والد پہ اشعار

جاسمن نے 'اشعار اور گانوں کے کھیل' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اگست 6, 2016

  1. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    13,261
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    مجھ کو چھاؤں میں رکھا اور خود جلتا رہا دھوپ میں
    میں نے دیکھا اِک فرشتہ باپ کے روپ میں
     
    • زبردست زبردست × 8
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
  2. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,220
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    یہ سوچ کے ماں باپ کی خدمت میں لگا ہوں
    اس پیڑ کا سایہ مرے بچوں کو ملے گا

    منور رانا
     
    • زبردست زبردست × 6
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,220
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    باپ بوجھ ڈھوتا تھا، کیا جہیز دے پاتا
    اس لئے وہ شہزادی آج تک کنواری ہے

    منظر بھوپالی
     
    • زبردست زبردست × 6
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,220
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    صبح سویرے ننگے پاؤں گھاس پہ چلنا ایسا ہے
    جیسے باپ کا پہلا بوسہ، قربت جیسے ماؤں کی

    حماد نیازی
     
    • زبردست زبردست × 5
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  5. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,220
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    باپ لرزاں ہے کہ پہنچی نہیں بارات اب تک
    اور ہمجولیاں دلہن کو سنوارے جائیں

    احمد فراز
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
    • زبردست زبردست × 2
  6. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,220
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    بیٹیاں باپ کی آنکھوں میں چھپے خواب کو پہچانتی ہیں
    اور کوئی دوسرا اس خواب کو پڑھ لے تو برا مانتی ہیں

    افتخار عارف
     
    • زبردست زبردست × 5
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. حسن محمود جماعتی

    حسن محمود جماعتی محفلین

    مراسلے:
    2,504
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Breezy
    اسی کی اپنی بیٹی کی ہتھیلی خشک رہتی ہے
    جو بوڑھا دھوپ میں دن بھر حنا تقسیم کرتا ہے
     
    • زبردست زبردست × 7
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  8. محمد بلال اعظم

    محمد بلال اعظم لائبریرین

    مراسلے:
    10,220
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Angelic
    خدائے ارض! میں بیٹی کے خواب کات سکوں
    تو میرے کھیت میں اتنی کپاس رہنے دے

    شہزاد نیر
     
    • زبردست زبردست × 5
  9. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    13,261
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ان کے سائے میں بخت ہوتے ہیں
    باپ گھر میں درخت ہوتے ہیں
     
    • زبردست زبردست × 3
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  10. سید شہزاد ناصر

    سید شہزاد ناصر محفلین

    مراسلے:
    9,398
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    باپ ( طاہر شہیر)
    عزیز تر مجھے رکھتا ہے وہ رگِ جاں سے
    یہ بات سچ ہے میرا باپ کم نہیں ماں سے !

    وہ وہ ماں کے کہنے پہ کچھ رعب مجھ پر رکھتا ہے
    یہی وجہ ہے مجھے چومتے جھجکتا ہے !
    وہ آشنا میرے ہر کرب سے رہے ہر دم
    جو کھل کے رو نہیں پاتا مگر سسکتا ہے !
    جڑی ہے اس کی ہر اک ہاں فقط میری ہاں سے
    یہ بات سچ ھے میرا باپ کم نہیں ماں سے !

    ہر ہر ایک درد وہ چپ چاپ خود پہ سہتا ہے
    تمام عمر وہ اپنوں سے کٹ کے رہتا ہے !
    وہ لوٹتا ہے کہیں رات دیر کو، دن بھر
    وجود اس کا پسینہ میں ڈھل کر بہتا ہے !
    گلے ہیں پھر بھی مجھے ایسے چاک گریبان سے
    یہ بات سچ ھے میرا باپ کم نہیں ماں سے !

    پرانا سوٹ پہنتا ہے کم وہ کھاتا ہے
    ،،، مگر کھلونے میرے سب خرید کے لاتا ہے !
    وہ مجھ کو سوئے ہوئے دیکھتا ہے جی بھر کے
    نجانے سوچ کے کیا کیا وہ مسکراتا ہے !
    میرے بغیر ہیں سب خواب اس کے ویران سے
    یہ بات سچ ھے میرا باپ کم نہیں ماں سے !

    وَقَضَىٰ رَبُّكَ أَلَّا تَعْبُدُوا إِلَّا إِيَّاهُ وَبِالْوَالِدَيْنِ إِحْسَانًا ۚ إِمَّا يَبْلُغَنَّ عِندَكَ الْكِبَرَ أَحَدُهُمَا أَوْ كِلَاهُمَا فَلَا تَقُل لَّهُمَا أُفٍّ وَلَا تَنْهَرْهُمَا وَقُل لَّهُمَا قَوْلًا كَرِيمًا
     
    • زبردست زبردست × 6
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. ڈاکٹرعامر شہزاد

    ڈاکٹرعامر شہزاد معطل

    مراسلے:
    2,162
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    میں اپنے گاوں کا مکھیا بھی ہوں، بچوں کا قاتل بھی
    جلا کر دودھ کچھ لوگوں کی خاطر گھی بناتا ہوں !!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  12. سید عمران

