تبسم کتنی جدائیوں کے کھائے ہیں زخم دل پر ۔ صوفی تبسم

فرخ منظور نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اپریل 9, 2015

  1. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,872
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    کتنی جدائیوں کے کھائے ہیں زخم دل پر
    کتنی محبتوں کے ماتم کیے ہیں ہم نے

    فرقت کے آنسوؤں سے آنکھوں کو سی لیا ہے
    کیا کیا حسیں نظارے برہم کیے ہیں ہم نے

    ہر داغ تازہ شعلہ بن کر بھڑک اٹھا ہے
    کتنے چراغ غم کے مدھم کیے ہیں ہم نے

    دن اپنی زندگی کے پہلے ہی مختصر تھے
    کچھ خود بھی کم ہوئے ہیں کچھ کم کیے ہیں ہم نے

    (صوفی تبسّم)​
     

اس صفحے کی تشہیر