1. اردو ویب کے سالانہ اخراجات کی مد میں فراخدلانہ تعاون پر احباب کا بے حد شکریہ نیز ہدف کی تکمیل پر مبارکباد۔ مزید تفصیلات ملاحظہ فرمائیں!

    $500.00
    اعلان ختم کریں

ن م راشد تعارف از ن م راشد

فرخ منظور نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 3, 2010

  1. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,649
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    تعارف

    اجل، ان سے مل،
    کہ یہ سادہ دل
    نہ اہلِ صلوٰۃ اور نہ اہلِ شراب،
    نہ اہلِ ادب اور نہ اہلِ حساب،
    نہ اہلِ کتاب ۔۔۔۔۔۔۔۔۔
    نہ اہلِ کتاب اور نہ اہلِ مشین
    نہ اہلِ خلا اور نہ اہلِ زمین
    فقط بے یقین
    اجل، ان سے مت کر حجاب
    اجل، ان سے مل!

    بڑھو تُم بھی آگے بڑھو،
    اجل سے ملو،
    بڑھو، نو تونگر گداؤ
    نہ کشکولِ دیوزہ گردی چھپاؤ
    تمہیں زندگی سے کوئی ربط باقی نہیں
    اجل سے ہنسو اور اجل کو ہنساؤ!
    بڑھو، بندگانِ زمانہ بڑھو بندگانِ درم
    اجل، یہ سب انسان منفی ہیں،
    منفی زیادہ ہیں، انسان کم
    ہو اِن پر نگاہِ کرم!

    (ن م راشد)
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 4
    • زبردست زبردست × 2
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  2. فاتح

    فاتح لائبریرین

    مراسلے:
    15,751
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Hungover
    واہ واہ واہ
    حیرت ہے اس قدر خوبصورت نظم اس سے قبل کیوں نہ پڑھی۔ فی الواقعہ انتہائی خوبصورت۔ بے حد شکریہ حضور!
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  3. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,649
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    بہت شکریہ فاتح صاحب۔ نظموں کا اثر موسموں کی تبدیلی کی وجہ سے بھی کم یا زیادہ ہوتا ہے۔ :)
     
  4. کاشفی

    کاشفی محفلین

    مراسلے:
    15,371
    خوبصورت نظم شیئر کرنے کے لیئے شکریہ۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  5. چودھری مصطفی

    چودھری مصطفی محفلین

    مراسلے:
    406
    بے مثال، آزاد نظم میں نغمگی قائم رکھنا ن م راشد کے ہاں ہے یا کچھ امجد اسلام امجد کے پاس۔

    کشکولِ دیوزہ گری
    بندگانِ درم کا مطلب بتائیں تو نوازش ہو گی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,649
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    کشکول دریوزہ گری یعنی وہ کاسہ یا پیالہ جس میں بھیک مانگی جاتی ہے۔
    بندگانِ درم یعنی مال و دولت کے پجاری ۔ درم ایک چاندی کے سکے کو کہتے تھے۔
     

اس صفحے کی تشہیر