مصطفیٰ زیدی اپنے مرحوم بھائی مجتبیٰ زیدی کے نام ۔ مصطفیٰ زیدی

فرخ منظور نے 'پسندیدہ کلام' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏فروری 5, 2017

  1. فرخ منظور

    فرخ منظور لائبریرین

    مراسلے:
    12,867
    جھنڈا:
    Pakistan
    موڈ:
    Cold
    اپنے مرحوم بھائی مجتبیٰ زیدی کے نام

    تم کہاں رہتے ہو اے ہم سے بچھڑنے والو!
    ہم تمھیں ڈھونڈنے جائیں تو ملو گے کہ نہیں
    ماں کی ویران نگاہوں کی طرف دیکھو گے؟
    بھائی آواز اگر دے تو سُنو گے کہ نہیں

    دشتِ غربت کے بھلے دن سے بھی جی ڈرتا ہے
    کہ وہاں کوئی نہ مونس نہ سہارا ہوگا
    ہم کہاں جشن میں شامل تھے جو کچھ سُن نہ سکے!
    تم نے ان زخموں میں کس کس کو پکارا ہوگا

    ہم تو جس وقت بھی، جس دن بھی پریشان ہوئے
    تم نے آکر ہمیں محفوظ کیا، راہ دکھائی
    اور جب تم پہ بُرا وقت پڑا تب ہم لوگ
    جانے کس گھر میں ،کہاں سوئے ہوئے تھے بھائی

    ہم تری لاش کو کاندھا بھی نہ دینے آئے
    ہم نے غربت میں تجھے زیرِ زمیں چھوڑ دیا
    ہم نے اس زیست میں بس ایک نگیں پایا تھا
    کسی تربت میں وہی ایک نگیں چھوڑ دیا

    (مصطفیٰ زیدی)
    موج مری صدف صدف
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
    • زبردست زبردست × 1

اس صفحے کی تشہیر