کیانی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 18, 2010

  1. فرحت کیانی

    فرحت کیانی لائبریرین

    مراسلے:
    10,998
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    ہم ہیں آوارہ سُو بسُو لوگو
    جیسے جنگل میں رنگ و بُو لوگو
    ساعتِ چند کے مسافر سے
    کوئی دم اور گفتگو لوگو
    تھے تمہاری طرح کبھی ہم لوگ
    گھر ہمارے بھی تھے کبھو لوگو
    ایک منزل سے ہو کے آئے ہیں
    ایک منزل ہے رُوبُرو لوگو
    وقت ہوتا تو آرزو کرتے
    جانے کس شے کی آرزو لوگو
    تاب ہوتی تو جتسجُو کرتے
    اب تو مایوس جستجُو لوگو

    کلام: ابنِ انشاء
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 6
  2. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,857
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    واہ! بہت خوبصورت غزل ہے۔ شکریہ فرحت صاحبہ!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  3. خواجہ طلحہ

    خواجہ طلحہ محفلین

    مراسلے:
    1,692
    ابن انشا کا اندازہی نرالا ہے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. زھرا علوی

    زھرا علوی محفلین

    مراسلے:
    1,698
    موڈ:
    Asleep
    بہت خوبصورت غزل ہے ۔۔

    ساعتِ چند کے مسافر سے
    کوئی دم اور گفتگو لوگو
    وقت ہوتا تو آرزو کرتے
    جانے کس شے کی آرزو لوگو

    کیا کہنے !!!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. فرحت کیانی

    فرحت کیانی لائبریرین

    مراسلے:
    10,998
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Confused
    بہت شکریہ سخنور، زہرا اور طلحہ :)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    ایک منزل سے ہو کے آئے ہیں
    ایک منزل ہے رُوبُرو لوگو

    وقت ہوتا تو آرزو کرتے
    جانے کس شے کی آرزو لوگو

    واقعی بہت عمدہ ۔
     
  7. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,564
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شکریہ فرحت خوبصورت نظم شیئر کرنے کیلیے۔
     
  8. طالوت

    طالوت محفلین

    مراسلے:
    8,353
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Bashful
    تاب ہوتی تو جتسجُو کرتے
    اب تو مایوس جستجُو لوگو

    ابن انشاء ، ابن انشاء ہی ہو سکتا تھا ۔
    وسلام
     

اس صفحے کی تشہیر