چھٹی سالگرہ بچوں کے لیے نظمیں محفل کی چھٹی سالگرہ کے موقع پر

سیدہ شگفتہ نے 'محفل کی سالگرہ' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏جولائی 9, 2011

  1. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    اچھا جناب ، اردو محفل فورم کی چھٹی سالگرہ کے موقع پر ایک سلسلہ گوشۂ اطفال سے ۔ گذشتہ عرصہ بچوں کے لیے نظمیں اور مختصر کہانیاں جمع کرنے میں بیشتر دلچسپی رہی اور بہت سی دلچسپ کہانیاں اور نظمیں ملیں ۔ اس موقع پرآپ سب کو دعوت دی جا رہی ہے کہ آپ بھی اس سلسلہ میں شریک ہو سکتے ہیں ۔

    کرنا یہ ہو گا کہ آپ بچوں کے لیے کسی بھی موضوع پر اور کسی بھی عنوان سے لکھی گئی نظمیں یہاں اس دھاگے میں ارسال کر سکتے ہیں ۔ موجودہ ماہ کے آخر تک اس سلسلے میں ارسال کی گئی نظموں کو جمع کر کے ایک بک بنائی جائے گی ۔ اس سلسلے میں آپ اپنی پسندیدہ نظمیں ، یا اپنے گھر میں موجود بچوں کی پسندیدہ نظمیں شامل کر سکتے ہیں ۔ ایسی نظموں کی نشاندہی ضرور کیجیے جو بچپن میں آپ کو بہت پسند رہی ہوں یا بچپن میں آپ کے والدین ، استاد یا دیگر بزرگوں نے آپ کو سنائی ہوں یا پڑھنے کے لیے رہنمائی کی ہو ، یا آپ نے زبانی یاد کی ہوں ۔ اگر آپ کو اپنے اسکول کے زمانہ میں درسی کتب میں شامل نظم نظمیں یاد ہوں تو یہاں شامل کر سکتے ہیں اور شیئر کر سکتے ہیں کہ وہ نظم آپ نے کس جماعت میں پڑھی تھی ۔ درسی کتب کے علاوہ پسندیدہ نظمیں کسی دوسرے ماخذ سے بھی پیش کر سکتے ہیں حوالہ کے ساتھ ۔ اگر آپ کا اپنا کلام ہے تو حوالہ میں اپنا نام لکھیں بصورتِ دیگرحوالہ میں صاحبِ کلام (شاعر) کا نام بھی شامل کیجیے۔

    ایسی نظمیں ضرور شامل کیجیے جو آپ کو اپنے گھر میں ، عزیز و اقارب یا پڑوس میں موجود بچے بار بار سناتے ہوں اور پھر بھی سمجھتے ہوں کہ ابھی تک آپ کو وہ نظم یاد نہیں ہوئی :happy:

    (نوٹ : اگر آپ اس سلسلے کے حوالے سے کچھ تجویز دینا چاہیں تو خوش آمدید۔)

    چلیں پھر آغاز کرتے ہیں ۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  2. نبیل

    نبیل محفلین

    مراسلے:
    16,624
    جھنڈا:
    Germany
    موڈ:
    Depressed
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  3. نبیل

    نبیل محفلین

    مراسلے:
    16,624
    جھنڈا:
    Germany
    موڈ:
    Depressed
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  4. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    برکھا رُت

    بادل گرجے ، بجلی کڑکے
    کھڑکھڑ کھڑ کھڑ کھڑکی کڑکے

    بوندیں ٹپ شپ پانی شر شر
    اندر باہر پانی گھر گھر

    نہریں ندیاں نالے سارے
    پُر ہو گئے پرنالے سارے

    پربت پربت پنچھی گائیں
    مینڈک مل کر شور مچائیں

    نتھو پھتو گاما ساجھا
    چھوڑ کے اپنا کاما کاجا

    موچی ، دھوبی ، درزی ، نائی
    سب نے ایک ہی تان لگائی

    رم جھم رم جھم بدلی چھائی
    برکھا آئی ، برکھا آئی


    کلام : کرامت بخاری
    حوالہ : تعلیم و تربیت ، جولائی 2011ء​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  5. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    میری بہنا

