آج کی آیت

سیما علی

لائبریرین
اور لوگوں میں حج کا اعلان کردو، کہ وہ تمہارے پاس پیدل آئیں، اور دُور دراز کے راستوں سے سفر کرنے والی اُن اُونٹنیوں پر سوار ہوکر آئیں جو (لمبے سفر سے) دُبلی ہوگئی ہوں ۔

‏﴿سورۃ الحج ، ۲۷﴾
 

سیما علی

لائبریرین
اور وہی ہے جو لوگوں کے نااُمید ہونے کے بعد بارش برساتا اور اپنی رحمت پھیلا دیتا ہے، اور وہی ہے جو (سب کا) قابلِ تعریف رکھوالا ہے۔
‏سورۃ الشورٰی آیت نمبر 28
 

سیما علی

لائبریرین
يَا أَيُّهَا الَّذِينَ آمَنُوا قُوا أَنفُسَكُمْ وَأَهْلِيكُمْ نَارًا وَقُودُهَا النَّاسُ وَالْحِجَارَةُ عَلَيْهَا مَلَائِكَةٌ غِلَاظٌ شِدَادٌ لَّا يَعْصُونَ اللَّ۔هَ مَا أَمَرَهُمْ وَيَفْعَلُونَ مَا يُؤْمَرُونَ (6) سورة التحريم
’’اے لوگو جو ایمان لائے ہو، بچاؤ اپنے آپ کو اور اپنے اہل و عیال کو اُس آگ سے جس کا ایندھن انسان اور پتھر ہوں گے جس پر نہایت تند خو اور سخت گیر فرشتے مقرر ہوں گے جو کبھی اللہ کے حکم کی نافرمانی نہیں کرتے اور جو حکم بھی انہیں دیا جاتا ہے اسے بجا لاتے ہیں‘‘۔
(6) سورة التحريم
 

سیما علی

لائبریرین
بیشک اللہ انصاف کا، احسان کا، اور رشتہ داروں کو (اُن کے حقوق) دینے کا حکم دیتا ہے، اور بے حیائی، بدی اور ظلم سے روکتا ہے۔ وہ تمہیں نصیحت کرتا ہے، تاکہ تم نصیحت قبول کرو۔

‏﴿سورۃ النحل، ۹۰﴾
 

سیما علی

لائبریرین
الَّذِيْ خَلَقَ الْمَوْتَ وَالْحَيٰوةَ
لِيَبْلُوَكُمْ اَيُّكُمْ اَحْسَنُ عَمَلًا
ۭوَهُوَ الْعَزِيْزُ الْغَفُوْرُ

( الملک :2 )
” جس نے
موت و حیات کو اس لیے پیدا کیا کہ تمہیں آزمائے کہ تم میں اچھے کام کون کرتا ہے
اور وہ غالب اور بخشنے والا ہے۔”
 

سیما علی

لائبریرین
يَّخْتَصُّ بِرَحْمَتِهٖ مَنْ یَّشَآءُ ؕ وَ اللّٰہُ ذُو الْفَضْلِ العظیم ﴿۷۴﴾
(74 - آل عمران)

[يَّخْتَصُّ: وہ خاص کرلیتا ہے] [بِرَحْمَتِهٖ: اپنی رحمت سے] [مَنْ: جس کو] [يَّشَاۗءُ: وہ چاہتا ہے] [وَاللّٰهُ: اور اللہ] [ذُو الْفَضْلِ: فضل والا] [الْعَظِيْمِ: بڑا۔ بڑے]
 

سیما علی

لائبریرین
وَ قُل رَّبِّ اَعُوذ بِکَ مِن ہَمَزٰتِ الشَّیٰطِین

‏اور دعا کرو کہ : پروردگار میں شیاطین کی اکساہٹوں سے تیری پناہ مانگتا ہوں

‏سورة المؤمنون کی آیت نمبر 97
 

سیما علی

لائبریرین
(البقره، 2: 1 تا 5)
’’الف لام میم (حقیقی معنی اﷲ اور رسول صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم ہی بہتر جانتے ہیں)۔ (یہ) وہ عظیم کتاب ہے جس میں کسی شک کی گنجائش نہیں، (یہ) پرہیزگاروں کے لیے ہدایت ہے۔ جو غیب پر ایمان لاتے اور نماز کو (تمام حقوق کے ساتھ) قائم کرتے ہیں او رجو کچھ ہم نے انہیں عطا کیا ہے اس میں سے (ہماری راہ) میں خرچ کرتے ہیں۔ اور وہ لوگ جو آپ کی طرف نازل کیا گیا اور جو آپ سے پہلے نازل کیا گیا (سب) پر ایمان لاتے ہیں، اور وہ آخرت پر بھی (کامل) یقین رکھتے ہیں۔ وہی اپنے رب کی طرف سے ہدایت پر ہیں اور وہی حقیقی کامیابی پانے والے ہیں‘‘۔
 

سیما علی

لائبریرین
اور مچھلی والے (پیغمبر یعنی یونس علیہ السلام) کو دیکھو! جب وہ خفا ہوکر چل کھڑے ہوئے تھے،اور یہ سمجھے تھے کہ ہم ان کی کوئی پکڑ نہیں کریں گے۔پھر انہوں نےاندھیریوں میں سےآواز لگائی کہ:’’(یا اللہ!) تیرے سوا کوئی معبود نہیں،تو ہر عیب سے پاک ہے۔ بیشک میں قصوروار ہوں۔

‏﴿الانبیاء،۸۷﴾
 

سیما علی

لائبریرین
اور حقیقت یہ ہے کہ ہم نے انسان کو پیدا کیا ہے، اور اُس کے دِل میں جو خیالات آتے ہیں، اُن (تک) سے ہم خوب واقف ہیں، اور ہم اُس کی شہہ رگ سے بھی زیادہ اُس کے قریب ہیں،
‏سورۃ ق آیت نمبر 16
0soLy4A.jpg
 
Top