ضعیف العمر شخص کی گائیکی کا انداز

یوسف سلطان نے 'موسیقی کی دنیا' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏دسمبر 1, 2015

  1. یوسف سلطان

    یوسف سلطان محفلین

    مراسلے:
    3,524
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Shh
    وقت ہے آخری سانس ہے آخری ،
    زندگی کی ہے شام آخری آخری
    سنگِدل آ بھی جا اب خدا کے لیے
    لب پہ ہے تیرا نام آخری آخری

    کوئی کرتا ہے مُلکِ عدم کا سفر
    ان سے کہنا تمہیں ڈھونڈتی ہے نظر
    نامہ بر تو بھی جا اب خدا کے لئے
    دے دے ان کو پیام آخری آخری

    توبہ کرتا ہوں کل سے پیوں گا نہیں
    مے کشی کے سہارے جیوں گا نہیں
    میری توبہ سے پہلے میرے ساقیا
    دے دے تھوڑا سا جام آخری آخری

    میرا پینا پِلانا سَبھی ختم کر
    اک نیا جام دے اک نیا رسم کر
    پینے والوں کی فہرست میں اے ساقیا
    لکھ بھی دے میرا نام آخری آخری

    مجھ کو یاروں نے نہلا کے کفنا دیا
    دو گھڑی بھی نہ بیتی کہ دفنا دیا
    کون کرتا ہےغم بس نکلتے ہی دم
    کر دیا انتظام آخری آخری

    میری میت کو دولھا بنایا گیا
    اور بورے گریباں میں لایا گیا
    منہ سے رسمِ کفن کو ہٹایا گیا
    دیکھ لیں خاص و عام آخری آخری

    عشق ہی ابتدا عشق ہی انتہا
    عشق میں کھوگئےہم تیرے ہوگئے
    عشق نے کرلیا فیصلہ آخری
    عشق میرا امام آخری آخری

    جیتے جی قدر میری کسی نے نہ کی
    زندگی اے شکیل بے وفا ہوگئی
    دنیا والو مبارک ہو دنیا تمہیں
    کر چلے ہم سلام آخری آخری ۔ ۔ ۔


     
    • زبردست زبردست × 3
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  2. سید عاطف علی

    سید عاطف علی محفلین

    مراسلے:
    5,822
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Cheerful
    یہاں مصرع شاید اس طرح ہے۔
    "اور گور ِ غریباں میں لایا گیا "
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • زبردست زبردست × 1
    • متفق متفق × 1
  3. امان زرگر

    امان زرگر محفلین

    مراسلے:
    1,334
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cheerful
    کیا یہ شکیل بدایونی کی غزل ہے؟
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  4. محمد خلیل الرحمٰن

    محمد خلیل الرحمٰن مدیر

    مراسلے:
    6,454
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Festive
    آخری وقت ہے آخری سانس ہے زندگی کی ہے شام آخری آخری
    شکیل بدایونی

    آخری وقت ہے آخری سانس ہے زندگی کی ہے شام آخری آخری
    سنگ دل آ بھی جا اب خدا کے لیے لب پہ ہے تیرا نام آخری آخری

    کچھ تو آسان ہوگا عدم کا سفر ان سے کہنا تمہیں ڈھونڈھتی ہے نظر
    نامہ بر تو خدارا نہ اب دیر کر دے دے ان کو پیام آخری آخری

    توبہ کرتا ہوں کل سے پیوں گا نہیں مے کشی کے سہارے جیوں گا نہیں
    میری توبہ سے پہلے مگر ساقیا صرف دے ایک جام آخری آخری

    مجھ کو یاروں نے نہلا کے کفنا دیا دو گھڑی بھی نہ بیتی کہ دفنا دیا
    کون کرتا ہے غم ٹوٹتے ہی یہ دم کر دیا انتظام آخری آخری

    جیتے جی قدر میری کسی نے نہ کی زندگی بھی مری بے وفا ہو گئی
    دنیا والو مبارک یہ دنیا تمہیں کر چلے ہم سلام آخری آخری

    آخری وقت ہے آخری سانس ہے زندگی کی ہے شام آخری آخری - غزل
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  5. سید عاطف علی

    سید عاطف علی محفلین

    مراسلے:
    5,822
    جھنڈا:
    SaudiArabia
    موڈ:
    Cheerful
    کچھ الفاظ کو اگر چھوڑ دیں تو کہہ سکتے ہیں کہ بابا جی نے شکیل بدایونی کے کلام کا گویا حق ادا کردیا ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2

اس صفحے کی تشہیر