اردو سیارہ

April 24، 2015

کرک نامہسنیل نرائن کا باؤلنگ ایکشن پھر شک کی زد میں

ویسٹ انڈیز کے مایہ ناز اسپن گیندباز، اور دنیا بھر کی لیگز میں "کرائے کے سپاہی" کی خدمات انجام دینے والے، سنیل نرائن کا مستقبل مخدوش دکھائی دینے لگا ہے کیونکہ ایک مرتبہ پھر ان کے باؤلنگ ایکشن پر شک کی انگلیاں اٹھ رہی ہیں۔ اس وقت انڈین پریمیئر لیگ میں مصروف سنیل کو تازہ دھچکا یہ لگا ہے کہ سن رائزرز حیدرآباد کے خلاف مقابلے کے بعد ان کا باؤلنگ ایکشن رپورٹ ہوگیا ہے۔ کولکتہ نائٹ رائیڈرز کی نمائندگی کرتے ہوئے ایک طرف تو وہ ناکام رہے، کولکتہ کو بھی شکست ہوئی لیکن سب سے بڑا دھچکا یہ ہے کہ مقابلے کے بعد …

کرک نامہتجربہ بھی پاکستان کو کامیابی نہ دلا سکا، ٹی ٹوئنٹی میں بھی شکست

ایک روزہ مرحلے میں پاکستان کی بدترین شکست کو قیادت کی ناتجربہ کاری سمجھا گیا تھا لیکن واحد ٹی ٹوئنٹی میں پاکستان پورے تجربے کو بروئے کار لا کر بھی بنگلہ دیش کو چت نہ کرسکا۔ یوں میزبان نے جامع کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 7 وکٹوں سے باآسانی کامیابی حاصل کی، جو ٹی ٹوئنٹی کی تاریخ میں اس کی پاکستان کے خلاف پہلی فتح ہے۔ شاہد آفریدی کی زیر قیادت اور عمر گل، سعید اجمل، محمد حفیظ اور احمد شہزاد جیسے تجربہ کار ٹی ٹوئنٹی کھلاڑیوں کی موجودگی میں بھی پاکستان بنگلہ دیش کا کچھ نہ "بگاڑ" سکا۔ نہ بلے باز چل …

کمپیوٹنگاپنے سوشل نیٹ ورکس کو اپنی پسند کے مطابق پرائیویٹ بنائیں

سوشل نیٹ ورکس پر پرائیویسی کو بہتر بنانے کے لیے ’’اے وی جی پرائیویسی فکس‘‘ (AVG PrivacyFix) مفت دستیاب ہے۔ یہ گوگل کروم اور فائرفوکس کے علاوہ اسمارٹ فونز پر اینڈروئیڈ اور آئی فون کے لیے بھی دستیاب ہے۔ اس کی مدد سے آپ صرف ایک کلک سے اسکین کر کے دیکھ سکتے ہیں کہ آپ کی پرائیویسی کو کیا…مزید پڑھیں ←

کاشفپٹھان

اٹھارہ اگست۔ اٹھارہ سو پچاسی۔
ایک انتہائی غیر اھم خبر۔



اقبال جہانگیرکلونجی کے فوائد اور جدید تحقیقات و تجربات

کلونجی کے فوائد اور جدید تحقیقات و تجربات نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کا ارشاد گرامی ہے کلونجی استعمال کیا کرو کیونکہ اس میں موت کے سوا ہر بیماری کے لئے شفا ہے“ کلونجی ایک قسم کی گھاس کا … پڑھنا جاری رکھیں→

کمپیوٹنگتمام سوشل نیٹ ورکس پر موجود اپنا ڈیٹا پی سی پر بیک اپ کریں

پی سی پر کوئی ای میل کلائنٹ انسٹال کر لینے سے یہ فائدہ ہوتا ہے کہ اس میں ڈاؤن لوڈ کی گئی تمام ای میلز اور ان میں موجود فائلز آپ کے کمپیوٹر پر محفوظ ہو جاتی ہیں۔ سوشل نیٹ ورکس جیسے کہ فیس بک ، ٹوئٹر اور انسٹا گرام وغیرہ کے لیے ’’سوشل سیف‘‘ پروگرام اسی مقصد کے لیے…مزید پڑھیں ←

سید عاصم علی شاہکیا یہی دوستی ہے۔۔

تحریر: سید عاصم علی شاہ

جدید دنیا میں زندہ قومیں اپنی  خارجہ پالیسی میں ہمیشہ اپنے مفادات کو مقدم رکھتی  ہیں۔ ان مفادات کے تحفظ کے لئے دوسرے ممالک سے تعلقات   کو بڑھایا جاتا ہے اور دوستی   کو مزید مضبوط کیا جاتا ہے۔ اچھے  دوستوں کو قربان کر کےنقصان تو اٹھایا جا سکتا ہے فائدہ نہیں۔مگر  یمن کے مسلے پر پارلیمنٹ  میں ہونے والی بحث سے لگتا ہے کہ ہماری نا سمجھی ہمیں لے ڈوبے گی اور ہم اپنے قابل اعتبار اور آزمودہ دوستوں کو کھو بیٹھیں گے۔ تین چار  دن کی اس بحث میں ملکی مفادات اور تعلقات سے متعلق پالیسی …