    سید عمران محفلین

    مراسلے:
    12,358
    جھنڈا:
    Pakistan
    لاجواب۔۔۔
    الفاظ نہیں مل رہے تعریف کے لیے!!!
    (y)(y)(y)(y)(y)
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  13. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    13,261
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    کیا لکھ دیا!!!!!قسم سے اتنا رونا آرہا ہے۔ واقعی ایسا ہے۔ آج پھر سے یاد آئی ہے اور پھر سے آنسووں کی روانی ہے۔اللہ انہیں اونچے درجات دے،ہر عذاب معاف کرے۔ اُن کی قبر کو ٹھندا،روشن،ہوادار اور کشادہ کرے اور اُس میں جنت کی کھڑکیاں کھول دے۔ ہمیں ان کے لیے صدقۂ جاریہ بنائے۔ آمین! ثم آمین!
    اللہ سب بچوں کے والد صاحبان کو اچھی صحت،ایمان والی،آسانیوں والی لمبی عمر عطا فرمائے۔آمین! ثم آمین!
     
    • متفق متفق × 4
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  14. مقدس

    مقدس لائبریرین

    مراسلے:
    28,443
    جھنڈا:
    England
    موڈ:
    Tired
    :( :(
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  15. عمر سیف

    عمر سیف محفلین

    مراسلے:
    36,613
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Where
    المیہ

    باپ سچ بات بتاتے ہوئے گھبراتا ہے
    اسکو یہ خوف کہ بیٹا کہیں ناراض نہ ہو

    ڈاکٹر یاسین عاطر
     
    • غمناک غمناک × 3
  16. ڈاکٹرعامر شہزاد

    ڈاکٹرعامر شہزاد معطل

    مراسلے:
    2,162
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بیٹی
    مجھے اتنا پیار نہ دو بابا
    کل جانا مجھے نصیب نہ ہو
    یہ جو ماتھا چوما کرتے ہو
    کل اس پہ شکن عجیب نہ ہو
    میں جب بھی روتی ہوں بابا
    تم آنسو پونچھا کرتے ہو
    مجھے اتنی دور نہ چھوڑ آنا
    میں دور ہوں اور تم قریب نہ ہو
    میرے ناز اٹھاتے ہو بابا
    میرے لاڈ اٹھاتے ہو بابا
    میری چھوٹی چھوٹی خواہش پہ
    تم جان لٹاتے ہو بابا
    کل ایسا نہ ہو اک نگری میں
    میں تنہا تم کو یاد کروں
    اور رو رو کے فریاد کروں
    اے اللہ میرے بابا سا
    کوئی پیار جتاے والا ہو
    میرے ناز اٹھانے والا ہو
    میرے بابا مجھ سے عہد کرو
    تم مجھے چھپا کے رکھوگے
    دنیا کی ظالم نظروں سے
    تم مجھے بچا کے رکھوگے

    بابا
    ہر دم ایسا کب ہو پاتا ہے
    جو سوچ رہی ہو میری لاڈو تم
    وہ سب تو بس اک مایہ ہے
    کوئی باپ اپنی بیٹی
    کب جانے سے روک پایا ہے
    سچ کہتے ہیں دنیا والے
    بیٹی تو دھن پرایا ہے
    گھر گھر کی یہی کہانی ہے
    دنیا کی ریت پرانی ہے
    ہر باپ نبھاتا آیا ہے
    تیرے بابا کو بھی نبھانی ہے
    دنیا کی یہ رسم پرانی ہے


    شاعر : نامعلوم ​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
    • غمناک غمناک × 1
  17. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    13,261
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    ہم نے تو یوں اجاڑ دی جیسے
    زندگی باپ کی کمائی ہو
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  18. ظہیراحمدظہیر

    ظہیراحمدظہیر محفلین

    مراسلے:
    2,904
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Busy
    میرے باپ نے ہجرت کی تھی ، میں نے نقل مکانی
    انہوں نے تاریخ لکھی تھی ، میں نے ایک کہانی

    ( نامعلوم از نیویارک )
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  19. زیرک

    زیرک محفلین

    مراسلے:
    4,555
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Buzzed
    باپ بوجھ ڈھوتا تھا، کیا جہیز دے پاتا
    اس لیے وہ شہزادی آج تک کنواری ہے
    منظر بھوپالی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  20. جاسمن

    جاسمن مدیر

    مراسلے:
    13,261
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Fine
    کچھ عرصہ قبل مجھے وٹزایپ پہ یہ نظم ایک ویڈیو کی صورت ملی تھی۔ یو ٹیوب پہ دستیاب اس وڈیو میں شاعر خود اپنی یہ نظم پڑھ رہے ہیں۔ اب میں تلاش کرنے لگی تو تحریری صورت میں ہر طرف غلطیاں ہیں۔ اب میں نے یو ٹیوب سے سُن سُن کے اسے درست کیا ہے۔ اور بڑی مشکل سے باریک لکھا ہوا شاعر کا نام بھی ڈھونڈا ہے۔
    امید ہے آپ کو اچھا لگے گا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر