انتخاب قابل اجمیری

نوید صادق نے 'اردو شاعری' کی ذیل میں اس موضوع کا آغاز کیا، ‏مئی 12, 2007

  1. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    کتاب: کلیاتِ قابل
    شاعر: قابل اجمیری
    انتخاب:نوید صادق، احمد فاروق
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  2. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    راستہ ہے کہ کٹتا جاتا ہے
    فاصلہ ہے کہ کم نہیں ہوتا

    وقت کرتا ہے پرورش برسوں
    حادثہ ایک دم نہیں ہوتا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  3. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    تم نہ مانو، مگر حقیقت ہے
    عشق انسان کی ضرورت ہے
    جی رہا ہوں اس اعتماد کے ساتھ
    زندگی کو مری ضرورت ہے
    حسن ہی حسن، جلوے ہی جلوے
    صرف احساس کی ضرورت ہے
    اس کے وعدے پہ ناز تھے کیا کیا
    اب دروبام سے ندامت ہے
    اس کی محفل میں بیٹھ کر دیکھو
    زندگی کتنی خوبصورت ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  4. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    حرم کی آبرو لٹتی رہے گی
    یہاں بھی غزنوی آتے رہے ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  5. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    ہم بدلتے ہیں رخ ہواؤں کا
    آئے دنیا ہمارے ساتھ چلے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  6. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    خیالِ سود نہ اندیشہ زیاں ہے ابھی
    چلے چلو کہ مذاقِ سفر جواں ہے ابھی
    رکا رکا سا تبسم، جھکی جھکی سی نظر
    تمہیں سلیقہ بے گانگی کہاں ہے ابھی
    سکونِ دل کی تمنا سے فائدہ قابل
    نفس نفس غمِ جاناں کی داستاں ہے ابھی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  7. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    رہبر جو ہمیں ٹھوکریں کھانے نہیں دیتا
    ڈرتا ہے کہیں راستہ ہموار نہ ہو جائے

    میخانہ بھی اک کارگہِ شیشہ گری ہے
    پیمانہ کہیں ٹوٹ کے تلوار نہ ہو جائے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  8. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    ہمیں بھی شہرِ نگاراں میں لے چلو یارو
    کسی کے عشق کا آزار ہم بھی رکھتے ہیں

    قدم قدم پہ چٹکتی ہیں شوق کی کلیاں
    صبا کی شوخی رفتار ہم بھی رکھتے ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 3
  9. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    نہیں اب تیرے ملنے کا گماں بھی
    قیامت ناگہاں ہو جائے گی کیا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  10. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    اک جھومتے بادل نے چپکے سے کہا قابل
    ہنگامِ گل آیا ہے، ساقی نے بلایا ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 2
  11. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    دل کی دھڑکن کا اعتبار نہیں
    ورنہ آواز تو تمہاری ہے

    لطفِ صبحِ نشاط مجھ سے پوچھ
    میں نے شامِ الم گزاری ہے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  12. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    مقاماتِ فکر و نظر کون سمجھے
    یہاں لوگ نقشِ قدم دیکھتے ہیں

    بصد رشک قابل کی آوارگی کو
    غزالانِ دیر و حرم دیکھتے ہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  13. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    رات تاریک، راہ نا ہموار
    شمعِ غم کو ہوا نہ دے جانا

    بے کسی سے بڑی امیدیں ہیں
    تم کوئی آسرا نہ دے جانا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  14. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    احباب کے فریبِ مسلسل کے باوجود
    کھنچتا ہے دل خلوص کی آواز پر ابھی
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  15. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    ابھی مشکل سے سمجھے گا زمانہ
    نیا نغمہ نئی آواز ہوں میں

    مجھی پہ ختم ہیں سارے ترانے
    شکستِ ساز کی آواز ہوں میں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  16. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    آؤ اپنی زمیں کو چمکائیں
    چاند تاروں کا اعتبار نہیں

    حسنِ ترتیب ہے دلیلِ چمن
    ورنہ صحرا میں کیا بہار نہیں
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  17. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    اختیاراتِ محبت کو سمجھتا ہوں میں
    آپ بے وجہ بھی کر سکتے ہیں برباد مجھے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  18. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    تضادِ جذبات میں یہ نازک مقام آیا تو کیا کرو گے
    میں رو رہا ہوں تو ہنس رہے ہو میں مسکرایا تو کیا کرو گے

    مجھے تو اس درجہ وقتِ رخصت سکوں کی تلقین کر رہے ہو
    مگر کچھ اپنے لئے بھی سوچا میں یاد آیا تو کیا کرو گے

    کچھ اپنے دل پہ بھی زخم کھاؤ مرے لہو کی بہار کب تک
    مجھے سہارا بنانے والو، میں لڑکھڑایا تو کیا کرو گے

    ابھی تو تنقید ہو رہی ہے مرے مذاقِ جنوں پہ لیکن
    تمہاری زلفوں کی برہمی کا سوال آیا تو کیا کرو گے

    ابھی تو دامن چھڑا رہے ہو، بگڑ کے قابل سے جا رہے ہو
    مگر کبھی دل کی دھڑکنوں میں شریک پایا تو کیا کرو گے
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  19. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    چمن کے غنچوں نے رنگ بدلا، فلک کے تاروں سے ساتھ چھوڑا
    میں جن سہاروں سے مطمئن تھا انہی سہاروں نے ساتھ چھوڑا

    خود اہلِ کشتی کی سازشیں ہیںکہ نا خدا کی نوازشیں ہیں
    وہیں تلاطم کو ہوش آیا جہاں کناروں نے ساتھ چھوڑا

    مرے گناہِ نظر سے پہلے چمن چمن میری آبرو تھی
    مجھے شعورِ جمال آیا تو گلعذاروںنے ساتھ چھوڑا
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1
  20. نوید صادق

    نوید صادق محفلین

    مراسلے:
    2,278
    پاس ہے منزل مگر انجام کا کیا ٹھیک ہے
    شوق کو مانوسِ سعی رائیگاں کرتے چلو
     
    • پسندیدہ پسندیدہ × 1

اس صفحے کی تشہیر