April 23، 2015

میاں افتخار رشیدہمارا ہیرو کون؟راجہ داہریا محمّد بن قاسم

سندھ میں اسلام کی آمد سے پہلے چچ خاندان کی حکومت تھی۔ خلفائے راشدین کے دور میں جب اسلامی فتوحات کا دور دورہ تھا اور اسلامی فوجیں مشرق و مغرب کے ممالک کو فتح کررہی تھیں اس زمانے میں سلطنت کسرٰی سے اسلامی فوجیں نبرد آزما تھیں۔مکران کا علاقہ سلطنت کسرٰی کا حصہ تھا۔جب یزد گرد(شاہ ایران)کی فوجوں کے خلاف قادسیہ کے میدان میں فیصلہ کن لڑائی جاری تھی، تو اس زمانے میں چچ خاندان کے راجاؤں نے ایرانیوں کی مدد کے لئے کمک روانہ کی تھی اسی طرح معرکہ نہاوند میں سندھ کے ہندو فوجیوں نے حصہ لیا تھا۔مگر ان …

میاں افتخار رشیدتاجدار نبوت حضرت محمّد مصطفیٰ صلی اللہ علیہ وسلم بحیثیت تاجر

کائنات میں بسنے والے ہر ہر فرد کی کامل رہبری کے لیے اللہ رب العزت کی طرف سے رحمة للعالمین حضرت محمد مصطفی  صلی اللہ علیہ وسلم کو مبعوث کیا گیا، سب سے آخر میں بھیج کر، قیامت تک کے لیے آنجناب کے سر پر تمام جہانوں کی سرداری ونبوت کا تاج رکھ کر اعلان کر دیا گیاکہ اے دنیا بھر میں بسنے والے انسانو! اپنی زندگی کو بہتر سے بہتر اور پُرسکون بنانا چاہتے ہو تو تمہارے لیے رسول اللہ  صلی اللہ علیہ وسلمکی مبارک ہستی میں بہترین نمونہ موجود ہے(الاحزاب:۲۱) ان سے رہنمائی حاصل کرو اور دنیا وآخرت کی ابدی خوشیوں اور …

میاں افتخار رشیدفتح سندھ،واقعات، اسباب،اورثمرات

عرب کے بادیہ نشینوں کے ہاتھوں کسریٰ کی عظیم الشان سلطنت کا خاتمہ اسلامی تاریخ کا ہی نہیں بلکہ انسانی تاریخ کا بھی غیر معمولی واقعہ ہی، اس ضمن میں عہدِ فاروقی ؓ میںایران سے ہونے والی جنگوں میں ”نہاوند “ کے معرکے کو بنیادی حیثیت حاصل ہے۔ جنگ نہاوند ایران میں ساسانی اقتدار کو بچانے کی آخری کوشش تھی، قبلِ ازیں پے درپے شکستوں نے شاہ ایران کو بوکھلادیا تھا، لہٰذا اُس نے مشرق میں اپنی باجگزار ریاستوں (جو مکران وسندھ سے لیکر سراندیپ تک پھیلی ہوئی تھیں) سے فوجی امداد طلب کی اور اس کے لیے سندھ، …

میاں افتخار رشیدمیمن برادری کی تاریخ

پاکستان کے قیام تعمیرا ورترقی میں اہم ترین کردار ادا کرنے والی میمن برادری کی تاریخ کا اگر جائزہ لیا جائے تو یہ حیرت انگیز بات سامنے آتی ہے کہ پاکستان کی دوسری تجارتی برادریوں دہلی پنجابی سوداگر، چنیوٹ برادری، اور آغاخانی جماعت کی کچھ شاخوں کی مانند میمن برادری کے بزرگوں کا بنیادی تعلق پاکستان ہی سے تھا اور وہ صدیوں پہلے موجودہ پاکستان سے تلاش معاش یا تبلغ اسلام کی خاطر ہجرت کرکے اس خطے سے برصغیر ہندو پاک کے دیگر خطوں گجرات، راجھستان، دہلی ، بنگال، برما اور دیگر خطوں میں جو اب بھارت می …

سید عاصم علی شاہ''کیا یہی دوستی ہے''

تحریر: سید عاصم علی شاہ
 
جدید دنیا میں زندہ قومیں اپنی خارجہ پالیسی میں ہمیشہ اپنے مفادات کو مقدم رکھتی  ہیں۔ اپنے مفادات کے تحفظ کے لئے دوسرے ممالک سے تعلقات   کو بڑھایا جاتا ہے اور دوستی   کو مزید مضبوط کیا جاتا ہے۔ اچھے  دوستوں کو قربان کر کےنقصان تو اٹھایا جا سکتا ہے فائدہ نہیں۔مگر  یمن کے مسلے پر پارلیمنٹ  میں ہونے والی بحث سے لگتا ہے کہ ہماری نا سمجھی ہمیں لے ڈوبے گی اور ہم اپنے قابل اعتبار اور آزمودہ دوستوں کو کھو بیٹھیں گے۔ تین چار  دن کی اس بحث میں ملکی مفادات اور تعلقات سے متعلق پالیسی …

سید عاصم علی شاہ''کیا یہی دوستی ہے''

تحریر: سید عاصم علی شاہ
 
جدید دنیا میں زندہ قومیں اپنی خارجہ پالیسی میں ہمیشہ اپنے مفادات کو مقدم رکھتی  ہیں۔ اپنے مفادات کے تحفظ کے لئے دوسرے ممالک سے تعلقات   کو بڑھایا جاتا ہے اور دوستی   کو مزید مضبوط کیا جاتا ہے۔ اچھے  دوستوں کو قربان کر کےنقصان تو اٹھایا جا سکتا ہے فائدہ نہیں۔مگر  یمن کے مسلے پر پارلیمنٹ  میں ہونے والی بحث سے لگتا ہے کہ ہماری نا سمجھی ہمیں لے ڈوبے گی اور ہم اپنے قابل اعتبار اور آزمودہ دوستوں کو کھو بیٹھیں گے۔ تین چار  دن کی اس بحث میں ملکی مفادات اور تعلقات سے متعلق پالیسی …

سید عاصم علی شاہ''کیا یہی دوستی ہے''

تحریر: سید عاصم علی شاہ
 
جدید دنیا میں زندہ قومیں اپنی خارجہ پالیسی میں ہمیشہ اپنے مفادات کو مقدم رکھتی  ہیں۔ اپنے مفادات کے تحفظ کے لئے دوسرے ممالک سے تعلقات   کو بڑھایا جاتا ہے اور دوستی   کو مزید مضبوط کیا جاتا ہے۔ اچھے  دوستوں کو قربان کر کےنقصان تو اٹھایا جا سکتا ہے فائدہ نہیں۔مگر  یمن کے مسلے پر پارلیمنٹ  میں ہونے والی بحث سے لگتا ہے کہ ہماری نا سمجھی ہمیں لے ڈوبے گی اور ہم اپنے قابل اعتبار اور آزمودہ دوستوں کو کھو بیٹھیں گے۔ تین چار  دن کی اس بحث میں ملکی مفادات اور تعلقات سے متعلق پالیسی …

سید عاصم علی شاہ''کیا یہی دوستی ہے''

تحریر: سید عاصم علی شاہ
 
جدید دنیا میں زندہ قومیں اپنی خارجہ پالیسی میں ہمیشہ اپنے مفادات کو مقدم رکھتی  ہیں۔ اپنے مفادات کے تحفظ کے لئے دوسرے ممالک سے تعلقات   کو بڑھایا جاتا ہے اور دوستی   کو مزید مضبوط کیا جاتا ہے۔ اچھے  دوستوں کو قربان کر کےنقصان تو اٹھایا جا سکتا ہے فائدہ نہیں۔مگر  یمن کے مسلے پر پارلیمنٹ  میں ہونے والی بحث سے لگتا ہے کہ ہماری نا سمجھی ہمیں لے ڈوبے گی اور ہم اپنے قابل اعتبار اور آزمودہ دوستوں کو کھو بیٹھیں گے۔ تین چار  دن کی اس بحث میں ملکی مفادات اور تعلقات سے متعلق پالیسی …

کرک نامہ[ریکارڈز] پاکستان کے کپتانوں کی سنچریاں

پاکستان کرکٹ پر باؤلنگ اور باؤلرز کی کتنی گہری چھاپ ہے، اس کا اندازہ ریکارڈ بک سے ہی ہوجاتا ہے۔فضل محمود سے لے کر شعیب اختر تک، پاکستان نے دنیائے کرکٹ کو بہترین گیندباز عطا کیے ہیں۔کرکٹ ٹیسٹ ہو یا ایک روزہ، جب بھی دنیا کے بہترین گیندبازوں کا ذکر ہوتا ہے تو پاکستان کا کوئی نہ کوئی سپوت فہرست میں ضرور جگہ پاتا ہے لیکن جب ذکر ہو بلے بازی کا تو عظمت کے عالمی پیمانوں پراکا دکا پاکستانی بلے باز ہی پورے اترتے ہیں۔ اسی سے اندازہ لگا لیں کہ ایک روزہ کرکٹ کی دہائیوں پر مشتمل تاریخ میں صرف 8 پاکستانی کپتان …

کرک نامہوقار کی ”واپسی“، پاکستان کو راس نہیں آئی؟

دنیا آگے کا سفر کررہی ہے، حالانکہ بنگلہ دیش بھی اب دنیا کی بڑی ٹیموں کے حلق کا کانٹا بنتا جارہا ہے اور عالمی کپ میں انگلستان کے خلاف کامیابی حاصل کرکے کوارٹر فائنل بھی کھیل چکا ہے لیکن پاکستان شاید دنیا کا واحد ملک ہوگا جس کی کرکٹ سالوں سے الٹے قدموں جارہی ہے۔ بالخصوص ایک روزہ کرکٹ میں تو پاکستان گزشتہ کئی سالوں سے مسلسل زوال پذیر ہے۔ وجہ؟ ناقص منصوبہ بندی، جدید دور کے تقاضوں سے ہم آہنگ نہ ہونا اور جارحانہ کرکٹ سے دامن بچانا ہے۔ اس میں فرد، یا افراد، کا کتنا کردار ہے، اس بارے میں فی الحال کچھ …

نورین تبسم"محسن کشوں کے اس ملک میں"

  اتوار 5 اپريل 2015
گیٹ پر تالا تھا، میں پریشان ہو گیا، منگل کا دن تھا، سرکاری چھٹی بھی نہیں تھی، گیٹ کے ساتھ میوزیم کا بورڈ بھی تھا لیکن گیٹ بند تھا، گیٹ کے بعد لان تھا، لان کے ساتھ برگد کے بوڑھے درخت تھے اور ان درختوں اور اس لان کے ساتھ وہ پرشکوہ عمارت تھی جسے قائداعظم محمد علی جناح نے 1944ء میں اپنی رہائش کے لیے منتخب کیا، یہ اس وقت کراچی کی شاندار عمارتوں میں شمار ہوتی تھی، یہ عمارت1865ء میں تعمیر ہوئی۔
موسس سوماکی نے ڈیزائن کیا، یہ بعد ازاں فلیگ …

