La Alma کے کوائف نامے کے مراسلے پر تبصرے

  1. جاسم محمد
    جاسم محمد
    سیکولرازم ایک موقف نہیں اصول ہے۔ اور اصولوں پر ہٹ دھرمی ہی دکھائی جاتی ہے، لچک نہیں۔
    ریاستی امور کو مذہب سے جدا کرنا سیکولرازم کا بنیادی اصول ہے۔ اور اسی اصول کی بنیاد پر مغربی ممالک نے ترقی کی ہے۔ اس کادائیں یا بائیں بازو کی سیاست سے کوئی تعلق نہیں ہے۔
    ‏ستمبر 26, 2018
    La Alma نے اسے پسند کیا۔
  2. La Alma
    La Alma
    حالانکہ معاملہ اس کے برعکس ہے۔ سیکولر ازم فطرت کے اصولوں سے بغاوت کا نام ہے۔ پوری انسانی تاریخ اٹھا کر دیکھ لیجئے۔ چاہے بت پرستی ہو، آتش پرستی ہو یا الہامی مذاہب کا اتباع ، فطرت ہمیشہ مذہب پسند رہی ہے۔
    ‏ستمبر 27, 2018
    ربیع م اور اکمل زیدی نے اسے پسند کیا۔
  3. ربیع م
    ربیع م
    سیکولر ازم کلیتا مذہب کے خلاف نہیں ہے بس مذہب کی حدود متعین کرتا ہے.
    ‏ستمبر 27, 2018
    La Alma نے اسے پسند کیا۔
  4. آصف اثر
    آصف اثر
    سیکولرزم کے ساتھ بدتمیز کا بھی اضافہ کردیجیے۔ حق تو آپ نے تقریبا بیان ہی کردیا ہے۔
    ‏ستمبر 27, 2018
  5. آصف اثر
    آصف اثر
    جاسم محمد مذہب کو محدود کرنے کا حق سیکولرازم کو کس نے دیا ہے۔
    ‏ستمبر 27, 2018
    ربیع م اور La Alma نے اسے پسند کیا۔
  6. آصف اثر
    آصف اثر
    جاسم محمد اس لیے تو اسرائیل جیسی یہودی ریاست ترقی کو ترس رہی ہے۔ اچھا فلسفہ ہے۔
    ایران ایک کٹر مذہبی ملک ہے، اگر بین الاقوامی یہودی اور عیسائی حکمرانوں کی سخت پابندیاں ہٹ جائے تو کیا ایران کو ترقی یافتہ ہونے میں صدی لگے گی۔ دس سال کی دیر ہوگی۔
    ‏ستمبر 27, 2018
  7. La Alma
    La Alma
    مذاہب سیکولر ازم کی ڈومین میں نہیں آتے جو وہ ان کی حدود متعین کرے ۔ اگر ایسا ہے تو یہ عمل اس School of thought کے اپنے ہی نظریات سے متصادم ہے۔
    ‏ستمبر 27, 2018
    ربیع م نے اسے پسند کیا۔
  8. جاسم محمد
    جاسم محمد
    آصف اثر آپ یورپ کی تاریخ کیوں نہیں پڑھتے؟ ماضی میں یورپ میں بھی مذہب ہر چیز پر حاوی تھا۔ معاشرہ کو عقل، دلیل اور منطق پر چلانے کیلئے سیکولرازم کا لاگو کیا گیا۔ نتیجہ سب کے سامنے ہے۔
    ‏ستمبر 30, 2018
    آصف اثر نے اسے پسند کیا۔
  9. جاسم محمد
    جاسم محمد
    آصف اثر یہودی ریاست مکمل طور پر سیکولر نہیں ہے۔ ان کی قانون سازی کا اہم حصہ یہودی مذہب پر مبنی ہے۔
    ‏ستمبر 30, 2018
  10. جاسم محمد
    جاسم محمد
    La Alma ماضی میں یقینا انسانوں کی اکثریت مذہب پرست ہوگی۔ البتہ دور جدید میں ایسا نہیں ہے۔ مغربی یورپ کی اکثریت آج مذہب بیزار ہے۔
    ‏ستمبر 30, 2018
  11. جاسم محمد
    جاسم محمد
    La Alma سیکولرازم نے صرف ریاستی امور میں مذہب کو الگ کیا ہے۔ باقی امور معاشرت میں مذہب قائم و دائم ہے۔ اس کی وجہ ماضی میں مذہب اور ریاست کے ملاپ سے وقوع پزیر ہونے والی تباہی ہے۔ جس کی وجہ سے یورپ ڈارک ایجز کا شکار رہا۔
    ‏ستمبر 30, 2018
    La Alma نے اسے پسند کیا۔
  12. آصف اثر
    آصف اثر
    میں نے یورپ کی تاریخ بہت پہلے پڑھی ہے۔ آپ اس بات کو کیوں نہیں سمجھ پارہے ہیں کہ عیسائیت اور اسلام دو بہت ہی الگ مذاہب ہیں۔ عیسائیوں کی کتاب بائبل پادریوں کے خواہشات کا ایک مسخ شدہ کتاب بن گیا تھا۔ لہذا اس کے خلاف بغاوت ہونا تھی۔
    ‏ستمبر 30, 2018
  13. آصف اثر
    آصف اثر
    جب کہ مسلمانوں کی کتاب قرآن مجید اول تا قیامت تحریف سے محفوظ خالص اللہ تعالیٰ کی الہامی کتاب ہے۔
    جہاں تک سیکولرزم کا تعلق ہے تو آج کل ارتقا پرستوں اور سیکولر شدت پسندوں نے جو تباہی مچائی ہے الامان والحیظ۔
    ‏ستمبر 30, 2018
    ربیع م نے اسے پسند کیا۔
  14. جاسم محمد
    جاسم محمد
    آصف اثر اسلامی حکومتوں کے خلاف بھی ماضی میں بغاوتیں ہوتی رہی ہیں۔ وجہ ان کا مذہبی ہونا نہیں بلکہ مذہب اور امور ریاست کے ملاپ سے جو خراب گورننس پیدا ہوتی ہے۔ اس کی روک تھام تھا۔ عوام کو اس سے غرض نہیں ہوتی کہ ان کی حکومت کس آئیڈیولوجی پر چل رہی ہے۔ بلکہ اس سے کہ وہ خوشحال ہیں کہ نہیں۔
    ‏اکتوبر 1, 2018
    منذر رضا نے اسے پسند کیا۔
  15. آصف اثر
    آصف اثر
    جاسم محمد آپ نے مذہب کے غلبے کی بات تھی، عیسائی حکمرانوں کی نہیں۔
    اگر اسلامی ممالک میں اسلام برسرِاقتدار آجائے تو سائنس خوب پھلے پھولے گی۔
    ‏اکتوبر 1, 2018
    ربیع م نے اسے پسند کیا۔
  16. جاسم محمد
    جاسم محمد
    آصف اثر اسلامی حکومت میں سائنس بھی "اسلامی" ہوگی۔ ایسے میں پھلنے پھولنے والی بات مفروضے سے زیادہ نہیں ہے
    ‏اکتوبر 2, 2018
    منذر رضا نے اسے پسند کیا۔