نتائج تلاش

  1. کاشفی

    مرقّع ء رنج و الم زندگی ہے - فرزانہ اعجاز

    غزل (فرزانہ اعجاز) مرقّع ء رنج و الم زندگی ہے مری زندگی ، اب یہی زندگی ہے خوشی میں بھی دل ساتھ دیتا نہیں اب ہنسی میں ملی آنسو وءں کی نمی ہے نہ پوچھا کبھی تم نے احوال میرا مجھے زعم تھا کہ بڑی دوستی ہے گئ رات جیسے اندھیری گلی تھی سویرے کا مطلب نئ روشنی ہے ثبوت وفا مانگتے ہیں ہم ہی سے...
  2. کاشفی

    آپ کے پسندیدہ اشعار!

    وقت رخصت الوداع کا لفظ کہنے کے لئے وہ ترے سوکھے لبوں کا تھر تھرانا یاد ہے (حسرت موہانی)
  3. کاشفی

    آپ کے پسندیدہ اشعار!

    ہم نے مر مر کے یہ انداز سخن پایا ہے تم کو تو حسن ملا ہے مری جاں گھر بیٹھے (شاذ تمکنت)
  4. کاشفی

    آپ کے پسندیدہ اشعار!

    کچھ اور طرح کی مشکل میں ڈالنے کے لیے میں اپنی زندگی آسان کرنے والا ہوں (آفتاب حسین)
  5. کاشفی

    عمران خان - ہاتھی کے دانت کھانے کے اور دکھانے کے اور

    شکریہ محمد احمد بھائی۔ خوش و خرم رہیئے ہمیشہ۔ خیریت سب۔
  6. کاشفی

    عمران خان - ہاتھی کے دانت کھانے کے اور دکھانے کے اور

    الحمد اللہ ۔ اللہ رب العزت کا کرم ہے۔ آپ کیسے ہیں۔ آپ سے کافی دنوں بعد مل کے اچھا لگا۔ خوش رہیئے۔۔
  7. کاشفی

    جئے الطاف حُسین

    جئے الطاف حُسین
  8. کاشفی

    عمران خان - ہاتھی کے دانت کھانے کے اور دکھانے کے اور

    ہاتھی کے دانت کھانے کے اور دکھانے کے اور
  9. کاشفی

    عمران خان - ہاتھی کے دانت کھانے کے اور دکھانے کے اور

    ہاتھی کے دانت کھانے کے اور دکھانے کے اور
  10. کاشفی

    ہم اُردو بولیں گے

    ہم اُردو بولیں گے
  11. کاشفی

    آپ کے پسندیدہ اشعار!

    زندگی زندہ دلی کا ہے نام مردہ دل خاک جیا کرتے ہیں (امام بخش ناسخ)
  12. کاشفی

    آزادیِ نسواں۔۔۔ آخری حد کیا ہے؟؟؟

    "عورت نشہ ہے، فریب ہے، سراب ہے، رسوائی ہے اور وہ سب کچھ ہے جو انسان کو بدی کی طرف راغب کرتا ہے۔ عورت پاکیزگی ہے، عصمت ہے، سراپا تقدیس ہے اور سب کچھ ہے جو انسان کو انسانیت کے معراجِ کمال پر لے جاتا ہے۔ جس آسانی سے یہ ایمان کو غارت کرسکتی ہے اُسی آسانی سے یہ اُسے عطا بھی کرسکتی ہے۔۔" (اقتباس...
  13. کاشفی

    آپ کے پسندیدہ اشعار!

    جن سے انساں کو پہنچتی ہے ہمیشہ تکلیف ان کا دعویٰ ہے کہ وہ اصل خدا والے ہیں عبد الحمید عدم
  14. کاشفی

    آپ کے پسندیدہ اشعار!

    ہزاروں کام محبت میں ہیں مزے کے داغؔ جو لوگ کچھ نہیں کرتے کمال کرتے ہیں (داغ دہلوی رحمتہ اللہ علیہ)
Top