    میری پیاری سی ہے بہنا
    جیسے پھولوں کا ہو گہنا

    اس کو مجھ سے پیار بہت ہے
    وہ میری دلدار بہت ہے

    میں روٹھوں تو مجھے منائے
    ٹافی دے کر جی بہلائے

    پیار سے "باجی" کہتی ہے وہ
    میری ڈانٹ بھی سہتی ہے وہ

    مجھ کو بے حد پیاری ہے
    میری راج دلاری ہے

    سب کی خدمت کرنے والی
    سیدھی سادی ، بھولی بھالی

    جانتی ہے وہ دل میں بسنا
    سب گھر والوں کو خوش رکھنا

    ذکر اسی کا کرتے ہیں سب
    دم اسی کا بھرتے ہیں سب

    جو بھی اس جیسا ہو جائے
    سب کی نظر میں عزت پائے


    (لبنٰی انصاری)​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  6. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392


    کوئلا


    رنگ میرا سیاہ ہے لیکن
    کوہ میری پناہ ہے لیکن

    میں حرارت بدن میں رکھتا ہوں
    میں پہاڑوں کے دل میں رہتا ہوں

    صنعتیں میرے دم سے چلتی ہیں
    بھٹیاں میرے دم سے جلتی ہیں

    میرے جلنے سے روشنی ہر سُو
    اور بُجھ جاؤں تو سیاہ آنسو

    انجنوں میں ہے زندگی مجھ سے
    اور چٹانوں کی دوستی مجھ سے

    مجھ کو ڈھونڈو کہ قیمتی ہوں میں
    رنگ کالا ہے ، روشنی ہوں میں


    (کلام : محسن احسان)
    ماہنامہ ہمدرد نونہال ، فروری 2006ء​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  7. حمزہ کاظمی

    حمزہ کاظمی محفلین

    مراسلے:
    229
    بزرگوں کی باتیں

    ٹلو بلو نٹ کھٹ بچے
    بد اخلاق اور منہ پھٹ بچے
    بات کسی کی وہ کب مانیں
    اپنے کیے کو اچھا جانیں
    علم سے ان کا دور کا رشتہ
    کیسی کتابین ، کیسا بستہ
    دن بھر بازاروں میں گھومیں
    گھر، بس رات کو آ کر سوئیں
    ماں ان کو سمجھاتی بہت تھی
    باپ کو خوف دلاتی بہت تھی
    لیکن وہ کچھ سنتے نہین تھے
    جو بھی کہو وہ کرتے نہیں تھے
    مر گئے جب ماں باپ ہی دونوں
    بھوکے رہنے لگے وہ دونوں
    بات انہین تب سمجھھ میں آئی
    کاش کہ کرتے ہم بھی پڑھائی
    سب کی طرح آرام سے رہتے
    اب گزرے گی عمر یہ کیسے
    بچو! سمجھ لو آج یہ بات
    مانو بزرگوںکی ہر بات

    جمال نقوی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  8. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    ہماری اردو

    کتنی پیاری زبان ہے اردو
    دوستی کا نشان ہے اردو

    اس کی آٍغوش وا ہے سب کے لیے
    دھوپ میں سائبان ہے اردو

    آئے مہمان اور جائے نہ پھر
    مہرباں میزبان ہے اردو

    اس کے شیدائی تھے "حکیم سعید"
    ان کی بھی ترجمان ہے اردو

    نثر ہو یا کہ نظم دونوں میں
    خوش ادا ، خوش بیان ہے اردو

    عربی ، فارسی و سنسکرت
    ان خزانوں کی شان ہے اردو

    کم نہیں اس کے بولنے والے
    نصف ارب کی زبان ہے اردو

    وار غیروں کے ہنس کے سہتی ہے
    لشکری ہے ، جوان ہے اردو

    نونہالو! تم اپنی بھوک مٹاؤ
    علم و دانش کا خوان ہے اردو

    کلام : تشنہ بریلوی
    ہمدرد نونہال ، جولائی 2009ء​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1
  9. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392


    لوری

    سو جا ، میرے پیارے سو جا
    میرے راج دلارے سو جا

    دنیا پر ہے رات کا ڈیرا
    ہر جانب ہے نیند کا پھیرا
    چڑیوں نے بھی کیا بسیرا

    سو گئے دن کے نظارے سو جا
    سو جا ، میرے پیارے سو جا

    چاند ستارے لوری گائیں
    نکلیں ماں کے دل سے دعائیں
    رد ہوں تیری ساری بلائیں

    میری جان سے پیارے سو جا
    میرے راج دلارے سو جا

    اے میرے نازوں کے پالے
    پلکوں پلکوں خواب سجا لے
    رات بخیر ، خدا کے حوالے

    میرے دل کے سہارے سو جا
    سو جا ، میرے پیارے سو جا


    (کلام : سرشار صدیقی)
    ہمدرد نونہال ، ستمبر 2009ء​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  10. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    پہچان

    ایک صاحب کا پالتو کتا
    جب کسی شاہراہ سے گزرا

    کوئی آیا نظر اسی جیسا
    جو سڑک پر تھا بیچ میں لیٹا

    پوچھا کتے نے، اے میرے بھائی!
    آپ کے جی میں کیوں یہ بات آئی؟

    بیچ رستے میں کیوں پڑے ہو میاں؟
    کون سی ضد پہ یوں اڑے ہو میاں؟

    بولا ، خوش ہوں کہ بن کے میں نادان
    نیک اور بد کی کرتا ہوں پہچان

    لوگ اچھے جو ادھر آتے ہیں
    پاؤں مجھ سے بچا کے جاتے ہیں

    جو برے ہیں ، مجھے ستاتے ہیں
    جانے کیوں ٹھوکریں لگاتے ہیں

    تم تو کیسے مزے اڑاتے ہو
    سیٹھ صاحب کا مال کھاتے ہو

    ظلم بے چارگی کے سہنے دو
    مجھ کو اس حال ہی میں رہنے دو

    آفاق صدیقی​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  11. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    الو

    اُلّو ! تم بڑے اُلو ہو
    کونے میں وہاں بیٹھے ہو

    نیچے کیوں نہیں آتے ہو
    شکل نہیں دکھلاتے ہو

    دن بھر سوتے رہتے ہو
    رات ہوئی اٹھ جاتے ہو

    دن میں تم کو دکھتا نہیں کیا
    آنکھیں کھول نہ پاتے ہو

    آنکھوں پر جو چڑھا ہے چشمہ
    دیکھ نہیں کیا پاتے ہو

    شاید خراب ہیں آنکھیں تمہاری
    دوا نہیں ڈلواتے ہو

    اُلّو ! تم بڑے اُلّو ہو
    وہاں اکیلے بیٹھے ہو

    آؤ نیچے دیکھوں گا
    چشمہ تمہارا اتاروں گا

    دن میں تم کو دکھتا نہیں کیوں
    وجہ کیا ہے سمجھوں گا

    ڈاکٹر کو دکھلا دوں گا
    اس سے دوا ڈلوا دوں گا

    دن میں بھی پھر دیکھ سکو گے
    چشمہ نیا بنوا دوں گا

    آو نیچے آ جاؤ
    اپنی آنکھیں دکھلاؤ


    کلام : محمد انوار​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    اب علم عام ہو

    تابندہ اپنی صبح ہو ، رخشندہ شام ہو
    بن جائے خلد اپنا وطن ، ایسا کام ہو

    اب علم عام ہو

    لے کر نوید علم کی آئے بہارِ صبح
    آراستہ ہو علم و ادب سے نگارِ صبح
    ہاتھوں میں سب کے علم کا لبریز جام ہو

