برای اصلاح

ارتضی عافی نے 'اِصلاحِ سخن' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏اگست 17, 2017

  1. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    بھوکی ہے یا خدا میری بھی بیٹیاں

    عشق کا درد کا غم کی یہ تلخیاں
    چار دن زندگی میں نئی سختیاں
    جو بھی دے گا تو مولا مجھے ہے قبول
    بھوک بھی تشنگی اور پریشانیاں
    یہ جہاں تیرا ہے یہ زمیں تیری ہے
    یہ گلستان میں بے زباں تتلیاں
    میں کھڑا ہوں ترے سامنے خالی ہاتھ
    اے خدا سن مری یہ پریشانیاں
    دیکھ حالات میرے اے میرے خدا
    صبح سے گرسنہ ہے مری بیٹیاں
    مجھ سے دنیا میں لینا نہ اور امتحاں
    بھوکی ہے یا خدا میری بھی بیٹیاں
    ہم کو بھی تو عطا رزق کر اے خدا
    اور اٹھا دینا اس گھر سے تاریکیاں
    فاعلن فاعلن فاعلن فاعلن
    الف عین محمد ریحان قریشی سر برای اصلاح
     
  2. محمد ریحان قریشی

    محمد ریحان قریشی محفلین

    مراسلے:
    1,898
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Devilish
    عشق کی درد کی غم کی یہ تلخیاں
    بھوک یا تشنگی یا پریشانیاں
    کیا جا سکتا ہے۔
    وزن درست نہیں۔
    "ہیں" کا محل ہے۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  3. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    سر مہربانی
    یہ گ لس فاعلن
    تان میں فاعلن
    بے زباں فاعلن
    تت ل یاں فاعلن
    سر گلستان کا وزن فعولن اور فاعلن دونوں پر استعمال نہیں ہو سکتے؟؟؟ میرے دوستوں نے کہا تھا دونوں وزن میں استعمال ہوتے ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • متفق متفق × 1
  4. محمد ریحان قریشی

    محمد ریحان قریشی محفلین

    مراسلے:
    1,898
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Devilish
    ہاں مجھ سے ہی خطا ہوئی ہے یہاں، مصرع درست ہے۔
     
    آخری تدوین: ‏اگست 17, 2017
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  5. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    شُکریہ سر خوش رہیے گا
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  6. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,723
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    عشق کا درد کا غم کی یہ تلخیاں
    چار دن زندگی میں نئی سختیاں
    ÷÷÷ پہلے مصرع میں ہر جگہ ’کا‘ نہیں، کی ‘ کا مقام ہے۔
    نئی سختیاں؟ ’نئی‘ بھرتی کا ہے۔

    جو بھی دے گا تو مولا مجھے ہے قبول
    بھوک بھی تشنگی اور پریشانیاں
    ÷÷÷دوسرا مرع خلاف محاورہ ہے۔ ’تشنگی بھی اور پریشانیاں بھی‘ ہونا چاہیے۔ الفاظ بدلیں۔

    یہ جہاں تیرا ہے یہ زمیں تیری ہے
    یہ گلستان میں بے زباں تتلیاں
    ÷÷۔دونوں مصرعوں میں ربط محسوس نہیں ہوتا۔ ’یہ گلستاں میں ہیں تتلیاں‘ بہتر ہے۔ ’گلستان‘ درست وزن میں ہے لیکن شاید بات مکمل نہیں ہوتی۔۔

    میں کھڑا ہوں ترے سامنے خالی ہاتھ
    اے خدا سن مری یہ پریشانیاں
    ÷÷÷ پریشانیاں سنی نہیں جاتیں، ان کی داستان کہی جاتی ہے۔

    دیکھ حالات میرے اے میرے خدا
    صبح سے گرسنہ ہے مری بیٹیاں
    ÷÷ہے ‘ پر بات ہو چکی

    مجھ سے دنیا میں لینا نہ اور امتحاں
    بھوکی ہے یا خدا میری بھی بیٹیاں
    ÷÷یہ بھی دو لخت ہے۔ دوسرے مصرع میں بھی ’ہیں‘ کا محل ہے۔

    ہم کو بھی تو عطا رزق کر اے خدا
    اور اٹھا دینا اس گھر سے تاریکیاں
    ÷÷یہ شعر بھی دو لخت ہے۔ رزق سے تاریکی کا کیا تعلق؟
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  7. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    سر مہربانی اب کیسا ہے سر
    عشق کی درد کی غم کی یہ تلخیاں
    چار دن زیست میں جو بھی ہیں سختیاں
    جو بھی دے گا تو مولا مجھے ہے قبول
    بھوک یا تشنگی یا پریشانیاں
    میں خطا وار ہوں میں گنہگار ہوں
    بخش دے اے خدا میری بھی غلطیاں
    ہم کھڑے ہیں ترے سامنے خالی ہاتھ
    بھر دے مولا ہماری بھی یہ جھولیاں
    دیکھ حالات میرے اے میرے خدا
    صبح سے گرسنہ ہیں مری بیٹیاں
    اے خدا یہ گلستان کیوں خشک ہیں
    اے خدا کیوں مرے ہیں تری تتلیاں
    روشنی اس زمیں کی ہے مہدی ترا
    پھر بھی کیوں اس زمیں پہ ہیں تاریکیاں
     
  8. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,723
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    نئے اشعار الگ سے لکھنا تھا
    بخش دے اے خدا میری بھی غلطیاں
    ÷÷÷غلطی کا تلفظ غلط ہے۔ لام پر فتحہ ہے۔ جزم نہیں۔ یہی تلفظ غلطیاں میں بھی ہونا چاہئے۔

    ہم کھڑے ہیں ترے سامنے خالی ہاتھ
    بھر دے مولا ہماری بھی یہ جھولیاں
    ÷÷ہاتھوں کو اگر جھولیاں کہا جا رہا ہے تو درست ہے۔

    اے خدا یہ گلستان کیوں خشک ہیں
    اے خدا کیوں مرے ہیں تری تتلیاں
    ÷÷دوسرا مصرع سمجھ میں نہیں آیا۔ تتلی، تتلیاں مؤنث ہے۔ ’مری ہیں‘ ہونا چاہیے تھا۔ لیکن یہ گرامر استعمال نہیں کی جاتی۔ یوں کہا جاتا ہے کہ ’مر گئی ہیں‘ یا ’مر رہی ہیں‘۔ معلوم نہیں یہ وہی ’مرنے‘ سے مشق ہے یا ’مرے‘ بمعنی ’میرے‘ ہے؟؟؟؟

    روشنی اس زمیں کی ہے مہدی ترا
    پھر بھی کیوں اس زمیں پہ ہیں تاریکیاں
    مہدی؟ تخلص ہے کیا؟
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  9. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    سر مہربانی
    میں ہوا کے گناہ کے بدلے
    آگ کی غلطیاں نہیں لکھتا
    پیج سادہ ہی چھوڑ دیتا ہوں
    میں کبھی تلخیاں نہیں لکھتا
    غلطیاں سر میں نے تلخیاں کے وزن پر استعمال کیا ہے اور یہ شعر پرتاپ سوم و نشی کا ہے غلطیاں تلخیاں قافیہ ہے
    اور سر مہدی امام مہدی علیہ السلام کے بارے میں کہا ہے کہ اس زمیں کی روشنی مہدی اور پھر بھی زمیں کیوں ہے تاریکیاں اور جھولیاں والا اگر غلط ہے درست کرتا ہوں اور مری ہیں تتلیاں یہ بھی درست کرتا ہوں سر
     
  10. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,723
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    غالب کی بھی مثال دی جاتی تو بھی میں تو یہی کہتا کہ ’غلطی‘ کا تلفظ غلط ہے۔ یہ دوسری بات ہے کہ مستند شعراء غلط تلفظ نہیں باندھتے۔
    مہدی کے بارے میں میں کچھ نہیں کہہ سکتا۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  11. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    یہ دو شعر کیسی ہیں؟؟
    اے خدا یہ گلستان کیوں خشک ہیں
    اے خدا چار سو کیوں ہیں ویرانیاں
    تیرے در پر 'گدا بن کے ہم آئے ہیں
    بھر دے مولا ہماری بھی یہ جھولیاں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,723
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    درست ہیں کم از کم وزن اور گرامر میں۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  13. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    مہربانی سر شعر اگر درست نہیں ہے کوئی پرواہ نہیں میں کوشش کرتا رہوں گا میں اس محفل سے وابستہ ہوا ہوں کچھ نہ کچھ سیکھوں گا اور شعر لکھنے سے کم از کم شعر تقطیع کرنے میں دشواری نہیں ہوگی اور کافی کچھ سیکھ گیا ہوں جب کوئی غزل سنتا ہوں تو سمجھ میں آتا ہے کہ کس بحر میں لکھا ہے اور سر مذکر کی مونث کی پہچان جملے کے لحاظ سے کیسے ہوگی اور شعری ربط کے بارے میں بھی سمجھائیے گا سر مہربانی ہوگی آپ کی مسلسل اصلاح انشاءاللہ کچھ سیکھ جاؤں گا نوکر تو عافی
     
  14. الف عین

    الف عین لائبریرین

    مراسلے:
    33,723
    جھنڈا:
    India
    موڈ:
    Psychedelic
    کہنے سے زیادہ پڑھنے پر دھیان دینے کی ضرورت ہے۔ دیکھو کہ مستند شعراء کس طرح شعر کہتے ہیں۔
     
    • دوستانہ دوستانہ × 1
  15. ارتضی عافی

    ارتضی عافی محفلین

    مراسلے:
    211
    جھنڈا:
    Sweden
    موڈ:
    Inspired
    مہربانی سر جی دھیان دونگا
     

اس صفحے کی تشہیر