سُر اور تال اور لَے کیا ہوتے ہیں؟

ابو ہاشم نے 'موسیقی کی دنیا' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جنوری 15, 2018

  1. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    453
    اور ان میں کیا فرق ہے؟ براہِ مہربانی کوئی صاحب ان کی مثالوں سے وضاحت کر دیں
     
  2. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    21,121
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    سُر وہ آواز جو ایک خاص فریکونسی سے گلے یا کسی ساز سے نکلتی ہے، فریکونسی بدلنے سے سر بدل جاتا ہے۔

    تال وہ خاص ردھم جو ایک مخصوص چکر سائیکل میں دہرایا جاتا ہے، یہ ردھم ہاتھ کی آواز بھی ہو سکتی ہے، جیسے قوالی میں تالی یا پھر کسی مخصوص ساز کی آواز جیسے طبلہ، ڈرمز وغیرہ۔

    لے، سر اور تال کا تال میل، جب سر اور تال ہم آہنگ ہوں، آہستہ تال ہوگی تو سر اس کے ساتھ ہم آہنگ ہونگے اور مدھم لے ہوگی، تیز تال ہوگی تو سر اس کے ساتھ ہم آہنگ ہو کر تیز لے بن جائے گی۔
     
    • زبردست زبردست × 4
    • معلوماتی معلوماتی × 4
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    453
    محمد وارث صاحب نے مہربانی فرما کر دو اصطلاحات 'استھائی' اور 'انترہ' کی وضاحت کی ہے:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  4. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    453
    ان سے گزارش ہے چند مذید اصطلاحات کی وضاحت کر دیں جن میں تان، راگ، دُھن، الاپ، سنگیت، نَے شامل ہیں
    ایک ضرب المثل ہے 'تانت باجی راگ پایا' اس کا مطلب بھی سمجھا دیجیے
    عام تحریروں میں استعمال ہونے والی کوئی اصطلاح رہ گئی ہو تو اس کی وضاحت بھی کر دیجیے گا
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  5. ابو ہاشم

    ابو ہاشم محفلین

    مراسلے:
    453
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  6. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    21,121
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    راگ:
    راگ سے پہلے سروں کی تقسیم جاننی ضروری ہے،
    بنیادی طور پر سات سُر ہیں (سا، رے، گا، ما، پا، دھا، نی) اس میں پانچ سروں (سا اور پا کے علاوہ) کے دو دو حصے ہیں یعنی کومل (ہلکا یا مدھم) اور تیور (یعنی تیز یا چڑھا ہوا)۔ گویا اس طرح 12 سُر بن گئے۔ پھر ان بارہ سروں کی دو ترتیبیں ہیں صعودی اور نزولی۔ صعودی ترتیب (آروہی) میں نیچے سے اوپر کی طرف سُر ہوتے ہیں یعنی سا سے نی کی طرف۔ نزولی ترتیب (اَورہی) میں اوپر سے نیچے کی طرف سُر ہوتے ہیں یعنی نی سے سا کی طرف۔

    اب راگ انہی سُروں سے بنائی گئی خاص ترتیب کو کہتے ہیں۔ یعنی یہ کہ کسی خاص راگ میں کون کون سے سُر ہیں، وہ سُر کومل ہیں یا تیور اور یہ سر آروہی اور اورہی میں کس طرح لگائے جاتے ہیں۔ جس راگ میں ساتوں سُر لگیں اس کو سمپورن (مکمل) راگ کہتے ہیں، جس میں چھ سُر لگیں اس کو کھاڈو یا شاڈو اور اسی طرح پانچ سروں والے راگ کو اوڈو کہتے ہیں۔ پانچ سے کم سُر کسی راگ میں نہیں لگتے۔ اس چیز کو یعنی ایک راگ میں کتنے سُر ہیں کو راگ کی جاتی کہا جاتا ہے۔

    واضح رہے کہ راگ ایک دوسرے سے اتنے مماثل ہوتے ہیں کہ بعض اوقات کوئی سے دو راگوں میں صرف ایک سُر کا فرق ہوتا ہے اور بعض دفعہ تو ایک سرُ کے بھی صرف کومل یا تیور کا فرق ہوتا ہے۔ راگوں کو پہچاننا صرف اساتذہ کا کام ہے۔

    راگوں کے گروپ بھی ہوتے ہیں جنہیں ٹھاٹھ کہا جاتا ہے۔ جیسے راگ اساوری، راگ درباری، راگ جونپوری وغیرہ ایک ہی ٹھاٹھ یعنی اساوری ٹھاٹھ کے رکن ہیں۔

    راگوں کے گانے کا خاص وقت بھی ہوتا ہے۔ بھیرویں راگ کے بارے میں کہا جاتا ہے کہ کسی بھی وقت گائی جا سکتی ہے۔

    راگوں کی جنس بھی ہوتی ہے اور انہیں راگ اور راگنی کہا جاتا ہے۔ جیسے 'بے وقت کی راگنی' ایک محاورہ بھی ہے۔
     
    آخری تدوین: ‏فروری 12, 2018
    • معلوماتی معلوماتی × 1
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  7. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    21,121
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    تان: گویا گاتے ہوئے کسی ایک خاص سُر پر کچھ دیر ٹھہرتا ہے بعض اوقات کافی دیر تک ٹھہرتا ہے کہ لگتا ہے سانس ہی رکی جا رہی ہے اور ختم کرتے کرتے دو تین چار سُر اور بھی لگا دیتا ہے، اس کو تان کہتے ہیں۔

    دُھن۔ کسی راگ میں بولوں یعنی الفاظ یا الفاظ کے بغیر ہی کوئی خاص ترتیب کو دھن کہتے ہیں جیسے کسی گانے کی دھن۔

    الاپ - کسی بھی راگ کو شروع کرتے ہوئے گویا اس راگ کی جو ابتدا کرتے ہیں اس کو الاپ کہا جاتا ہے۔ موسیقی جاننے والے الاپ ہی سے پہچان لیتے ہیں کہ کونسا راگ ہے۔

    نے - بانسری

    تانت - تار

    تانت باجی راگ پایا - یعنی کسی ساز خاص طور پر سارنگی کی تار ہلانے سے علم ہو جاتا ہے کہ کون سا راگ ہے۔
     
    • زبردست زبردست × 3
    • معلوماتی معلوماتی × 2
    • دوستانہ دوستانہ × 1

اس صفحے کی تشہیر