سراج اورنگ آبادی سِراج اورنگ آبادی ::::: سرشکِ سُرخ سے میرے ہیں چشمِ گریاں سُرخ ::::: Siraj Aurangabadi

طارق شاہ نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏فروری 26, 2016

  1. طارق شاہ

    طارق شاہ محفلین

    مراسلے:
    10,631
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm

    غزلِ

    سِراجؔ اورنگ آبادی

    سرشکِ سُرخ سے میرے ہیں چشمِ گریاں سُرخ
    مثالِ کلکِ مصوّر ہیں مُوئے مِژگاں سُرخ

    لِکھا ہُوں دلبرِ رنگیں کو عرضئ احوال
    کِیا ہوں خُونِ جگر سے تمام افشاں سُرخ

    اگر ، یہ دِیدۂ پُرخُوں مِرے کا عکس پڑے
    عجب نہیں ہے، اگر ہوئے آبِ طُوفاں سُرخ

    کِیا ہے بس کہ وہ گُل رُو نے عاشقوں کو شہید
    ہُوا ہے صحنِ چمن کی مِثال میداں سُرخ

    دلِ سِراجؔ میں پُھولے ہیں آج گُل لالہ
    ہُوا ہے داغِ محبّت سے یہ گُلِستاں سُرخ

    سِراجؔ اورنگ آبادی

     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3

اس صفحے کی تشہیر