1. اردو محفل سالگرہ پانزدہم

    اردو محفل کی یوم تاسیس کی پندرہویں سالگرہ کے موقع پر تمام اردو طبقہ و محفلین کو دلی مبارکباد!

    اعلان ختم کریں

داغ کوئی پھرے نہ قول سے، بس فیصلہ ہوا - داغ دہلوی

کاشفی نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مارچ 15, 2010

  1. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,384
    غزل
    (داغ دہلوی رحمتہ اللہ علیہ)

    کوئی پھرے نہ قول سے، بس فیصلہ ہوا
    بوسہ ہمار ا آج سے ، دل آپ کا ہوا

    ماتم ہمارے مرنے کا اُنکی بلا کرے
    اتنا ہی کہہ کے چھوٹ گئے وہ، بُرا ہوا

    آباد کس قدر ہے، الٰہی، عدم کی راہ
    ہر دم مسافروں کا ہے تانتا لگا ہوا

    اے کاش، میرے تیرے لیئے کل یہ حکم ہو
    لے جاؤ ان کو خلد میں، جو کچھ ہوا ہوا

    کس کس طرح سے اُسکو جلاتے ہیں رات دن
    وہ جانتے ہیں داغ ہے ہم پر مٹا ہوا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
    • زبردست زبردست × 1
  2. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,841
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    واہ واہ! داغ اس غزل میں داغ داغ جھلک رہے ہیں۔ شکریہ کاشفی صاحب!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. شاہ حسین

    شاہ حسین محفلین

    مراسلے:
    2,901
    واہ جناب کاشفی صاحب بہت خوب انتخاب ہے ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,150
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    کیا مطلع ہے :) لاجواب۔

    بہت شکریہ کاشفی صاحب خوبصورت غزل شیئر کرنے کیلیے۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  5. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,384
    سخنور صاحب، شاہ حسین صاحب ،محمد وارث صاحب اور پیاسا صحرا صاحب آپ تمام دوستوں کا بیحد شکریہ۔۔خوش رہیں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. جیہ

    جیہ لائبریرین

    مراسلے:
    15,063
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Blah
    ایسے مطلعوں سے بہت سوں کا قافیہ تنگ ہے:grin:

    دل کے خوش رکھنے کو غالب یہ خیال اچھا ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,384

    غزل کی پسندیدگی کے لیئے بیحد شکریہ۔۔
     
  8. جیہ

    جیہ لائبریرین

    مراسلے:
    15,063
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Blah
    عجیب بات کرتے ہیں کس کم بخت ایسے غزلیں پسند آ سکتی ہیں :(















    (مذاق۔۔۔ واقعی اچھی غزل ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,384
    شکریہ بیحد۔ شرارتی ہیں آپ۔۔ ۔ :happy:
     
  10. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,841
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    کوئی پھرے نہ قول سے، بس فیصلہ ہوا
    بوسہ ہمارا آج سے ، دل آپ کا ہوا

    ماتم ہمارے مرنے کا اُن کی بلا کرے
    اتنا ہی کہہ کے چھوٹ گئے وہ، بُرا ہوا


    بے خود رہے وصال میں بے ہوش ہجر میں
    کیا جانے مجھ سے کب وہ ملا، کب جدا ہوا

    جس سے کیا تپاک اسی نے کیا ہلاک
    جو آشنا ہوا، وہی نا آشنا ہوا

    آباد کس قدر ہے، الٰہی، عدم کی راہ
    ہر دم مسافروں کا ہے تانتا لگا ہوا


    اے کاش، میرے تیرے لیے کل یہ حکم ہو
    لے جاؤ ان کو خلد میں، جو کچھ ہوا، ہوا


    کس کس طرح سے اُسکو جلاتے ہیں رات دن
    وہ جانتے ہیں داغ ہے ہم پر مٹا ہوا

    (داغ دہلوی)
     
    • زبردست زبردست × 2
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,384
    خوبصورت غزل شیئر کرنے کے لیئے فرخ منظور صاحب آپ کا بیحد شکریہ۔۔خوش رہیئے۔۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر