اردو سیارہ

July 24، 2014

ایم-ڈی نور"غور طلب بات"

 منجانب فکرستان
٭۔۔۔٭۔۔۔٭
اداکارہ کنگنااداکاری میں وہ اس حد تک چلی جاتی ہے کہ وہ خود کہتی ہے کہ جس کے بعد شاید ہی کوئی اُس 
 سے شادی کرے:یہ دُھوکا دینا نہیں اداکاری ہےلیکن یہ کہنا کہ میں یہ کریم استعمال کرتی ہوں اسلئیے میرا 
 رنگ گورا ہے:یہ جھوٹ ہے دھوکا ہےاسلئیےاُسکا ضمیر پیسوں کیلئے بھی جھوٹ بولنے پر آمادہ نہیں،اُسکا کہنا 
ہے میرے اس فیصلے سے دُنیا تبدیل نہیں ہوجائے گی، لیکن مجھے اطمینان ہے کہ کم از کم میں اس جھوٹ 
کا حصّہ نہیں بنی۔۔
 ایسے میں وہ مذہبی پروگرام اینکرز یا ایسی شخصیات یاد آجاتی  ہیں کہ …

Sarwat AJدلِ پریشاں

دل پریشاں ہوا جاتا ہے اور ساماں ہوا جاتا ہے داغؔ خاموش ، نہ لگ جائے نظر شعر دیوان ہوا جاتا ہے داغ ؔ دہلوی کی پریشانی کا سبب اگرچہ کچھ اور تھا پر وہ بھی، اکثر لوگوں کی طرح، دیگر وجوہ کی بِنا پر ،تمام عمر دل کے ہاتھوں ہی پریشان رہے۔ دلِ ناداں […]

فخر نویدگھر میں برکت عورت کے نصیب سے

سنا کرتے تھے کہ گھر میں برکت عورت کے نصیب سے ہوتی ہے. میرا دل دکھتا تھا کہ اللہ تعالی تو فرماتا ہے کہ اس نے سب کا نصیب اچھا بنایا ہے مگر پھر کیوں کہتے ہیں ایسا سب؟ عورت کا کیا قصور ہے اور اس کا کیا کمال ہے؟ آج اسکا جواب ملا .  [ مزید پڑھیں ]

کرک نامہایک اور نمائشی قدم ، پاکستان کے ڈومیسٹک کرکٹ ڈھانچے میں تبدیلی

پاکستان کرکٹ بورڈ نے اپنے نمائشی اقدامات کی فہرست میں ایک اور تازہ اضافہ کرتے ہوئے ڈومیسٹک کرکٹ کے ڈھانچے میں ایک مرتبہ پھر تبدیلی کا اعلان کردیا ہے، جس کے مطابق پریزیڈنٹس ٹرافی کا خاتمہ کردیا گیا ہے اور ریجنز اور ڈپارٹمنٹس کی ٹیمیں ایک ہی فرسٹ کلاس ٹورنامنٹ قائد اعظم ٹرافی کھیلیں گی۔ اکتوبر سے لے کر جنوری تک جاری رہنے والی قائد اعظم ٹرافی دو حصوں میں تقسیم ہوگی، جس میں مجموعی طور پر ڈپارٹمنٹس کی 12 اور ریجنز کی 14 ٹیمیں مدمقابل ہوں گی ۔ پہلا حصہ یعنی ڈویژن ون گولڈ لیگ کہلائے گا جس میں ریجنز اور …

July 23، 2014

کرک نامہپاک-لنکا دوسرا ٹیسٹ جے وردھنے کے پسندیدہ میدان پر منتقل

پاکستان اور سری لنکا کے درمیان ٹیسٹ سیریز کے ساتھ ہی عظیم بلے باز مہیلا جے وردھنے طویل طرز کی کرکٹ کو خیرباد کہہ دیں گے۔ اس لیے سری لنکا کرکٹ نے ان کے کیریئر کے آخری ٹیسٹ کو یادگار بنانے کے لیے ان کے آبائی میدان سنہالیز اسپورٹس کلب پر منتقل کردیا ہے۔ پاکستان اور سری لنکا کے درمیان ٹیسٹ سیریز 6 اگست سے گال میں شروع ہوگی اور سیریز کا دوسرا و آخری ٹیسٹ 14 اگست سے کولمبو کو پی سرا اوول میں طے شدہ تھا لیکن سری لنکا کرکٹ کی ایگزیکٹو کمیٹی نے اسے مہیلا جے وردھنے کے ہوم گراؤنڈ ایس ایس سی پر منتقل کردیا …

کرک نامہجنوبی افریقہ کی نظریں تاریخی کامیابی اور نمبر ایک پوزیشن پر

جنوبی افریقہ دنیائے کرکٹ کی ایک بہت بڑی قوت ہے۔ گزشتہ دو دہائیوں میں اس نے خود کو ہر طرز کی کرکٹ میں منوایا ہے لیکن 'لنکا ڈھانا' ایسا کام ہے، جو پروٹیز سے آج تک نہیں ہو سکا۔ گزشتہ 20 سالوں میں آسٹریلیا سے لے کر انگلستان اور پاکستان سے لے بھارت تک تقریباً سب ممالک کو انہی کے میدانوں پر سیریز میں شکست دینے والا جنوبی افریقہ سری لنکا کو اس عرصے میں چت نہیں کرسکا۔ اگست 1993ء میں پہلے دورۂ سری لنکا میں کامیابی حاصل کرنے کے بعد سے آج تک تین دوروں میں اسے کامیابی حاصل نہیں ہوئی بلکہ دو میں تو اسے شکست …

راشد ادریس راناإِنَّا لِلّٰہِ وَاِنَّآ اِلَیْہِ رَاجِعُوْنَ __ سرفراز الدین صدیقی ــــــ Sarfaraz uddin Siddiqui

إِنَّا لِلّٰہِ وَاِنَّآ اِلَیْہِ رَاجِعُوْنَ
 
 

محمد اظہارالحقآہ!بیچارہ رچرڈ


پہاڑوں میں گھرا ہوا یہ شہر نیوزی لینڈ کا سردترین مقام تھا۔درجہ حرارت صفر سے نیچے‘رگوں میں خون منجمد کرنے والی تیز ہوا‘بارش طویل ہوتے ہوتے جھڑی بن جاتی تھی۔ سورج کئی کئی دن روپوش رہتا تھا۔یہ تھی وہ جگہ جہاں رچرڈ رہتا تھا۔ملائشیا کے ایک مسلمان سے اس کی دوستی کا آغاز دفتر میں ہوا ۔دوستی گہری ہوتی گئی ۔گھر میں آنا جانا شروع ہو گیا۔افطار کی دعوت میں رچرڈ کو بھی بلایا گیا۔ایک خاص وقت پر افطار‘پھر نمازباجماعت پھر جس طرح ملائشیا کا دوست اپنے ضعیف والد کا خیال رکھتا تھا ‘ ان سب مشاہدات نے تجسس پیدا …

محمد اظہارالحقشتر مرغ اور کبوتر


محلے پر حملہ ہوا تو میں نے خود حفاظتی میں اپنے مکان کو قلعہ بنا کر رکھ دیا۔ چھتوں پر بندوقچی کھڑے کردیے۔ دیواروں پر تاریں بچھائیں اور ان میں بجلی کا کرنٹ چھوڑ دیا۔ بڑے دروازے پر‘ دائیں بائیں‘ دو مشین گنیں نصب کردیں‘ سابق کمانڈو بھرتی کیے لیکن افسوس! گھر پھر بھی نہ بچ سکا۔ خاندان کا ایک رکن حملہ آوروں کا ساتھی تھا۔ اس کا نظریہ یہ تھا کہ حملہ آور حق پر ہیں۔ حملہ آور گھر کے اُس فرد کی مدد سے ساری رکاوٹیں عبور کر کے گھر کے اندر داخل ہوئے اور اُس کے کمرے میں چھپ گئے۔ وہاں انہیں نہانے کے لیے گرم …

محمد اظہارالحقانتہا


بُکل ماری‘ پرانے جوتے پہنے‘ عصا پکڑا اور چل پڑا۔ 
سب سے پہلے افسر کے پاس گیا۔ صاحب ابھی پہنچے نہیں تھے۔ دس بج چکے تھے۔ ماتحت کچھ کام کر رہے تھے‘ کچھ آ جا رہے تھے۔ 
سائل انتظار گاہ میں بیٹھے تھے۔ وہ بھی انتظار کرنے لگ گیا۔ 
گیارہ بجے ہل چل ہوئی۔ خدام بھاگنے دوڑنے لگے۔ صاحب تشریف لے آئے تھے۔ عصا اٹھائے اندر چلا گیا۔ ہیئت کذائی دیکھ کر صاحب پہلے ٹھٹکے‘ پھر جلال میں آ گئے۔ گھنٹی پر ہاتھ رکھا ہی تھا کہ اُس نے کہا ’’صاحب! میری بات سن لیجیے‘‘۔ نہ جانے ان الفاظ میں کیا تھا کہ صاحب دھیمے پڑ گئے۔ ’’بتائو! …

محمد اظہارالحقہم‘ ہمارا بخت اور ہمارے رہنما


’’میں صرف نیلے یا سرمئی رنگ کے سوٹ پہنتا ہوں۔ وقت ان معاملات پر ضائع نہیں کرتا کہ کھانا کیا ہے اور پہننا کیا ہے۔ بہت سے دوسرے فیصلے کرنے ہوتے ہیں۔ فیصلہ کرنے کی قوت کو بچا کر رکھنا پڑتا ہے۔ معمولات کو اس طرح فِکس کرنا ہوتا ہے کہ توجہ چھوٹی چھوٹی باتوں کی طرف نہ بٹ جائے‘‘۔ 
یہ گفتگو بارک اوباما کی ہے۔ وہ سربراہِ ریاست ہے اور سربراہِ حکومت بھی۔ وہ امریکی مسلح افواج کا کمانڈر اِن چیف بھی ہے۔ جب آپ بہت سے معاملات کے فیصلے کرتے ہیں‘ خواہ وہ معاملات چھوٹے ہیں یا بڑے‘ آپ کی قوتِ فیصلہ کم ہو جاتی ہے۔ …

جعفرریٹائرڈ بزرگ کی ڈائری

رات جوڑوں میں درد کچھ سِوا تھا۔مرے پر سو دُرّے ،  نیند  کی دو گولیاں کھانے کے بعد آنکھیں مزید کھل گئیں۔ خدا خدا کرکے نیند آنے ہی لگی تھی کہ بیگم صاحبہ کے خرّاٹوں والی مشین چالو ہوگئی۔  خد اجھوٹ نہ بلوائے ایسے خوفناک خرّاٹے مارتی ہیں کہ کسی ہارر فلم کے بیک گراونڈ میوزک کا گمان ہوتا ہے ۔ جانے کس سائل کی بددعا لگی تھی جو ہمیں ایسی بیگم ملیں۔  ریٹائرمنٹ کے بعد تو اب کسی پر حکم چلانے کی حسرت ہی رہ گئی ہے۔پہلے گھر میں گزارے ہوئے وقت کی کسر ہم دفتر میں ماتحتوں اور سائلین پر نکال لیا کرتے تھے۔ اب تو ہمیں …

محمود الحقمحبت بے نام ہے



آج صرف دل کی سنتا ہوں۔کل کی بات ہے یہ صرف میری سنتا تھا۔یہ مجھے سمجھاتا کہ میں تو عکس آئینہ ہوں ۔ میں نے سمجھا کہ یہ پسِ آئنیہ ہے۔میں تصویر پہ تصویر بناتا  چلا گیا اور یہ انہیں مٹاتا چلا گیا۔
غصہ تو بہت کیا ۔میرے رنگوں کو بے رنگ کر دیتا۔جیسے سکول میں استاد تختہ سیاہ  کے ہر نشان کو ڈسٹر سے  صاف کر دیتا۔
استاد تو میں تھا اس کا ۔حرف مٹانے کا اختیار تو میرا تھا پھر یہ اپنی من مانی کیوں کرتا رہا میرے ساتھ ۔ ہر جذبہ ، ہر احسا س کو کرایہ دار کی طرح مکان سے بے دخل کر دیتا۔
مطالبہ بھی عجب تھا  چاہت …

نورمحمدکتاب اللہ کے بعد سب سے زیادہ پڑھی جانے والی کتاب "فضائل اعمال "کے مختلف زبانوں میں تر جمے۔​

 "فضائل اعمال "



فضا ئل قران:
عربی ۔مترجم: مولانا سید محمد واضح رشید ندوی صاحب ۔ برمی ۔ مترجم : مولانا محمد موسیٰ فاضل مظاہر علوم
انگریزی۔ مترجم : سید عز الدین ۔ بنگالی۔ مترجم قاضی خلیل الرحمن ۔ فارسی ۔ ،مترجم استاذ محمد اشرف ۔ گجراتی ۔مترجم : سید محمود قاسم

فضائل نماز ۔درج زیل زبانوں میں تر جمہ ہوا۔
(۱) عربی (۲) برمی (۳) انگریزی(۴) مدراسی (۵) بنگالی (۶)تلگو(۷) ملیالم (۸) تامل (۹) فرانسیسی (۱۰)گجراتی
(۱۱) فارسی (۱۲) سھالی (۱۳) پشتو (۱۴) ملائشی

فضائل ذکر ۔درج زیل زبانوں میں تر جمہ ہوا۔
(۱) برمی (۲) …

نورمحمداصل روزہ ۔ ۔ ۔


  ہم لوگ  آفس میں ، ایر کنڈیشن کے مزے لے کر بڑے اطمینا ن سے دن گزار لیتے  ہیں ۔ ۔ ۔ پھر بھی اپنے روزہ دار ہونے پر فخر محسوس کرتے ہیں  ۔ ۔  ( بس دعا ہے کہ اللہ رب العزت  ۔ ۔ اس ٹوٹی پھوٹی عبادت  کو اپنے فضل و کرم سے قبول کرے ۔ ۔ آمین )


مگر ۔ ۔ ۔  ۔


اصل روزہ تو ان  مزدور بھائیوں کا ہے جو  ( خصوصا" )  بوجھ اٹھانے کا کام کرتے  ہیں اور جن کو سخت گرمی میں کام کرنا پڑتا ہے۔ ان حضرات سے کوئی جا کر پوچھے کہ اتنی محنت و مشقت کے بعد اور اتنی سخت گرمی میں کام کرنے کے بعد  دو گھونٹ پانی   کی قیمت کیا ہے  ۔ ۔ ۔  …

خرم شہزاد خرمعزت و دولت

بہت دفعہ دیکھا گیا ہے کہ دولت مند انسان کی عام انسان سے زیادہ عزت کی جاتی ہے۔ بہت ددفعہ دیکھا گیا ہے بیماری کی صورت میں امیر لوگوں کی عیادت کے لیے زیادہ لوگ جاتے ہیں۔ ان کی خوشی غمی میں بھی بہت زیادہ لوگ شرک ہوتے ہیں۔ شاہد یہی وجہ ہے کہ وہ [...]

نورمحمدیہ لوگ سو رہے ہیں ۔ ۔ ۔ ۔ !!!! . . . اب تو جاگو ۔ ۔ ۔ ۔

ش ۔ ش ۔ش  ۔ ۔ ۔  


آہستہ بولو ۔ ۔ ۔ ۔




یہ لوگ سو رہے ہیں ۔ ۔ ۔ ۔ !!!!

 


مہربانی کرکے ۔ ۔ ۔اب تو جاگو  !!




افتخار اجمل بھوپالچھوٹی چھوٹی باتیں ۔ عمل اور نصیحت

دوسروں کی زندگی کو مشکل بنا کر اُنہیں صبر کی تلقین کرنا ایسا ہی ہے جیسے کوئی چیز آگ میں ڈال کر اُسے کہا جائے کہ جلنا نہیں مفتی اسمٰعیل منک یہاں کلک کر کے پڑھیئے ” Israel’s Impunity “

July 22، 2014

محمد بلالیک روزہ کشمیر گردی – اختتام

کشمیر کا ایک خوبصورت منظر
پہاڑی علاقے کے خوبصورت گھر اور سرسبز کھیت ہمارے سامنے تھے۔ وہ سماہنی سیکٹر کا سرحدی علاقہ تھا اور سامنے والی وادی مقبوضہ کشمیر کی تھی۔ ناران کی سرد رات ہو، لالہ زار میں پڑتی برف ہو یا پھر دیو سائی کا بلند میدان ہو، جہاں سبزی آسانی سے نہیں گلتی، وہاں پر بھی جو بکرے کا گوشت طلب کرتے ہیں، آج انہیں ”تاتاریوں“ کو چوکی شہر پہنچ کر دال زہر مار کرنی پڑی۔ اس کے بعد ڈنہ بڑوھ میں چشمے کنارے آرام کر کے جب پہاڑ شاہ پہنچے تو وہاں نخرے کرتی صنفِ نازک←  مزید پڑھیں

کرک نامہافغانستان کے ہاتھوں زمبابوے بھی ہار گیا، سیریز زندہ

افغانستان نے ایک سنسنی خیز مقابلے کے بعد زمبابوے کے خلاف تیسرا ون ڈے جیت کر سیریز میں اپنے امکانات کو زندہ کردیا ہے۔ بلاوایو میں کھیلے گئے تیسرے ون ڈے میں افغانستان نے جاوید احمدی کی نصف سنچری اور آخری لمحات میں دولت زدران کے شاندار چھکوں نے اسے محض دو وکٹوں سے مقابلہ جتوایا۔ افغان مہاجر کیمپوں اور کابل و جلال آباد کی گلیوں سے نکلنے کے بعد اب افغانستان کرکٹ دنیا کے سامنے اپنی حیثیت منوا رہی ہے۔ رواں سال ایشیا کپ میں بنگلہ دیش کے خلاف تاریخی جیت حاصل کرنے کے بعد اب کسی بھی مکمل رکن کے خلاف اپنی …

کرک نامہچندیمال ٹیسٹ دستے سے بھی باہر، 'اے' ٹیم میں تنزلی

کچھ عرصہ قبل دنیش چندیمال کو سری لنکا کرکٹ کا مستقبل سمجھا جا رہا تھا، یہاں تک کہ مستقبل کے کپتان کی حیثیت سے تیار کرنے کے لیے انہیں ٹی ٹوئنٹی میں قیادت تک سونپ دی گئی لیکن بدترین بیٹنگ فارم نے انہیں اب ٹیسٹ کرکٹ سے بھی باہر کردیا ہے۔ جنوبی افریقہ کے خلاف دوسرے ٹیسٹ کے لیے سری لنکا نے چندیمال کو باہر کرکے ان کی جگہ نوجوان وکٹ یپر نیروشان ڈکویلا کو طلب کرلیا ہے، جو اس وقت سری لنکا 'اے' کے ساتھ انگلستان کے دورے پر ہیں جبکہ چندیمال کو انگلستان بھیجا جا رہا ہے۔ چندیمال رواں سال ورلڈ ٹی ٹوئنٹی کے …

مرزا نادر بیگکراچی میں پارکنگ مافیا کا راج


ویسے تو کراچی میں پارکنگ مافیا پورے سال ہی شہریوں سے بھتہ وصول کرتا آ رہا ہے مگر رمضان المبارک کے مقدس ماہ میں تو انکے بھتے کی رقم آسمان سے باتیں کرتی نظر آتی ہے۔ رمضان میں لوگوں کی بڑی تعداد عید کی خریداری کیلئے بازاروں کا رخ کرتی ہے، یہی وجہ ہے کہ یہ مافیا اس مقدس ماہ کا بھرپور فائدہ اٹھا کر عام لوگوں کو لوٹتا آرہا ہے۔

اسے انتظامیہ کی غفلت کہیں یا پارکنگ مافیا کی بدمعاشی کہ شہر کے تقریباً تمام بڑے چھوٹے بازاروں، شاپنگ مالز اور اہم سڑکوں پر پارکنگ کے نام پر زبردستی روڈ بلاک کرکے ٹریفک معطل کیا …

Sarwat AJزندہ دلی اور طمانینت

زندگی ، زندہ دلی کا نام ہے مردہ دل کیا خاک جیا کرتے ہیں یعنی زندگی ، وہی ہے جو زندہ دلی سے عبارت ہو، دل نہ رہے تو انسان کے لئے دنیا کی ہر نعمت کا مزہ ختم ہوجاتا ہے۔ وہ جو ناصر نے کہا تھا کہ اپنا دل اداس ہو تو لگتا ہے […]

نویدظفرکیانیمیاں میں ایسے سخن ہائے حق کی تاب نہیں

میاں میں ایسے سخن ہائے حق کی تاب نہیں وہ اپنی زوجہ سے کہہ دے کہ مجھ کو داب نہیں چلو کہ نعرہء یاہو بلند کرتے ہیں یوں روز روز کے کڑھنے میں کچھ ثواب نہیں بجا کہ کھانا بنانے سے تم نہیں واقف تمہارا اُلو بنانے میں تو جواب نہیں کسی ولیمے میں شاہین […]

میرا پاکستاناقلیتوں کی شراب نوشی کو روکنے کا بل

جے یو آئی کی رکن اسمبلی آسیہ ناصر اور کئی اقلیتی ارکان نے اقلیتوں کی شراب نوشی روکنے کا بل قومی اسمبلی میں جمع کرایا تھا جسے قائمہ کمیٹی کے حوالے کر دیا گیا۔ کل قائمہ کمیٹی کے مسلم ارکان اسمبلی نے اس بل کی مخالفت کی اور وجہ یہ بتائی کہ اس طرح پاکستان […]

July 21، 2014

منیر عباسیسرخاب کی صلاحیت

زندگی اتار چڑھاو سے عبارت ہے۔ انھی مختلف موسموں کا نام زندگی ہے جو تغیر کے نام پر اس کا اصل حسن ہیں۔ ہم میں سے ہر ایک اپنی زندگی کے مختلف لمحوں کا انتخاب کرتا ہے۔ کوئی سب سے اچھے لمحوں کے حسن سے...

طفل مکتب کی تحریر کا یہ اقتباس آپ مکمل شکل میں وہیں ملاحظہ فرما سکتے ہیں۔

خرم شہزاد خرمماپا

میں جب ابو ظہبی سے واپس آ رہا تھا تو میرے سب جاننے والے کہہ رہے تھے اب کیا کرو گے گزارا کیسے ہو گا وغیرہ وغیرہ ان دنوں بیگم امید سے تھی۔ ایک انڈین مسلمان بزرگ دوست نے مجھے خوشی سے گلے لگا کر کہا بیٹا رزق تو رازق نے دینا ہے لیکن یہ [...]

حلیمہ عثمانہائے فلسطین…

’’آخر کیا وجہ ہے کہ تم اللہ کی راہ میں اُن بے بس مردوں، عورتوں اور بچوں کی خاطر نہ لڑو جو کمزور پاکر دبا لیے گئے ہیں اور فریاد کر رہے ہیں کہ خدایا ہم کو اِس بستی سے نکال جس کے باشندے ظالم ہیں اور اپنی طرف سے ہمارا کوئی حامی و مدد…

خرم شہزاد خرمعشق

“مولانا جامی ﺭﺣﻤﺘﮧ ﺍﻟﻠﮧ ﻋﻠﯿﮧ کا فرمان ہے کہ عشق سے منہ نہ موڑ , چا وه مجازى ہو کیونکہ وه بھی تمھیں حقیقت كى طرف لے جائے گا عشق وه وجدان ہے جس کا تعلق انسان کے باطنى احساسات کےساتھ ہے- ظاهرى حواس خمسه کو معطل کیا جاسکتاہے مگر باطنى حواس(عشق) کو روکا نہیں [...]

محمد زہیر چوھانمائیکروسافٹ نے نوکیا ایکس فونز کو ختم کردیا، 18000 ملازمین فارغ

لیجئے جناب مائیکروسافٹ کے نئے چیف ایگزیکٹیو آفیسر ستیا نڈیلا نے تو آتے ساتھ ہی صارفین کی امیدوں اور کمپنی ملازمین کا ستیاناس کرڈالا۔ ستیا نڈیلا اور سٹیفن ایلوپ (نوکیا، مائیکروسافٹ ڈیوائسز) کی جانب سے حال ہی میں کمپنی ملازمین کو دو ای میلز ارسال کی گئی ہیں۔ ستیا نے اپنے پیغام میں 18000 ملازمین... Read more »

The post مائیکروسافٹ نے نوکیا ایکس فونز کو ختم کردیا، 18000 ملازمین فارغ appeared first on ITnama - Pakistan's First Urdu Technology Blog.

July 20، 2014

میرا پاکستانغریب ملک کے امیر حکمران

پاکستان میں لوگ گرمی سے نڈھال ہو رہے ہیں، لوڈشیڈنگ نے روزہ داروں کے ایمان کا امتحان اور کڑا کر دیا ہے اور ہمارے حکمران بیوی بچوں سمیت سعودی عرب کے دس روزہ سرکاری دورے پر روانہ ہو رہے ہیں۔ عوام گرمیوں میں لوڈشیڈنگ کی دہائی دے رہے ہیں اور ہمارا وزیراعظم سعودی عرب چلا […]

Sarwat AJدلِ ناداں

دلِ ناداں دلِ ناداں، تجھے ہوا کیا ہے ؟ آخر اِس درد کی دوا کیا ہے ؟ غالب نے اپنے دل کو بڑے چاؤ سے نادان کہہ کر پکارا ہے۔ اِس نادان کہنے میں یہ اشارہ چھُپا ہے کہ دردِ دل کی دوا ہونا ایسا آسان نہیں اور دل کے علاج کی خواہش کرنا ، […]

افتخار اجمل بھوپالمرد مسلمان ؟

يوں تو ہم ميں سے ہر شخص دعوٰی مسلمان ہونے کا کرتا ہے ليکن آٹے ميں نمک کے برابر يا اس سے بھی کم ہوں گے جو مسلمان بننے کی شرائط سے واقف ہوں ۔ علامہ محمد اقبال نے مسلمان کی مختصر تعريف لکھی ہے ہرلحظہ ہے مومن کی نئی شان، نئی آن گفتار ميں، [...]

نویدظفرکیانیبچپن/ پچپن کی محبت

بچپن کی محبت کو دِل سے نہ جُدا کرنا پچپن کے افیئر میں تبدیل ذرا کرنا نہ دانت بچے منہ میں نہ آنت بدن میں ہے میٹھی سی لگن پھر بھی اس منچلے من میں ہے اِس جذبِ وفا کو مت ٹھینگے پہ دھرا کرنا مانا کہ اب آنکھوں سے کم کم نظر آتا ہے […]

July 19، 2014

محمد اظہارالحقہم کہاں کھڑے ہیں؟

’’ اسلام وہاں ہے اور مسلمان یہاں ہیں‘‘۔
یہ جملہ ہم بارہا سنتے ہیں۔ ہمارا کوئی عزیز برطانیہ ، کینیڈا، نیوزی لینڈ یا سنگاپور رہ کر آتا ہے‘ آکر حیرتوں کے جہان کھولتا ہے۔ سچائی، دیانت داری اور ایفائے عہد کے واقعات سناتا ہے، پھر اپنے ملک کے حالات کا تجزیہ کرتا ہے‘ کانوں کو ہاتھ لگاتا ہے اور آخر میں ایک ہی بات کہتا ہے ’’ اسلام وہاں ہے اور مسلمان یہاں ہیں‘‘۔
پہلے تو یہ فقط ایک تاثرتھا۔ چاچوں، ماموں ، بھائیوں ، بھتیجوں، ماسیوں ، پھپھیوں کے اظہار حیرت کا اسلوب تھا۔ لیکن اب یہ تاثر سائنسی حقیقت کا روپ …

ایم-ڈی نور"شادی کی رات: قرآنی آیات "

  منجانب فکرستان: مثلثی رشتہ 
اندرا گاندھی، راجیو گاندھی اور سونیا گاندھی
 شادی  کے نتیجہ  میں  ایسا  مثلثی  رشتہ وجود  میں آجاتا  ہے  کہ جس نے برمودہ  ٹرائنگل   کی  طرح   کئی 
خاندانوں  کو اپنے بھنور میں غرق کردیا ہے۔۔
 تصویر میں ماں (اندرا گاندھی) نے جس انداز سے بیٹے کو پکڑا  ہُوا  ہے،ایسا لگتا  ہے جیسے کہہ رہی ہو ں، 
میں تمہیں سونیا کی طرف جانے نہیں دونگی۔۔ماں بڑے شوق سے بہو لاتی ہے، لیکن شادی کے دوسرے 
دن ہی اُسے احساس ہونے لگتا ہے کہ شاید کچّھ غلط ہوگیا ہے۔۔تاہم بیٹے کی شادی بھی تو کرنی تھی ۔۔
مشہور لکھاری خشونت سنگھ نہرو خاندان کے بہت قریب …

شاکر عزیزسیاہ سیات

اس ملک میں ایک دیوار ہو جانا، یا درخت ہو جانا، یا راستے کا کوئی پتھر ہو جانا چاہے اسے ٹھُڈے پڑتے رہیں، یہ سب آسان کام ہیں۔ لیکن انسان ہونا مشکل اور ہولناک ترین کاموں میں سے ایک ہے۔ دیوار، درخت اور پتھر نہ سنتے ہیں نا بولتے ہیں۔ اپنی دنیا (اگر ایسی کوئی دنیا ہے تو) میں مست رہتے ہیں۔ کوئی توڑ دے، اکھاڑ دے یا ٹھُڈے مارتا رہے کوئی فرق نہیں پڑتا۔ بدقسمتی سے انسان سنتا بھی ہے، بولتا بھی ہے اور دیکھتا بھی ہے۔ اور اس سننے بولنے دیکھنے کی وجہ سے اس ملک میں انسان ہونا انتہائی مشکل اور بدترین باتوں میں سے …

ذوالقرنین سرورشیف

شام ڈھلنے کے قریب تھی۔ سامنے ٹی وی پر ایک ہی چینل بہت دیر سے چل رہا تھا۔ ہم کبھی ٹی وی پر نگاہ ڈالتے تو کبھی چند گز دور پڑے ریموٹ  پر۔ دل چاہ رہا تھا کہ اٹھ کر ریموٹ اٹھا   لیں۔  لیکن اس سے ہماری  سست طبع پر حرف آنے کا شدید امکان تھا۔اگرچہ گھر میں اور کوئی نہ تھا جو کہہ سکتا کہ اس نے خود اٹھ کر ریموٹ اٹھا یا ہے لیکن  کراماً کاتبین کو صرف اس کام کے لئے جگانا مناسب خیال نہ کیا۔ اورخود کوبھی  کیا جواب دیتے۔ کہ محض ایک ریموٹ اٹھانے کی خاطر ہی بستر سے جدائی اختیار کر لی۔ میاں کس بات پر خود کو امیرِ …

فخر نویدبڑے اسٹورز پر کھانے پینے کی 23 حرام اشیا کی فہرست

وزاتِ سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کی جانب سے حرام قرار دی گئ کھانے پینے کی 23 حرام اشیا کی فہرست

July 18، 2014

ذوالقرنین سرورایک بہت پرانا دور تھا​


ایک بہت پرانا دور تھا

ایک بہت پرانا دور تھا۔ اتنا پرانا کہ پرانے لوگ بھی اس کو پرانا کہتے تھے۔ ایسے ہی ایک دور میں دو دوست کہیں جا رہے تھے۔ اس دور کی خاص بات یہ بھی تھی کہ کہیں بھی جایا جا سکتا تھا۔ کوئی پوچھتا نہ تھا کہ کہیں سے کیا مراد ہے؟ آج کے دور کی طرح سوال جواب نہیں ہوتے تھے کہ کہیں بھی جاؤ تو بتا کر جاؤ ، کہاں جا رہے ہو۔ بس کہیں کا مقصد کہیں ہوتا تھا۔ ایسے جانے والے دوست کبھی تو چند دن میں لوٹ آیا کرتے تھے۔ اور کبھی مدتوں نہیں لوٹا کرتے تھے۔ بس راہ جانے والوں کو لوٹا کرتے تھے۔ اور اس …

محمد رمضان رفیقمظلوم کے ساتھ کھڑا کوپن ہیگن ۔۔۔۔۔۔احتجاج ۔۔۔۔

بے گناہوں کا لہو  دریا ہو چلا اور ہماری آنکھ میں ایک آنسو تک نہیں، دنیا کے طاقتور ایک طرف اور مظلوم ایک طرف۔۔۔اور طاقتوروں کی طاقت خاموش لوگ اپنے اپنے مقفل کواڑوں کے پیچھے سرگوشیوں میں ہم کلام کہ ایسا ظلم ہونا نہیں چاہیے۔۔۔مگر اپنی دہلیز سے باہر یہ سب گونگے ہیں، مظلوم کی حمایت میں کوئی بولتا تک نہیں۔ظالم کا ہاتھ پکڑ لینے والے تو کب کے خاک ہو گئے۔۔۔۔ہم ڈری سہمی قوموں کے غلامی آلود ذہنوں والے کسی جبر کے خلاف بھلا کب بولے ہیں۔۔۔بس دل میں برا سمجھ لینے سے ہمارا فرض ادا ہوجاتا ہے تو برلب سڑک صدائے …

نویدظفرکیانیکاہل

کیوں بُلاتے ہو اِس ہفیائی ہوئی ٹولی میں مجھ کو آرام سے سونے دو مری کھولی میں زندگی کا یہ نظریہ ہے مرا ساری مخلوق کا رازق ہے خُدا آم پک جائیں تو خود آ کے گریں جھولی میں

عمیر ملکفیسبک نامہ

میرے فیسبک پہ کوئی ساڑھے کو تین سو ”دوست“ ہیں۔ صبح سے شام تک میری ’وال‘ پہ ہزاروں کی تعداد میں مواد چپکایا جاتا ہے۔ ظاہر ہے یہ سب کچھ دانستہ نہیں چپکایا جاتا بلکہ ایک خود کار ڈھنڈورا سسٹم کے تحت دنیا میں موجود لاکھوں افراد کی پوسٹیں کروڑوں افراد تک پہنچا دی جاتی […]

July 17، 2014

محمد زہیر چوھانمائیکروسافٹ آفس کی فائلز میں صارف کی ذاتی معلومات کیسے چھپائیں؟

مائیکروسافٹ آفس سے اور اس کی افادیت سے تو آپ بخوبی واقف ہوں گے۔ یہ ورڈ، ایکسل، پاور پوائیٹ اور دیگر مفید پروگرامز کا ایک مجموعہ ہے جسے ایک گھریلو کمپیوٹر صارف کے ساتھ ساتھ ماہرین بھی استعمال کرتے ہیں۔ اس کی خوبیوں اور خصوصیات پر تو کتابوں کی کتابیں لکھی اور پڑھی جا چکی... Read more »

The post مائیکروسافٹ آفس کی فائلز میں صارف کی ذاتی معلومات کیسے چھپائیں؟ appeared first on ITnama - Pakistan's First Urdu Technology Blog.

کاشفچُھپن چُھپائی

دروازے کی گھنٹی کے ذریعے میرے گھر پہنچنے کی اطلاع پاتے ہی، میرے بچے چُھپ جاتے ہیں۔ 
تاکہ  ۔ ۔ ۔
میں گھر کی خاموشی محسوس کرتے ہی ان کا پوچھوں ۔ ۔ ۔ ان کو آوازیں دوں ۔ ۔ ۔ ان کو گھر کے مختلف حصوں میں تلاش کرتا پھروں۔
پھر جب میں ان کو، اِس ایک کمرے کے گھر میں،  بظاہر بہت مشکل سے آخر ڈھونڈ ہی نکالتا ہوں، تو وہ ہنس ہنس کر زمین پر لوٹ پوٹ ہو جاتے ہیں۔

ایسے ہی حقیقی خوشی سے بھرے لمحوں میں، 
کبھی کبھی مجھے خیال آتا ہے،
کہ کل جب میں چُھپ جاؤں گا، 
تو کیا یہ بھی مجھے ڈھونڈیں گے؟۔

کاشففونٹ ٹیسٹ پوسٹ

دروازے کی گھنٹی کے ذریعے میرے گھر پہنچنے کی اطلاع پاتے ہی، میرے بچے چُھپ جاتے ہیں۔
تاکہ  ۔ ۔ ۔
میں گھر کی خاموشی محسوس کرتے ہی ان کا پوچھوں ۔ ۔ ۔ ان کو آوازیں دوں ۔ ۔ ۔ ان کو گھر کے مختلف حصوں میں تلاش کرتا پھروں۔
پھر جب میں ان کو، اِس ایک کمرے کے گھر میں،  بظاہر بہت مشکل سے آخر ڈھونڈ ہی نکالتا ہوں، تو وہ ہنس ہنس کر زمین پر لوٹ پوٹ ہو جاتے ہیں۔
ایسے ہی حقیقی خوشی سے بھرے لمحوں میں،
کبھی کبھی مجھے خیال آتا ہے،
کہ کل جب میں چُھپ جاؤں گا،
تو کیا یہ بھی مجھے ڈھونڈیں گے؟۔

کاشفمیں مجبور ھوں

ان  سے ایک مشترکہ دوست کے ذریعے  شناسائی ہوئی۔  
نیک  طبع۔ نیک اطوار۔ طبعیت میں شرم ۔ صوم و صلوۃ کے پابند۔ چہرے پر سُنت نبوی۔ ہونٹوں پر تبسم ۔ ماتھے پر نور۔ دھیمی آواز۔ ادب سے دلچسپی ۔ وسیع دینی علم  ۔  
دوستی ہو گئی۔

ایک دفعہ  اپنی  جان سے پیارے بیٹے کے آپریشن  کا بتا کرایک  ماہ کے لیےایک بڑی رقم ادھار لے گئے۔
چھ ماہ گزر گئے لیکن رقم واپس کرنے کاارادہ  نہیں کیا۔   تنگ آ کرتقاضا کیا تو   ایک سال کے بعد آدھی رقم واپس کردی۔
اس کے بعد سال پر سال گزرتا گیا۔  ملاقات سے کترانے لگے۔ ہر سال گزرنے پر  ان کو خصوصی فون کر کے …

Seemsاے خدا ترے بنا۔۔۔


اے خدا ترے بنا۔۔۔

 (Prof. Muhammad Aqil پروفیسر محمد عقیل )

 

اے میرے رب! اے میرے خدا!  تیرے بنا زندگی موت سے بھی بد تر ہے ۔ تیرے بنا چاند کی روشنی تیرگی، سورج کی کرنیں بے نور، تاروں کی چھاؤں معدوم ، فلک کی وسعت ایک تنگ گلی اور نیلگوں آسمان ایک سیاہ چادرہے ۔ تیرے بغیر پرندوں کی چہچہاہٹ ایک بے ہنگم شور، پھولوں کی مہک بے کیف بو ، قوس قزح لایعنی لکیریں ، باد نسیم صحرا کے تھپیڑے ، پتوں کی سرسراہٹ بے معنی آواز، ساحل کی موجیں بے سبب یلغار اور بارش کے قطرے تپتے ہوئے سنگریزے ہیں ۔
تیرے بغیر زیست بس …

نورمحمداپیل ۔ ۔ ۔ ۔ یوم فلسطین ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ 19 رمضان 1435 ہجری


افتخار اجمل بھوپالچھوٹی چھوٹی باتیں ۔ ذمہ دار کون ؟

اپنی مایوسی کا ذمہ دار کسی دوسرے کو نہ ٹھہرایئے بلکہ اپنی اس عادت کو ٹھہرایئے کہ آپ دوسروں سے زیادہ توقعات رکھتے ہیں جو چیز آپ دوسروں میں دیکھنا چاہتے ہیں پہلے اپنے آپ میں پیدا کیجئے یہاں کلک کر کے پڑھیئے ” Who is Afraid of Shariah? “

Footnotes