اقبال جہانگیروادی تیراہ، خیبر ایجنسی میں فضائی کارروائی ، 20 دہشت گرد ہلاک

وادی تیراہ، خیبر ایجنسی میں فضائی کارروائی ، 20 دہشت گرد ہلاک خیبر ایجنسی کے علاقے وادی تیراہ میں سیکیورٹی فورسز کی فضائی کارروائی میں 20 دہشت گرد ہلاک کر دیئے گئے۔آئی ایس پی آر کے مطابق ہلاک دہشتگردوں میں3 … پڑھنا جاری رکھیں→

Sarwat AJمامتا

مامتا ایک شخص، اپنے مرتبے کی عکاسی کرتے نفیس اور عمدہ لباس میں ملبوس، چہرے پر قابلیت کی لکیریں سجائے، اپنے ملازم کے ہمراہ کمرے میں داخل ہوا۔ معلوم ہوتا ہےکہ افسر صاحب کا مزاج برہم ہے اور ملازم خجل ہے۔ ہوا یوں کہ صاحب کی کوئی اہم فائل تھی جو ملازم کہیں رکھ کےبھول […]

افتخار اجمل بھوپالچھوٹی چھوٹی باتیں ۔ تعلیم اور پڑھائی

تعلیم بہت سی اسناد (ڈگریاں) یا سرٹیفیکیٹس حاصل کر لینے کا نام نہیں ہے گو انہیں پڑھائی کے ثبوت کے طور پر پیش کیا جا سکتا ہے تعلیم نام ہے عملی زندگی میں رکھ رکھاؤ ۔ رویّہ ۔ طریقہءِ کار ۔ طرزِ گفتگو اور برتاؤ کا یہاں کلک کر کے پڑھیئے ” Hindu Mahasabha leader [...]

April 22، 2015

Rizwan Aliجھوٹ اور سچ کی اہمیت


جھوٹ اور سچ کی اہمیت
ہمارے معاشرے میں ہمیشہ اپنے مفاد کی خاطر جھوٹ بولنے سے دریغ نہیں کیا جاتا۔ حتیٰ کہ کسی ذاتی مقدمہ میں جب کسی ملزم سے دوران تفتیش اس کے بیان کا بغور مطالعہ کیا جاتا ہے، اور یہ دیکھا جاتا ہے کہ اگر ملزم کی بات میں، اس کا کوئی فائدہ ہے تو ضرور یہ جھوٹا بیان پیش کر رہا ہے۔ اگر اس کے برعکس مجرم کا کوئی ظاہری مفاد نظر نہیں آتا تو اس کی بات کو سچ تصور کیا جاتا ہے۔ کیونکہ اس کے بارے میں یہ کہا جاتا ہے کہ جب اس شخص کو جھوٹ بولنے سے کوئی فائدہ ہی نہیں تو پھر یہ جھوٹ کیوں بولے گا؟؟ یہ …

میاں افتخار رشیدعقل مند کون ؟

کسی ملک میں ایک قانون تھا کہ وہ ایک سال بعد اپنا بادشاہ بدل لیتے۔ اس دن جو بھی سب سے پہلے شہر میں داخل ہوتا تو اسے بادشاہ منتخب کر لیتے اور اس سے پہلے والے بادشاہ کو ایک بہت ہی خطرناک اور میلوں پھیلے جنگل کے بیچوں بیج چھوڑ آتے جہاں بے چارہ اگر درندوں سے کسی طرح اپنے آپ کو بچا لیتا تو بھوک پیاس سے مر جاتا نہ جانے کتنے ہی بادشاہ ایسے ہی سال کی بادشاہی کے بعد جنگل میں جا کر مر کھپ گئے-
اس دفعہ شہر میں داخل ہونے والا نوجوان کسی دور دراز کے علاقے کا لگ رہا تھا سب لوگوں نے آگے بڑھ کر اسے مبارک …

نعیم اکرام ملکانجینئر سعید قادر گارڈ، ایک با ہمت نوجوان

engineer

دفتر کے ساتھ ہی میٹرو سپر سٹور ہے۔ پڑوس میں ہونے کی وجہ سے گاہے گاہے چکر لگتا رہتا ہے۔ میری عادت خاصی دوستانہ ہے، جہاں جائوں دوست بن جاتے ہیں۔ سو میٹرو میں بھی  ایک گارڈ سے تھوڑی سلام دعا ہو گئی۔ ایک دِن اس نوجوان نے مجھے بتایا کہ وہ نوکری ڈھونڈ رہا ہے، اور پوچھا کہ کیا میں اسکی کوئی مدد کر سکتا ہوں؟ میرا اگلا منطقی سوال تھا کہ بھائی آپکی تعلیم کتنی ہے؟

"میں نے بی ایس سی الیکٹریکل انجینئرنگ کی ہوئی ہے، بہاولپور یونیورسٹی سے۔"

مجھے کم از کم اس جواب کی توقع نہیں تھی۔ 

اب تک چند دوستوں کو انجینئر …

کرک نامہبنگلہ دیش ناقابل شکست ٹھیرا، پاکستان زوال کی نئی انتہا پر

جس کا خدشہ ذہن کے نہاں خانوں میں بھی نہ تھا، بالآخر وہی ہوا اور پاکستان بنگلہ دیش کے خلاف ایک روزہ سیریز کے تمام مقابلوں میں ہی شکست سے دوچار ہوا۔ جس مقابلے میں پاکستان ابتدائی تقریباً 40 اوورز تک حاوی رہا، وہاں بعد میں یہ عالم دکھائی دیا کہ بنگلہ دیش صرف دو وکٹوں کے نقصان پر باآسانی 40 ویں اوور میں ہدف تک جا پہنچا اور یوں ایک اور مقابلہ انتہائی یکطرفہ انداز میں جیت کر نئی تاریخ رقم کردی۔ پاکستان نے آغاز تو بہت عمدہ لیا، کپتان اظہر علی کی سنچری اور حارث سہیل اور سمیع اسلم کی عمدہ اننگز نے ٹیم کو …

اقبال جہانگیرضربِ عضب کے بعد شدت پسند گئے کہاں؟

ضربِ عضب کے بعد شدت پسند گئے کہاں؟ پاکستان نے گذشتہ برس جون میں قبائلی علاقے شمالی وزیرستان میں فوجی کارروائی کا آغاز کیا، جس کے دوران فوج کا کہنا ہے کہ 80 سے 90 فیصد علاقہ شدت پسندوں سے … پڑھنا جاری رکھیں→

April 21، 2015

فراز بیگاباجی

آج پھر اباجی نے بستر میں پیشاب کر دیا تھا۔ عمر بھی تو بہت ہو گئی تھی ان کی۔ ستتر سال۔  شوگر الگ۔ بی پی الگ۔ اتنی چیزوں میں کبھی کبھی کوئی بھول بھی جاتا ہے کہ اباجی کا ‘پلاسٹک’ اپنی جگہ پر ہے کہ نہیں! بس یہی بھول گئی تھی خادمہ بھی۔بہو نے  خادمہ […]

الطاف گوہراحساسات کو زباں ہے میسر —!

لکھا تو لکھتا ہی چلا گیا، ہر احساس کو اک لفظ چاہیے اور جب الفاط کی بدلیاں احساسات کے آسماں …

Continue reading

نعیم اکرام ملکہزار روپے کا جعلی نوٹ، کیشیئر کی غلطی یا بے ایمانی؟

یہ رہا وہ "اصلی جعلی" نوٹ۔ واہ کیا اوکسی موران نکالی ہے آپکے بھائی نے۔

کہانی کا پس منظر

گاڑی کی تھوڑی مرمت درستگی کا کام ہونے والا تھا۔ گھر کے پاس سوزوکی کا شوروم ہے، جمعرات والے دن میں گاڑی وہاں لے گیا۔ کُل مِلا کر کوئی تین ہزار کے قریب بل بنا۔ میرے بٹوے میں پانچ ہزار کا ایک ہی نوٹ تھا، وہ کیشیئر خاتون کو دے دیا۔ دو ہزار ایک سو کچھ روپے بقایا آئے۔ نوٹوں پر موٹی سی نظر مار کے بٹوے میں ڈال لئے۔

شام کی شاپنگ

شام سات بجے کے قریب میٹرو لنک روڈ سے کچھ سامان خریدا۔ بِل ایک ہزار سے کچھ کم ہی تھا۔ صبح …

کمپیوٹنگآڈیو، وڈیو، تصاویر اور ڈاکیومنٹس سمیت تمام فائلز کے سائز کم کریں

وقت کے ساتھ ساتھ جہاں انٹرنیٹ کی رفتار میں اضافہ ہوا ہے وہیں فائلز کے سائز میں بھی ہوشربا اضافہ ہوا ہے۔ تصاویر سے لے کر ڈاکیومنٹس، گانوں سے فلموں اور وڈیوز کے سائز کہیں سے کہیں پہنچ چکے ہیں۔ انٹرنیٹ کی رفتار اچھی ہونے کے باوجود کوئی فائل ای میل یا کہیں اپ لوڈ کرنا مشکل ہوجاتا ہے، وجہ اس…مزید پڑھیں ←

صدائے مسلمبسنت ہندوانہ تہوار ہی ہے !! ۔۔۔۔ ایک تحقیقی مقالہ

بسنت ہندوانہ تہوار ہی ہے !!     ۔۔۔۔ ایک تحقیقی مقالہ             ۔ ۔۔   محمد عطاءاللہ صدیقیکسی تہوار کو ہندوانہ رسم ثابت کرنے کیلئے اگرتاریخی حقائق اگر کچھ اہمیت رکھتے ہیں تو یہ بات تسلیم بغیر چارہ نہیں کہ بسنت ہندوانہ تہوار ہے وہ لوگ جو ان تاریخی حقائق سے چشم پوشی کرتے ہیں اور بسنت کو محض ایک موسمی اور مسلمانوں کا ثقافتی تہوار کہتے ہیں، ان کی رائے مغالطہ امیز اور غیر حقیقت پسندانہ ہے۔

علی حسانایک بلاگ کتے بلوں کے لیے



اگر آپ نام پڑھ کر یہ سوچ رہے ہیں شاید یہ دو ٹانگوں والے کتے بلوں کے لیے لکھا گیاہے تو آپ کی سوچ غلط ہے یہ بلاگ جانوروں کے لیے ہی لکھا گیا ہے۔

 نہیں یاد کب جانوروں سے دلچسپی ہوئی لیکن امید واثق ہے جب انسانوں نے ہمیں گھاس ڈالنا چھوڑ دیا تو ہم نے خود گھاس خوروں سے دوستی کر لی۔ جب چھوٹا تو والد صاحب ایک کتاب لے آئے تھے جس میں پرندوں کی رنگ برنگ تصاویر تھیں اور ان کے بارے معلومات تھی۔ لیکن وہ انگریزی میں تھی اور انگریزی تو اب تک کسی نک چڑھی لڑکی کی طرح ہمیں سہلاتی رہتی ہے ہے تب کیا لفٹانا تھا۔ لیکن …

نورین تبسم"پہلی ملاقات۔۔۔پہلی نظر "

  تصویر۔۔۔فروری 9۔۔۔2014۔کراچی
 ( تصویر پر میرا احساس)
"لمحۂ موجود"
وہ ایک " لمحۂ موجود
جو کلک نے امر کر دیا۔۔۔۔
زمانوں کے لیے
لفظ رقص کرتے ہیں تمہارے نام کے اطراف
تمہارا لمس تمہارے قلم کی تخلیقی قوت کی گواہی دیتا ہے۔
اور تم سارے قرض اتارتے ہو صرف ایک "شکریہ"کہہ کر ۔
کیا یہ محض اتفاق ہے۔۔۔۔۔۔ اگر ہے تو
اتنا حسین اتنا مکمل اتفاق بھی
چشم فلک نے کم کم ہی دیکھا ہوگا۔
تم تو جانتے ہو یہ سب
اور مانتے بھی ہو
سنو ایک آخری بات بھی سن لو
تم یہی کہتے ہو اس کاغذی لمس میں
ذرا دیر کو ٹھہرا ہوں اس دنیائے فانی میں

نورین تبسم" نیپال نگری"

نیپال نگری۔۔۔مستنصر حسین تارڑ
گندھارا کے مہاتمابدھ کے نام۔۔۔۔
سفر مارچ1998
اشاعت 1999۔
 ...36
  "یہ آپ کو پیر نہیں مانتا۔۔۔۔ "ممتاز مفتی نے فاتحانہ انداز میں پروفیسر صاحب کو کہا۔" اسے آپ سے عقیدت نہیں ہے"
پروفیسر صاحب نے گولڈلیف کاسُوٹا لگایا اور کہا"یہ تو بہت احسن بات ہےکہ تارڑ صاحب مجھ سے عقیدت نہیں رکھتے کیونکہ۔۔جہاں سے عقیدت کا آغاز ہوتا ہے،وہیں سے جہالت شروع ہوجاتی ہے"۔
عقیدت اور ایکٹنگ میں بہت زیادہ فرق نہیں ہوتا۔دونوں کو طاری کرنا پڑتا ہے اور جہاں سے عقیدت کا آغاز ہوتا ہے وہیں
 سے جہالت …

امتیاز خان’راہیں جدا جدا،موقف یکساں‘

گیلانی ، میرواعظ اور ملک 7سال بعد ایک ہی سٹیج پر وسطی کشمیر کے نارہ بل بڈگام میں سات سال بعد جموں و کشمیر کے سرکردہ آزادی پسند رہنما سید علی گیلانی، میرواعظ عمر فاروق اور محمد یاسین ملک ایک ہی سٹیج پر نظر آئے۔ اس سے قبل 2008میں شرائن بورڈ ایجی ٹیشن کے دوران […]

April 20، 2015

محمد اظہارالحقکوئی مہاتیر‘ کوئی لی

بریڈ کیلی فورنیا میں پیدا ہوا۔ یونیورسٹی آف کیلی فورنیا سے قانون کی ڈگری حاصل کی۔ وہیں وکالت کرتا رہا۔ امریکہ سے باہر کا بریڈ کا سارا تجربہ اور مشاہدہ یہ ہے کہ وہ چند سال کمبوڈیا میں انسانی حقوق کی تنظیم میں کام کرتا رہا۔ ایشیائی ملکوں کی بدقسمتی ہے کہ سفید چمڑی والے ’’ماہرین‘‘ ان کی چمڑی سے چمٹے رہتے ہیں۔ ڈھاکہ یونیورسٹی میں تعلیم حاصل کرنے کے دوران مطالعاتی دورے پر سلہٹ جانا ہوا تو ایک امریکی سے ملاقات ہوئی جو وہاں کھاد کی فیکٹریاں لگانے کے عمل میں بطور ’’ماہر‘‘ کام کر رہا تھا۔ یہ کھاد کی …

محمد اظہارالحقسنگ باری کا موسم

ٹرین چل رہی تھی۔ ڈبے میں بیٹھے ہوئے ایک معتبر شخص نے سامنے بیٹھے ہوئے مسافر کو بتایا ’’میں حفیظ ہوں‘‘۔ مسافر نے سُن کر کوئی خاص تاثر نہ دیا۔ معتبر شخص نے پھر بتایا ’’میں شاہ نامہ اسلام کا مصنف ہوں‘‘۔ اس پر بھی سامنے بیٹھے ہوئے شخص نے کوئی توجہ نہ دی۔ معتبر شخص نے ایک کوشش اور کی۔ ’’ارے بھئی! میں حفیظ ہوں۔ قومی ترانے کا خالق‘‘۔ مسافر کا چہرہ سپاٹ ہی رہا۔ اس نے ایک بے رنگ سی ’ہوں‘ کی اور کھڑکی سے باہر دیکھنے لگا۔ معتبر شخص نے زچ ہو کر کہا ’’بھئی! میں حفیظ ہوں۔ حفیظ جالندھری‘‘ اب مسافر کا چہرہ فرطِ …

