انور شعور غزل ۔ قلاش گو زمین پہ مجھ سا کوئی نہیں ۔ انور شعور

محمداحمد نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 1, 2012

  1. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    22,036
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    غزل
    قلاش گو زمین پہ مجھ سا کوئی نہیں
    پیتا ہوں زہرِ گُر سنگی، تشنگی نہیں
    ویسے تو اس جہان کی رونق میں کیا کلام
    جس کے لئے یہ بزم سجی تھی، وہی نہیں
    ہمدرد و ہم مزاج میں کیا فرق ہے نہ پوچھ
    دکھ بانٹنے کو گھر میں سبھی ہیں، سبھی نہیں
    پلکوں کی چلمنوں سے ہیں آنکھیں ڈھکی ہوئی
    کیا ہے، بہن کے سر پہ اگر اوڑھنی نہیں
    دنیا میں کوئی حال ہو، کُڑھنے سے فائدہ؟
    دل کو یہاں سکون کبھی ہے، کبھی نہیں
    تھکتا نہ تھا جو بولتے، آج اس شعور کو
    ایسی لگی ہے چُپ کہ نہ جی ہاں، نہ جی نہیں
    انور شعور
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 5
    • زبردست زبردست × 1
  2. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    25,788
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    واہ کیا خوبصورت غزل ہے۔

    شکریہ احمد صاحب
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    22,036
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    بہت شکریہ کاشفی بھائی، ظفری بھائی اور وارث بھائی۔۔۔۔!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  4. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    34,162
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    ای بک پوسٹ ہو چکی ہے پچھلے ماہ ہی۔ اب اس میں اضافہ کرتا جاؤں گا۔ بہت سی کتابوں میں اس طرح اضافے سامنے آئے ہیں۔ سودا، جوش، داغ،
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر