خواجہ دل محمد اور ڈپٹی نذیر احمد - اقتباس از سرگزشت

محمد وارث نے 'جہان نثر' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اکتوبر 26, 2011

  1. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,912
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    مولانا عبدالمجید سالک نے اپنی خودنوشت سوانح "سرگزشت" میں انجمنِ حمایت اسلام، لاہور کے ایک جلسے کا ایک دلچسپ واقعہ لکھا ہے، ملاحظہ کیجیے۔

    "خواجہ دل محمد اور ڈپٹی نذیر احمد

    اس اجلاس میں ایک بہت دلچسپ واقعہ ہوا، جو مجھے اب تک یاد ہے۔ خواجہ دل محمد صاحب ان دنوں کوئی انیس بیس سال کے نوجوان تھے اور اسی سال انہوں نے ریاضی میں ایم - اے کر کے برادرانِ وطن کے اس طعنے کا مؤثر جواب مہیا کیا تھا کہ مسلمانوں کو حساب نہیں آتا۔ خواجہ صاحب کی ایک خصوصیت خاص طور پر حیرت انگیز تھی کہ وہ ریاضی جیسے خشک مضمون کے ساتھ ہی ساتھ بحرِ شاعری کے بھی شناور تھے۔ اس سال انہوں نے ایک پاکیزہ مسدس "کلک گہر بار" کے نام سے پڑھی جس پر بہت پُرشور داد ملی اور انجمن کو چندہ بھی خوب ملا۔

    اس اجلاس میں شمس العلماء ڈپٹی نذیر احمد بھی دہلی سے آئے ہوئے تھے، سر پر چوگوشیہ ٹوپی، چہرے پر تعبّس، سفید ڈاڑھی، لمبا سیاہ چغہ جو غالباً ایل ایل ڈی کا گاؤن تھا۔ آپ نے تقریر شروع کی تو دل آویز اندازِ بیان کی وجہ سے سارا جلسہ ہمہ تن گوش ہوگیا۔ آپ نے فرمایا، خواجہ دل محمد بہت ذہین اور لائق نوجوان ہیں اور شاعری فی نفسہ بُری چیز نہیں۔ حسان (رض) بن ثابت حضرت رسولِ خدا (ص) کے شاعر تھے لیکن میں کہتا ہوں کہ جو دماغ زیادہ عملی علوم کے لیے موزوں ہے اسے شعر کے بیکار شغل میں کیوں ضائع کیا جائے۔ اِس پر حاجی شمس الدین اٹھے اور کہا کہ شعر چونکہ مسلمہ طور پر نثر سے زیادہ قلوب پر اثر کرتا ہے اس لیے یہ بھی مقاصدِ قومی کے حصول کے لیے مفید ہے۔ چنانچہ خواجہ صاحب کی نظم پر انجمن کو اتنے ہزار روپیہ چندہ وصول ہوا جو دوسری صورت میں شاید نہ ہوتا۔

    اس پر مولانا نذیر احمد کسی قدر تاؤ کھا گئے اور کہنے لگے۔ حاجی صاحب چندہ جمع کرنا کوئی بڑی بات نہیں جو شخص خدمت میں ثابت قدم رہتا ہے اس کی بات قوم پر ضرور اثر کرتی ہے۔ یہ کہا اور عجیب دردناک انداز سے اپنی چوگوشیہ ٹوپی اتاری اور فرمایا کہ یہ ٹوپی جو حضور نظام خلد اللہ ملکہ؛ کے سامنے بھی نہیں اتری محض اس غرض سے اتارے دیتا ہوں کہ اس کو کاسہٴ گدائی بنا کر قوم سے انجمن کے لیے چندہ جمع کیا جائے۔ فقیر آپ کے سامنے موجود ہے، کشکول اس کے ہاتھ میں ہے، دے دو بابا، تمھارا بھلا ہوگا۔
    [​IMG]
    بس پھر کیا تھا، جلسے میں بے نظیر جوش پیدا ہو گیا۔ مولانا کی ٹوپی مولانا کے سر پر رکھی گئی اور ہر طرف سے روپیہ برسنے لگا۔ یہاں تک کہ حاجی شمس الدین کی آواز اعلان کرتے کرتے بیٹھ گئی اور جب ذرا جوش کم ہوا تو مولانا نے پھر تقریر شروع کی اور ہنس کر حاجی صاحب سے کہا۔ اس نظم کے بعد ہماری نثر بھی آپ نے سُنی۔"

    --اقتباس از سرگزشت از عبدالمجید سالک--
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 10
    • زبردست زبردست × 4
  2. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,912
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    یہ تصویر ویب سے حاصل کی ہے، اس میں نام غلط لکھا ہوا ہے، صحیح نام نذیر احمد ہی ہے نہ کہ ٰنظیر احمدٰ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
  3. ام نور العين

    ام نور العين معطل

    مراسلے:
    2,026
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Bookworm
    بہت خوب ، دل چسپ واقعہ ہے۔ ، خواجہ دل محمد كى رياضى كى كتب پاكستانى نصاب ميں بھی شامل رہى ہيں، ان كے شاعر ہونے ،تحريك پاكستان اور زمانہ ہجرت ميں روشن كردار اور تفسيرى كاوش كے متعلق كم لوگ جانتے ہيں۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
    • متفق متفق × 1
  4. شمشاد

    شمشاد لائبریرین

    مراسلے:
    211,432
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بڑے لوگوں کی بڑی باتیں۔

    بہت شکریہ وارث بھائی شریک محفل کرنے کا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  5. محمد امین

    محمد امین لائبریرین

    مراسلے:
    9,454
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Flirty
    بہت خوب۔۔ شکریہ وارث بھائی :happy::happy:
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  6. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,912
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    شکریہ آپ سب کا۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  7. امیداورمحبت

    امیداورمحبت محفلین

    مراسلے:
    3,074
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Relaxed
    بہت خوبصورت تحریر ہے ۔۔۔۔۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  8. محمداحمد

    محمداحمد لائبریرین

    مراسلے:
    23,101
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Amazed
    بہت ہی خوبصورت تحریر ہے ۔

    حیرت ہے کہ اب تک آنکھ سے اوجھل رہی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  9. محمد وارث

    محمد وارث لائبریرین

    مراسلے:
    26,912
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Depressed
    بہت شکریہ امید اور محبت اور احمد صاحب
     

اس صفحے کی تشہیر