نتائج تلاش

  1. امین شارق

    عشق سے گر نظر نکل جائے غزل نمبر 99 شاعر امین شارؔق

    ابھی 99 پر ناٹ آؤٹ ہوں انشااللہ بہت جلد آجائے گی۔
  2. امین شارق

    عشق سے گر نظر نکل جائے غزل نمبر 99 شاعر امین شارؔق

    بہت شکریہ ظہیر صاحب۔
  3. امین شارق

    عشق سے گر نظر نکل جائے غزل نمبر 99 شاعر امین شارؔق

    الف عین ظہیراحمدظہیر یاسر شاہ محمّد احسن سمیع :راحل: عشق سے گر نظر نکل جائے حُسن کا سب سحر نکل جائے بِن تیرے میں تو وہ پرندہ ہوں جس کا اُڑنے کا پر نکل جائے کتنے ارمان سر اُٹھاتے ہیں ایک حسرت اگر نکل جائے حسرتیں اور سر اُٹھاتی ہیں ایک ارماں اگر نکل جائے ایسی قسمت سے ملی ہے چادر پیر ڈھانپوں تو...
  4. امین شارق

    دیئے گئے لفظ پر شاعری - دوسرا دور

    زخمی ہمارا ایک ایک انگ کیا ہے اے یار زمانے نے بہت تنگ کیا ہے تنگ
  5. امین شارق

    دیئے گئے لفظ پر شاعری - دوسرا دور

    ہوجاتا ہوں سب سے خفا ان کے لئے مخصوص ہے دل میں جگہ ان کے لئے خفا
  6. امین شارق

    دیئے گئے لفظ پر شاعری - دوسرا دور

    یہ تو وہی ہے جو میں نے لکھا ہے کوئی نیا لکھے
  7. امین شارق

    دیئے گئے لفظ پر شاعری - دوسرا دور

    محبت کے لئےکچھ خاص دل مخصوص ہوتے ہیں یہ وہ نغمہ ہے جو ہر ساز پر گایا نہیں جاتا مخصوص
  8. امین شارق

    دیئے گئے لفظ پر شاعری - دوسرا دور

    یاد سب کچھ ہے مجھے ہجر کے صدمے ظالم بھول جاتا ہوں مگر دیکھ کر صورت تیری ظالم
  9. امین شارق

    دیئے گئے لفظ پر شاعری - دوسرا دور

    آسماں گر تیرے تلوؤں کا نظارا کرتا روز اک چاند تصدق میں اتارا کرتا تصدق
  10. امین شارق

    نادان ہے جو رختِ سفر دیکھتا نہ ہو غزل نمبر 98 شاعر امین شارؔق

    الف عین ظہیراحمدظہیر یاسر شاہ محمّد احسن سمیع :راحل: نادان ہے جو رختِ سفر دیکھتا نہ ہو پرواز سے پہلے ہی جو پر دیکھتا نہ ہو آئینے میں وہ حُسن اپنا دیکھتے ہیں اور چُھپ کر کوئی یہ دل میں ہے ڈر دیکھتا نہ ہو یہ خوشنما باغات، سمندر یہ فضائیں ہے کم نظر جو ایک نظر دیکھتا نہ ہو نادان ہے غافل ہے جو...
  11. امین شارق

    ناصر کاظمی فکر تعمیرِ آشیاں بھی ہے

    وجہِ تسکیں بھی ہے خیال اس کا حد سے بڑھ جائے تو گراں بھی ہے زبردست۔
  12. امین شارق

    ناصر کاظمی دل دھڑکنے کا سبب یاد آیا

    بہت خوب! حاِل دل ہم بھی ُسناتے لیکن جب وہ ُرخصت ہوا تب یاد آیا بیٹھ کر سایہ ُگل میں ناصر ہم بہت روئے وہ جب یاد آیا
  13. امین شارق

    ہمیشہ حُسن والے ٹکڑے ٹکڑے دل کے کرتے ہیں غزل نمبر 97 شاعر امین شارؔق

    الف عین ظہیراحمدظہیر یاسر شاہ محمّد احسن سمیع :راحل: ہمیشہ حُسن والے ٹکڑے ٹکڑے دل کے کرتے ہیں مگر شکوے سدا یہ عشقِ لاحاصل کے کرتے ہیں خزانوں سے ابھی انجان وہ نادان ہیں ملاح سمندر چھوڑ کر جو تذکرے ساحل کے کرتے ہیں سنو یہ خود کشی تو اک گناہ ہے اور حماقت ہے اگر عاقل ہیں تو کیوں کام وہ جاہل کے...
  14. امین شارق

    حُسن کے ہیں لگ گئے بازار میرے سامنے غزل نمبر 94 شاعر امین شارؔق

    ٹھیک ہے سر مجھے غزلوں کی سینچری مکمل کرنے دیں اس کے بعد نہیں کروں گا کوئی غزل پوسٹ۔
  15. امین شارق

    تیز دل آپ کو جو دیکھوں تو دھڑکتا ہے غزل نمبر 96 شاعر امین شارؔق

    نہیں مجھے نہیں معلوم افاعیل کے برے میں میں جانتا ہوں غزل کے اشعار بحر میں نہیں ہوں گے۔
  16. امین شارق

    تیز دل آپ کو جو دیکھوں تو دھڑکتا ہے غزل نمبر 96 شاعر امین شارؔق

    الف عین ظہیراحمدظہیر یاسر شاہ محمّد احسن سمیع :راحل: تیز دل آپ کو جو دیکھوں تو دھڑکتا ہے نا سمجھ دل ہے تم سے ملنے کو دھڑکتا ہے مجھ کو بے جان سمجھ کر نہ ستاؤ لوگو میرے سینے میں بھی اک دل ہے جو دھڑکتا ہے میں ہوں انسان جیتا جاگتا نہ ظُلم کرو ہاتھ رکھ کر میرا دل دیکھ لو دھڑکتا ہے دھڑکنِ دل پہ تو...
  17. امین شارق

    یہ زمیں ہے صورتِ شاہکار میرے سامنے غزل نمبر 95 شاعر امین شارؔق

    الف عین ظہیراحمدظہیر یاسر شاہ محمّد احسن سمیع :راحل: یہ زمیں ہے صورتِ شاہکار میرے سامنے روز ہوتے ہیں تماشے یار میرے سامنے زندگانی روئے زار زار میرے سامنے روز ہوتے ہیں یہ دامن تار میرے سامنے ڈوبتے ہیں ڈوبنے کا خوف جن کے دل میں ہو سینکڑوں کرتے ہیں دریا پار میرے سامنے جو اعانت نا کرے مجبور کی ذی...
Top