محمد اظہارالحقخونِ جگر کے بغیر

’’پلائو ہسپتال ہی میں پکائوں گا۔ اور تمہارے کمرے ہی میں پکے گا‘‘۔ 
دادا خان نوری نے پرعزم لہجے میں اعلان کیا۔ 
یہ 1997ء یا 98ء کی بات ہے۔ میں بیمار ہوا۔ اتنا کہ ہسپتال میں داخل ہونا پڑا۔ دادا خان نوری اُن دنوں یونین آف جرنلسٹس ازبکستان کے سربراہ تھے۔ صحافی کے علاوہ بطور ناول نگار بھی ان کی حیثیت مسلمہ تھی۔ 1992ء میں وسط ایشیائی ریاستیں آزاد ہوئیں تو وہاں پہنچنے والے اولین پاکستانیوں میں‘ میں بھی شامل تھا۔ ادب و شعر کے وابستگان کے درمیان ایک عجیب طلسماتی اور مقناطیسی رابطہ ہوتا ہے جو بہرطور قائم …

محمد اظہارالحقدیمک


دیمک دروازوں کو کھا رہی ہے۔ لکڑی آٹا بن بن کر فرش پر گر رہی ہے۔ چوکاٹھ کسی معجزے ہی سے کھڑے ہیں۔ 
الماریوں کو دیمک لگ چکی ہے۔ کپڑوں کے اوپر ہر روز لکڑی کا سفوف پڑا ہوا ہوتا ہے۔ بیڈ کھائے جا رہے ہیں۔ کھڑکیوں کے کواڑ گرنے کو ہیں۔ 
دیمک گھروالوں کے ساتھ اسی چاردیواری میں رہ رہی ہے۔ دن بدن اس کا زور بڑھتا جا رہا ہے۔ گھروالوں نے یہیں رہنا ہے۔ جہاں جہاں لکڑی کا آٹا نظر پڑتا ہے‘ صاف کر دیتے ہیں۔ کھانا کھا لیتے ہیں۔ سوتے ہیں۔ اُٹھ کر اپنے کام دھندوں میں لگ جاتے ہیں۔ دیمک ہر شے کو چاٹے جا رہی ہے۔ 
خالد …

محمد اظہارالحقہم اور ہماری عزت

مانگے کا تھری پیس سوٹ پہن کر خوش لباسی کا رنگ ہر جگہ جمایا جا سکتا ہے مگر اُس کے سامنے نہیں‘ جس سے مانگا تھا۔ جس طرح انفرادی سطح پر دوستوں کے مسلسل زیرِ احسان رہنا‘ دوستی کے لیے مقراض بن جاتا ہے‘ اسی طرح جن ملکوں سے صرف اور صرف کرم فرمائیاں درآمد کی جائیں‘ ان سے برابر کے تعلقات قائم نہیں رہتے۔ ایک دعا کی تعلیم دی گئی ہے: یا رَبِّ لَا تَضْطَرَّنی اِلیٰ امتحانِ اَصْدِقَائی لِاَنَّ لَا اُرِیْدُ اَنْ اَفْقَدَ واحِدً مِنْہم۔ پروردگار! دوستوں کے امتحان کی نوبت نہ لائیو کہ میں ان میں سے کسی کو بھی …

اقبال جہانگیرجلال آباد خودکش دہماکہ،37 افراد ہلاک

جلال آباد خودکش دہماکہ،37 افراد ہلاک افغانستان کے مشرقی شہر جلال آباد میں ایک نجی بنک کے باہر خودکش دھماکہ کے نتیجے میں بچوں سمیت 37 افراد ہلاک جبکہ 115 زخمی ہوگئے۔ قریبی عمارتوں کو بھی نقصان پہنچا اور انکے … پڑھنا جاری رکھیں→

افتخار اجمل بھوپالسرکاری اداروں میں دھونس اور دھاندلی (Bluff & Corruption) کیسے شروع ہوئی

میں 3 وجوہات کی بنیاد پر آج اپنی 14 مارچ 2009ء کی تحریر دہرا رہا ہوں 1 ۔ یہ تحریر آج بھی اتنی ہی اہم ہے جتنی 6 یا زیادہ سال قبل تھی 2 ۔ پچھلے 6 سال میں بلاگستان پر بہت سے نئے چہرے طلوع ہوئے ہیں اور بہت سے پرانے نظر نہیں آتے [...]

April 17، 2015

اقبال جہانگیرفاروق زدران ،حقانی نیٹ ورک کمانڈر مارا گیا

فاروق زدران ،حقانی نیٹ ورک کمانڈر مارا گیا حقانی نیٹ ورک کے اہم کمانڈر ، پاکستان میں حقانی نیٹ ورک کا سربراہ فاروق زدران پاک فوج کے ساتھ جھڑپ میں ہلاک ہو گئے ہیں جبکہ اہم کمانڈر ز کو گرفتار … پڑھنا جاری رکھیں→

حکمِ اذاںمٹ جائے گی مخلوق تو انصاف کرو گے

افسانہ نگار: صفوان احمد ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ مٹ جائے گی مخلوق تو انصاف کرو گے منصف ہو تو پھر حشر اٹھا کیوں نہیں دیتے ”صاب …..!!! آج تو فی بوری دس روپیہ دے دو صاب…..آج گڈی کی دوائی لینی ہے“….. اس کے … پڑھنا جاری رکھیں→

کمپیوٹنگعارضی ای میل ایڈریس اور فون نمبر حاصل کریں

انٹرنیٹ استعمال کرتے ہوئے روزانہ ہی کہیں نہ کہیں سائن اپ کرنے کی ضرورت پڑتی ہے۔ اگر آپ اپنا اہم ای میل ایڈریس ہر جگہ دیتے رہیں تو میل باکس میں فالتو ای میلز کی بھرمار ہو جاتی ہیں۔ اکثر تو ایسی جگہوں پر اکاؤنٹ بنانا پڑتا ہے جہاں صرف عارضی طور پر اکاؤنٹ کی ضرورت ہوتی ہے۔ اپنے کام…مزید پڑھیں ←

محمد اسلم فہیمسلام تم پر افق کے اس پار جانے والو


میں نے کبھی اسے دیکھا نہیں،میں کبھی اس سے ملا نہیں، لیکن یقیناً وہ ایسا تھا کہ اس سے ملنے، اسے دیکھنے، اس سے باتیں کرنے اور اس کی باتیں سننے کو جی کرے۔ میرا اس سے پہلا تعارف تب ہوا جب مجھے سالگرہ کے موقع پراس کی طرف سے عربی میں لکھا دعاؤں بھرا ایک خوبصورت پیغام موصول ہوا۔


پھر وقتاً فوقتاً ان سے بات چیت ہوتی رہتی۔ سینے میں امّت کادردلئے یہ نوجوان "سارے جہاں کا درد ہمارے جگر میں ہے" کی عملی تصویر تھا،اس کا ہر انباکس میسج اس کی گواہی دیتا خوشی کا لمحہ ہو یا درد کی داستاں اس کی طرف سے اس کا پیغام …

افتخار اجمل بھوپالمیری ڈائری ۔ خواہشات

پچھلے دنوں ایک ڈائری ملی جو اُجڑنے سے محفوظ رہی تھی اپنی لائبریری میں مل گئی ۔ اس میں 26 جنوری 1961ء کو لکھا تھا کچھ ایسی خواہشات ہوتی ہیں جنہیں انسان اپنا پیدائشی حق سمجھتا ہے ۔ ان کی خاطر انسان پتھر کے پہاڑ کھودتا ہے دریاؤں کا سینہ چیرتا ہے اور تند لہروں [...]

April 16، 2015

نورین تبسم"کرنیں (5) "

رزقِ خیال ۔۔۔۔
خدا اور خودی باعثِ نجات ہیں۔۔۔دنیا کی پستیوں اور آخرت کی ذلتوں سے رہائی کے لیے۔
۔۔۔۔۔
سر جھکانے میں  نہ ختم ہونے والی لذت ِحیات ہے اور نادان فقط ماہ وسال کی زندگی کے طلب گار رہتے ہیں۔
۔۔۔۔
زمانے سے کوئی گلہ کبھی نہ  کرو۔۔۔زمانہ اپنی سمجھ کے مطابق عمل کرتا ہے۔ اور شکوہ بھی نہیں ورنہ رب کی ناشکری  ہو جائے گی۔
۔۔۔۔
زندگی اپنے سامنے جس پل جس رنگ میں اترے اسے کہہ دو۔ زندگی کی تلخی جذب ہو جائے تو ناسور بن جایا کرتی ہے۔
۔۔۔۔۔
کرامت۔۔ سب یقین کی کرامات ہیں۔ یقین اگر بُت پر بھی ہو تو …

پروفیسر محمد عقیلانٹرایکٹو فہم القرآن کورس سیشن ۲ کا خلاصہ

السلام علیکم ورحمۃ اللہ وبرکاتہ سورہ بقرہ کی آیات تین تا پانچ کا خلاصہ حاضر ہے ۔ الحمد اللہ آپ سب بھائیو اور بہنو نے تقریبا تمام ہی پہلووں سے ان آیات مبارکہ کوسمجھ کر بیان کیا اور خوب بیان کیا۔ نیز اس پر اٹھنے والے سوالات کو بھی ہرہر پہلو سے بیان کرنے کی […]

نورین تبسم"سویا ہوا محل"

 جن کے دھندلے دن ہوتے ہیں اُن ہی کی راتیں کالی ہوتی ہیں۔۔۔رات سونے اور رونے کے لیے نہیں ہوتی ۔۔۔رات غور کرنے اور یاد رکھنے کے لیے بھی ہوتی ہے۔
اِس کھل جاسِم سِم میں ہر چیز اپنی جگہ پر حنوط تھی۔۔۔ "سوئے ہوئے محل" کی طرح۔۔۔ وقت  دیوار پر 2014 کے کلینڈر کے آخری صفحے پر ٹھہرا ہوا تھا۔۔۔بستر پر تکیے کےنیچے سلیقے سے تہہ در تہہ ٹشو پیپر اور نیویا کریم کی چھوٹی سی نیلے رنگ کی ڈبی  لمس کی منتظر تھی۔۔۔ اور تکیے کے ساتھ ایک بےجان ریموٹ کنٹرول بھی تو تھا۔۔۔ سامنے  کی دیوار پر  لگی کالی اسکرین کے نیچے لال …

Footnotes