    اب علم عام ہو

    ظلمت کا اس جہاں میں نہ کوئی نشاں رہے
    اب آفتابِ علم سے روشن جہاں رہے
    رخشندہ شب کو علم کا ماہِ تمام ہو

    اب علم عام ہو

    وہ علم جس سے خاکِ وطن کہکشاں بنے
    وہ علم جس سے اپنی زمیں آسماں بنے
    وہ علم جس سے زندگی بھی شاد کام ہو

    اب علم عام ہو

    وہ علم جس سے ذہن کو بیدار ہم کریں
    وہ علم جس سے دشت کو گلزار ہم کریں
    وہ علم جو بہارِ چمن کا پیام ہو

    اب علم عام ہو
    اب علم عام ہو


    ( کلام : عباس العزم)​
     
  13. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392

    آوازوں کی دنیا


    مرغا بولا ککڑوں کوں
    اور گدھا ڈھینچوں ڈھینچوں

    بلی بولی میاؤں میاؤں
    کتا بولا بھوں بھوں بھوں

    مرغی بولی کُٹ کُُٹ کُٹ
    چوزے بولے چُوں چُوں چُوں

    ریل جو بولی چھک چھک چھک
    موٹر بولی پُوں پُوں پُوں

    مینہ برسے رم جھم رم جھم
    ساون ہو یا ہو بھادُوں

    بُڑھیا جب دھاگا کاتے
    چرخا بولے رُوں رُوں رُوں

    سالن چولھے پر رکھا
    ہنڈیا بولے شُوں شُوں شُوں

    ننھے نے توڑا برتن
    چِلّاتے آئے ماموں

    منے کی باتیں سن لو
    کہتا ہے آغوں آغوں

    آئی اذاں کی ہے آواز
    ٹھہرو ، نماز اب میں پڑھ لوں

    پھول کہے ، اللہ اللہ
    میں بھی اس کا بندہ ہوں


    کلام : تنویر پھول​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  14. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    جاگو ، میرے پیارے جاگو
    میری آنکھ کے تارے جاگو !

    جاگ اٹھا مشرق میں سویرا
    دور ہوا دنیا سے اندھیرا
    لہرایا سورج کا پھریرا
    ڈوبے صبح کے تارے ، جاگو !
    جاگو ، میرے پیارے جاگو !

    صبح کی چڑیاں بول رہی ہیں
    کلیاں آنکھیں کھول رہی ہیں
    کرنیں موتی رول رہی ہیں
    تم بھی راج دلارے جاگو !
    جاگو ، میرے پیارے جاگو !

    ٹوٹیں ظلم کے کچے دھاگے
    دنیا سے تاریکی بھاگے
    تم جاگو تو دنیا جاگے
    مستقبل کے سہارے جاگو
    جاگو ، میرے پیارے جاگو !


    کلام : سرشار صدیقی​
     
  15. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    فقیر کی صدا

    سڑک پر ایک اندھا جا رہا ہے
    بہت پُر درد لَے میں گا رہا ہے

    وہ لاٹھی کے سہارے چل رہا ہے
    سڑک کے اک کنارے چل رہا ہے

    کبھی ٹکرا بھی جاتا ہے کسی سے
    کبھی گرتا ہے اپنی بے بسی سے

    وہ اپنا ہاتھ پھیلائے کھڑا ہے
    وہ گاتا ہے "فقط اللہ بڑا ہے"

    تمھیں آنکھوں کی نعمت دی خدا نے
    زمانے بھر کی دولت دی خدا نے

    دکھائے تم کو منظر پیارے پیارے
    اندھیرا ہے مقدر میں ہمارے

    رہے قائم تمھاری شان بابا
    کرو مجبور پر احسان بابا

    تمھاری ، ربّ نگہبانی کرے گا
    ہر اک مشکل میں آسانی کرے گا

    (کلام : شریف احمد شریف)​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  16. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    نئے سال کا پیغام

    کام جو محنت سے کرتا ہے اسی کا نام ہے
    درحقیقت کام ہی انسان کا آرام ہے
    جب تلک زندہ رہو ، مت جی چراؤ کام سے
    سالِ نو کا ہر بشر کو بس یہی پیغام ہے

    پیار کے تم گیت گاؤ ، ختم کر دو نفرتیں
    جھوٹ ، چوری چھوڑ دو ، اچھی نہیں یہ عادتیں
    سیکھ لو گے پیار سے رہنا اگر تم ، دوستو !
    زندگی بھر کے لیے تم کو ملیں گی راحتیں

    سال وہ اچھا ہے جو ہر آدمی کو دے خوشی
    سب رہیں آرام سے ، پُر لطف ہو یہ زندگی
    سالِ نو کہتا ہے اس کی ایک ہی بس شرط ہے
    ہر طرف جگ میں نظر آئے وفا کی روشنی


    امان اللہ نیر شوکت​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  17. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    غور سے سنیے

    جس کو اسکول سے وحشت ہوگی
    ایسے بچے کی مرمت ہو گی

    اُن میں پوشیدہ شرارت ہو گی
    جن کی معصوم سی صورت ہو گی

    کام استاد کا جس دن نہ کیا
    بس اُسی روز قیامت ہو گی

    مُرغا بننے کا اگر حکم ملا
    کسے انکار کی جُرات ہو گی

    میرے حصے کی بھی ٹافی کھا لی
    اب نہ باجی کو شکایت ہو گی

    رات دن کھیلنے والو! سُن لو
    فیل ہونے پہ ندامت ہو گی


    ضیاء الرحمن ضیاء​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  18. سیدہ شگفتہ

    سیدہ شگفتہ لائبریرین

    مراسلے:
    29,392
    سزا

    ایک تھی لڑکی چھوٹی سی
    چھوٹی سی اور موٹی سی

    دال چپاتی کھاتی تھی
    نیند بہت ہی آتی تھی

    یوں تو تھی وہ گڑیا سی
    رنگوں کی اک پڑیا سی

    آفت کی پرکالہ تھی
    بڑے بڑوں کی خالہ تھی

    اک دن اس کو شوق جو آیا
    سر میں اس کے دھیان سمایا

    امی کے کمرے میں جا کر
    جوتے لائی ان کے اٹھا کر

    پاؤں میں پہنے ہنسی خوشی سے
    گھومی ہر سُو خوشی خوشی سے

    اِدھر اُدھر وہ پھرتی تھی
    اُٹھ اُٹھ کر وہ گرتی تھی

    پھر سیڑھی کے پاس وہ آ کر
    اپنے سر پہ شال سجا کر

    جھومی ، ناچی اور لہرائی
    پاؤں پھسلا ، نیچے آئی

    اس کو پکڑنے کو سب دوڑے
    چوٹ لگی تو جوتے چھوڑے


    (کلام : محسن احسان)​
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  19. ابن سعید

    ابن سعید خادم

    مراسلے:
    60,145
    مچھلی جل کی رانی ہے۔
    جیون اس کا پانی ہے۔
    ہاتھ لگاؤ گے تو ڈر جائے گی۔
    باہر نکالو گے تو مر جائے گی۔
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  20. حمزہ کاظمی

    حمزہ کاظمی محفلین

    مراسلے:
    229
    زیور علم

    نانی اماں کہتی ہیں
    دادی کا بھی کہنا ہے
    علم تو اپنا گہنا ہے
    خوب پڑھو اور خوب پڑھاؤ
    ہر گھر میں اسکول بناؤ
    ساری دنیا پر چھا جاؤ
    عزت سے گر رہنا ہے
    علم تو اپنا گہنا ہے





    سرشار صدیقی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر